5000 کے نوٹوں کی واپسی: سینیٹ میں قرارداد منظور
  19  دسمبر‬‮  2016     |      کاروبار
اسلام آباد(روزنامہ اوصاف)سینیٹ میں 5 ہزار کے نوٹوں کو ناجائز پیسے کے بہاؤ کو روکنے کے لیے تین سے پانچ سال تک واپس لینے سے متعلق قرارداد منظور کرلی گئی۔ پاکستان مسلم لیگ (ن) کے سینیٹر عثمان سیف اللہ کی جانب سے پیش کی گئی قرارداد کی سینیٹرز کی اکثریت نے حمایت کی۔ قرارداد میں کہا گیا تھا کہ 5000 کی نوٹ واپس لیے جانے سے بینک اکاؤنٹس استعمال کی حوصلہ افزائی اور غیر تحریری معیشت کے سائز میں کمی واقع ہوگی۔ قرارداد میں مزید کہا گیا کہ مارکیٹ سے 5 ہزار کے نوٹوں کی واپسی تین سے پانچ سال میں ہونی چاہیے۔ وزیر قانون زاہد حامد نے قرارداد کی مخالفت کرتے ہوئے کہا کہ نوٹ واپس لینے سے معاشی بحران پیدا ہوگا اور 5 ہزار کے نوٹ کی غیر موجودگی سے لوگ غیر ملکی کرنسی کی طرف مائل ہوں گے۔ ان کا کہنا تھا کہ اس وقت ملک میں 3 اعشاریہ 4 ٹریلین کے نوٹ زیر گردش ہیں، جن میں سے ایک اعشاریہ 02 فیصد نوٹ 5000 کے ہیں۔

اس خبر کے بارے میں اپنی رائے دیجئے
پسند آئی
63%
ٹھیک ہے
8%
کوئی رائے نہیں
8%
پسند ںہیں آئی
21%



 سب سے زیادہ پڑھی جانے والی مقبول خبریں






آج کا مکمل اخبار پڑھیں

کار ٹونز

کاروبار

کالم /بلاگ


     
     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ روزنامہ اوصاف محفوظ ہیں۔
Copyright © 2016 Daily Ausaf. All Rights Reserved