ملک کوسراج الحق جیسی قیادت کی ضرورت ہے،پاکستان رابطہ کونسل
  11  جنوری‬‮  2017     |     یورپ
برمنگھم( پ ر) پاکستان رابطہ کونسل کے چیئرمین مفتی فاروق علوی، سینئر وائس چیئرمین مفتی فضل احمد قادری، جنرل سکریٹری حافظ محمد ادریس اور وائس چیئرمین ڈاکٹر خرم بشیر نے اپنے مشترکہ بیان میں سپریم کورٹ کے ان ریمارکس کا خیر مقدم کیا ہے کہ اگر آئین کی دفعہ 62/63 پر عمل درآمد ہو ا تو صرف جماعت اسلامی کے امیر سراج الحق ہی بچیں گے اور اس پر پورا اتریں گے اس سے واضع ہوگیا ہے کہ جماعت اسلامی پاکستان کی قیادت ہی کرپشن سے پاک ہے اس قوم کو ایسی قیادت کی پہچان کرنی چاہے عدالتوں کو آزادی کے ساتھ فیصلے کرنے ہونگے یہی اس ملک اور قوم کے مفاد میں ہے سپریم کورٹ نے بڑی جرات کا مظاہرہ کیا ہے اور پوری قوم کو صاف اور شفاف قیادت سے روشناس کرایا ہے۔ انہوں نے کہا کہ یہ ملک ستر سال سے کرپٹ اور لٹیروں کے ہاتھوں یرغمال بنا ہوا ہے جاگیر داروں، وڈیروں، فوجی آمریت، بیورکریٹس اور غیر جمہوری قوتوںنے اس ملک کو تباہ و برباد کر دیا ہے بدمعاش اور ملک دشمن عناصر اس ملک پر مسلط ہیں عوام قانونی طور پر عدم تحفظ کا شکار ہے تھانوں اور عدالتوں میںانصاف نہیں ہے جس کے نتیجے میں جمہوری عمل کرپشن کا شکار ہے کرپشن کی دولت کے بل بوتے پر الیکشن لڑا جاتا ہے اور لوگوں کو خرید کر ہر جگہ بھرتیاں کی جاتی ہیں پورا ملک ایک قید خانہ بنا ہوا ہے ججوں کے گھروں میں معصوم بچیوں پر جس طرح کے مظالم ڈھائے جاتے ہیں ایسے وقعات سامنے آنے پر رونگٹے کھڑے ہوجاتے ہیں انصاف دینے والوں کے گھرانے دہشت گردی کر رہے ہیں ۔ مفتی فاروق نے کہا کہ ملک میں آئین اور قانون کی پاسداری ہوتی تو آج اس ملک اور کا یہ حشر نہ ہوتا اب بھی وقت ہے کہ انصاف کے دروازے کھولے جائیں ملک میں سراج الحق جیسی قیادت کی ضرورت ہے وقت اور حالات کا تقاضا ہے کہ کرپٹ اور دہشت گرد لوگوں سے چھٹکارہ حاصل ہو عدلیہ اور دیگر قومی ادارے اس میں اپنا بھرپور کردار ادا کریں میڈیا اس وقت اپنا کردار ادا کرنے کے لیے تیار ہے اس وقت ملک میں ایک دیانت دار قیادت کو اقتدار میں لانے کے لیے پوری قوم کو تیار کرنا ہوگا ۔

اس خبر کے بارے میں اپنی رائے دیجئے
پسند آئی
 
ٹھیک ہے
 
کوئی رائے نہیں
 
پسند ںہیں آئی
 




  اوصاف سپیشل

آج کا مکمل اخبار پڑھیں

آج کا مکمل اخبار پڑھیں

کار ٹونز


یورپ

کالم /بلاگ


     
     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ روزنامہ اوصاف محفوظ ہیں۔
Copyright © 2016 Daily Ausaf. All Rights Reserved