مذہب اسلام میں حاملہ عورت کو طلاق ہو جاتی ہے؟وضاحت ضرور جانئے
  24  جولائی  2017     |     اوصاف سپیشل

اگر داماد اور اس کے ساس سسر کے درمیان کوئی بات ہوتی ہے تو کیا اس کے ردعمل میں وہ اپنی بیوی کو طلاق دی تو طلاق ہو جائے گی اور کیا حاملہ عورت کو طلاق ہو جاتی ہے؟جس کا جواب یہ ہے کہ شوہر کسی بات کے رد عمل یا بغیر رد عمل کے اپنی بیوی کو طلاق دیتا ہے تو طلاق واقع ہوجاتی ہے۔بیوی حاملہ ہو یا غیر حاملہ طلاق واقع ہوجاتی ہے۔ بیوی مرد پر حرام ہو گئی ہے بغیر حلالہ کے اسکے ساتھ نکاح جائز نہیں ہے۔

طلاق دیتا ہے تو طلاق واقع ہوجاتی ہے۔بیوی حاملہ ہو یا غیر حاملہ طلاق واقع ہوجاتی ہے۔ بیوی مرد پر حرام ہو گئی ہے بغیر حلالہ کے اسکے ساتھ نکاح جائز نہیں ہے۔


اس خبر کے بارے میں اپنی رائے دیجئے
پسند آئی
58%
ٹھیک ہے
 
کوئی رائے نہیں
 
پسند ںہیں آئی
42%


 سب سے زیادہ پڑھی جانے والی مقبول خبریں





  اوصاف سپیشل

آج کا مکمل اخبار پڑھیں

آج کا مکمل اخبار پڑھیں

کار ٹونز

اوصاف سپیشل

کالم /بلاگ


     
     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ روزنامہ اوصاف محفوظ ہیں۔
Copyright © 2016 Daily Ausaf. All Rights Reserved