کشمیریوں کی قسمت کے فیصلے سردار عتیق ہی کرینگے،ملک ساجد
  20  مارچ‬‮  2017     |     یورپ

برسٹل (پ ر) ہم سردار عتیق احمد خان کو خراج تحسین پیش کرتے ہیں جنہوں نے اسلامی ممالک کے سربراہی اجلاس میں مسئلہ کشمیر کو پیش کیا ہے کیونکہ اقوام متحدہ امریکہ کا دم چھلا ہے ' مردہ گھوڑے کا نام ہے ویسے بھی جو قراردادیں اقوام متحدہ میں پیش کی گئی تھیں لگتا ہے کہ ان کو بھی دیمک چاٹ گئی ہو۔ سردار عتیق احمد خان کی سوچ کو سلام پیش کرتے ہیں کہ جنہوں نے یہ فورم منتخب کیا ہے ساتھ ہی آپ نے گلگت اور بلتستان کو صوبہ بنانے کے خلاف بھی جو تقریر کی ہے کشمیری قوم کے دل جیت لئے ہیں کیونکہ ن لیگ اور پیپلز پارٹی دونوں اپنی کرسی کی خاطر کشمیر کی وحدت کو نقصان پہنچا رہے ہیں لہٰذا اب وقت آگیا ہے کہ کشمیری قوم کے نمائندے خود اپنی منزل اور آزادی کے لئے نئی سمت متعین کریں۔ حکومت کو گلگت بلتستان کو صوبہ بنانے کے لئے آگ کے سمندر عبور کرنا ہوں گے کشمیری قوم چپ نہیں بیٹھے گی۔ ان خیالات کا اظہار مسلم کانفرنس کی مرکزی رابطہ سیکرٹری ملک ساجد علی نے اپنے بیان میں کیا۔ آپ نے مزید کہا کہ اگر حکمران بضد ہیں کہ ایسا کرنا ہی ہے تو پھر باقی ماندہ اضلاع کو بھی مقبوصہ کشمیر میں ضم کردیں کیا ہوگا ویسے بھی ہماری بہن بھائی پہلے ہی وہاں رہ رہے ہیں اور ہم بھی ان کے ساتھ گزرا کرلیں گے دونوں حکومتوں نے اسی لئے آزاد کشمیر میں برانچیں کھولی تھیں ان کی نیتوں میں فتور تھا غیر ریاستی لوگوں کو ریاستی عوام پر مسلط کرنے کا مقصد یہی تھا کہ ہم اپنے من پسند فیصلے کریں گے لیکن یاد رکھیں کشمیر کی وارث جماعت مسلم کانفرنس کے قائد سردار عتیق احمد خان چوکیدار کی حیثیت سے ساتھ کھڑے ہیں کون ماں کا لال اپنے من پسند فیصلے نہیں کرے گا کرسی کے لئے تو فیصلے کرسکتے ہیں لیکن کشمیریوں کی قسمت کے فیصلے سردار عتیق ہی کریں گے۔ ملک ساجد


اس خبر کے بارے میں اپنی رائے دیجئے
پسند آئی
 
ٹھیک ہے
 
کوئی رائے نہیں
 
پسند ںہیں آئی
 


 سب سے زیادہ پڑھی جانے والی مقبول خبریں






آج کا مکمل اخبار پڑھیں

کار ٹونز


یورپ

کالم /بلاگ


     
     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ روزنامہ اوصاف محفوظ ہیں۔
Copyright © 2016 Daily Ausaf. All Rights Reserved