ترکی کی جرمن خفیہ ادارے کے سربراہ پر تنقید
  19  مارچ‬‮  2017     |     یورپ
انقرہ(روزنامہ اوصاف)ترکی نے جرمن خفیہ ادارے کے سربراہ کے گولن سے متعلق بیان کو شدید تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے الزام عائد کیاہے کہ جرمن خفیہ ادارے کے سربراہ کا یہ بیان گواہی دیتا ہے کہ جرمنی گولن کو تعاون فراہم کر رہا ہے۔غیر ملکی میڈیا کے مطابق ترک صدر رجب طیب اردگان کے ترجمان ابراہیم کالن نے جرمن خفیہ ادارے کے سربراہ کے اس بیان کو تنقید کا نشانہ بنایا ہے جس میں کہا گیا تھا کہ انقرہ حکومت انہیں قائل نہیں کر سکی کہ ترکی میں گزشتہ برس جولائی میں ہونے والی فوجی بغاوت میں ترک مبلغ فتح اللہ گولن کا کوئی کردار تھا۔ ترک حکومت اس بغاوت کا ماسٹر مائنڈ امریکا میں مقیم اِس مذہبی رہنما کو قرار دیتی ہے۔ ایک انٹرویو میں ابراہیم نے کہا کہ جرمن خفیہ ادارے کے سربراہ کا یہ بیان گواہی دیتا ہے کہ جرمنی گولن کو تعاون فراہم کر رہا ہے۔

اس خبر کے بارے میں اپنی رائے دیجئے
پسند آئی
 
ٹھیک ہے
 
کوئی رائے نہیں
 
پسند ںہیں آئی
 

رپورٹر   :  


 سب سے زیادہ پڑھی جانے والی مقبول خبریں





  اوصاف سپیشل

آج کا مکمل اخبار پڑھیں

آج کا مکمل اخبار پڑھیں

کار ٹونز


یورپ

کالم /بلاگ


     
     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ روزنامہ اوصاف محفوظ ہیں۔
Copyright © 2016 Daily Ausaf. All Rights Reserved