غذر کے عوام کا احتجاج رنگ لایا
  12  اگست‬‮  2017     |     گلگت بلتستان

غذر(بیورو رپورٹ)غذر کے عوام کا احتجاج رنگ لایا ۔ محکمہ خوراک گلگت بلتستان نے گندم کی کوٹے میں کٹوتی واپس لے لی ۔ تین روزہ بھوک ہڑتالی کیمپ ختم کردیا گیا ۔ ڈی سی غذر شجاع عالم کی مخلصانہ کاوشیں رنگ لائیں ۔ تین روز تک بھوک سے نڈھال ہڑتالیوں نے سکھ کا سانس لیا ۔ ڈی سی غذر نے ضلعی ہیڈ کوارٹر اور گرد ونواح کے دیہاتوں کو فوری طور پر گندم جاری کرنے کے احکامات جاری کردئے ۔ تفصیلات کے مطابق گاہکوچ شہر کے مرکزی چوک میں گاہکوچ اور گرد نواح کے چھ بڑے دیہاتوں کے عوام کی جانب سے بھوک ہڑتالی کیمپ ختم کردیا گیا ۔ مظاہرین اور ضلعی انتظامیہ کے درمیان مذاکرات کامیاب ہوگئے ۔ حکومت نے عوام کے مطالبات تسلیم کرتے ہوئے فوری طور پر گندم کے کوٹے میں کمی کا فیصلہ واپس لے لیا اور کوٹے کی مقررہ گندم چوبیس گھنٹوں میں فراہم کرنے کے بھی ہدایات جاری کردئے گئے ۔

ہفتہ کی صبح ڈی سی غذر شجاع عالم سے بھوک ہڑتالی کیمپ کے نمائندہ وفد کے ساتھ طویل مذاکرات کئے ۔ سابق امیدوار قانون ساز اسمبلی مولانا فرمان ولی ، سابق چیرمین بلدیہ گاہکوچ ہاشم خان ، سابق ممبر بلدیہ گاہکوچ راجہ شاہ مسلم ، نمبر رحمت کریم ، موسیٰ مدد، اسی دوران ڈی سی غذر نے گندم کے کوٹے سے متعلق سیکرٹری خوراک اور ڈائریکٹر سول سپلائی سے رابطہ بھی کیا جس کے بعد ڈی سی غذر نے سی ایس او غذر کو دفتر میں طلب کرکے فوری طور پر گندم ریلیز کرنے کے احکامات جاری کردئے اس موقع پر ڈی سی غذر نے کہا کہ گندم قلت نہیں ہے بلکہ ٹرانسپورٹیشن میں کچھ مسائل کے باعث وقتی طور پر گندم کی فراہمی میں رکاوٹ ہوئی ہے بہت جلد صورتحال پر قابو پالیں گے۔ بھوک ہڑتالی کیمپ کے وفد نے ڈی سی غذر سے مطالبہ کیا کہ سی ایس او نے عوام کے ساتھ انتہائی نامناسب رویہ کا مظاہرہ کیا ہے اب ہمارے صبر کا پیمانہ لبریز ہوگیا ہے اگر فوری طور پر سی ایس او غذر کا تبادلہ نہیں کیا گیا تو عوام دوبارہ سراپا احتجاج ہوں گے ۔ کامیاب مذاکرات کے بعد وفد بھوک ہڑتالی کیمپ پہنچا اور مذاکرات کی کامیابی کی نوید سنادی اور بھوک ہڑتال ختم کرنے کا اعلان کیا ۔ اس موقع پر پاکستان زندہ باد ، عوام غذر زندہ باد کے فلک شگاف نعرے بھی لگائے گئے


اس خبر کے بارے میں اپنی رائے دیجئے
پسند آئی
 
ٹھیک ہے
 
کوئی رائے نہیں
 
پسند ںہیں آئی
 


 سب سے زیادہ پڑھی جانے والی مقبول خبریں





  اوصاف سپیشل

آج کا مکمل اخبار پڑھیں

آج کا مکمل اخبار پڑھیں

کار ٹونز

اوصاف سپیشل

کالم /بلاگ


     
     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ روزنامہ اوصاف محفوظ ہیں۔
Copyright © 2016 Daily Ausaf. All Rights Reserved