حکومت نیکوپ کارڈکی فیسوں میں کمی کرے،مقصودحسین کاکڑوی
  19  مارچ‬‮  2017     |     یورپ

اولڈہم (فیاض بشیر) نادرا کی طرف سے بیرون ممالک بسنے والے دوہری شہریت کے حامل افراد کو جو نیکوپ کارڈز کی سہولت دستیاب ہے اس میں سب سے بڑی خامی یہ ہے کہ جو بچے اٹھارہ سال کی عمر سے کم کے ہیں کم عرصہ کے لئے نیکوپ کارڈ جاری کیا جاتا ہے اور فیس پوری یعنی72 پونڈ لی جاتی ہے مثال کے طور پر اگر بچے کی عمر گیارہ سال ہے تو اسے سات سال کا کارڈ جاری کیا جاتا ہے اور جو بچے سولہ سال کی عمر کو پہنچ چکے ہیں انہیں صرف دو سال کے لئے کارڈ جاری کیا جاتا ہے اور جب وہ اٹھارہ سال کی عمر کو پہنچ جائیں تو دوبارہ پوری فیس ادا کرکے نیا کارڈ حاصل کریں میں سمجھتا ہوں کہ یہ سراسر زیادتی ہے وزارت داخلہ اور وزیراعظم پاکستان کو اس بات کا نوٹس لے کر بیرون ممالک بسنے والوں کے اس جائز مطالبہ کا نوٹس لیکر فیسوں میں کمی کرنی چاہئے۔ ان خیالات کا اظہار آزاد کشمیر مسلم لیگ (ن) برطانیہ کے سینئر نائب صدر راجہ مقصود حسین کاکڑوی نے میدیا نمائندگان کو اس معاملے کو بھرپور انداز سے اٹھانے بارے درخواست کرتے ہوئے کیا۔ انہوں نے مزید کہا کہ ہم برطانیہ بھر میں بسنے والوں کو بار بار کہا جاتا ہے کہ اپنی نوجوان نسل کو مادر وطن کی مٹی سے محبت کا درس دیں اور انہیں چھٹیاں گزارنے کے لئے وہاں لیکر جایا کریں لیکن جب ایسے قانون و ضوابط ہوں گے تو پھر عام آدمی کے لئے پورے خاندان کا خرچہ برداشت کرنے کی سکت نہیں ہوگی۔ ہم حکومت پاکستان اور وزارت داخلہ سے مطالبہ کرتے ہیں کہ وہ اس پر نظر ثانی کریں اور ایک ایسی پالیسی بنائیں جس سے ہماری نوجوان نسل کا پاکستان و آزاد کشمیر سے محبت و الفت کا رشتہ دیرپا قائم رہے سکے۔ مقصودحسین


اس خبر کے بارے میں اپنی رائے دیجئے
پسند آئی
 
ٹھیک ہے
 
کوئی رائے نہیں
 
پسند ںہیں آئی
 


 سب سے زیادہ پڑھی جانے والی مقبول خبریں






آج کا مکمل اخبار پڑھیں

کار ٹونز


یورپ

کالم /بلاگ


     
     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ روزنامہ اوصاف محفوظ ہیں۔
Copyright © 2016 Daily Ausaf. All Rights Reserved