حکومت سمندر پار پاکستانیوں کی بہتری اور فلاح کیلئے پرعزم ہے،صدرالدین
  28  مارچ‬‮  2017     |     یورپ

لندن( ا و صا ف نیو ز )سمندر پار پاکستانیوں کے وزیر پیر صدرالدین راشدی نے پاکستان ہائی کمیشن لندن اور برمنگھم، بریڈفورڈ، گلاسکو اور مانچسٹر میں واقع اس کے قونصلیٹس میں قونصلر خدمات اور کمیونٹی معاونت کے معیار میں بہتری کو سراہا ہے۔ پیر صدرالدین نے ہائی کمشنر سید ابن عباس کے ہمراہ مشن کے قونصلر سیکشن کا دورہ کیا اور درخواست گزاروں کے ساتھ بات چیت کی۔ اس موقع پر موجود درخواست گزاروں کی طرف سے انہیں مثبت جواب ملا۔ انہوں نے قونصلر خدمات کا معیار بہتر بنانے کی کوششوں کو سراہا اور امید ظاہر کی کہ مشن ان میں مزید بہتری اور عوامی خدمات کی فراہمی کو بے روک ٹوک بنانے کی کوششوں کا سلسلہ جاری رکھے گا۔ اس موقع پر ہائی کمشنر نے کہا کہ بہتر قونصلر خدمات کی فراہمی مشن کی اولین ترجیحات میں شامل ہے جو وزیراعظم پاکستان کی ہدایات کے مطابق ہے۔ پیر صدرالدین کو ہائی کمیشن میں ایک بریفنگ بھی دی گئی جس میں انہیں کمیونٹی کے لئے فراہم کی جانے والی مختلف خدمات اور کمیونٹی سے رابطہ و رسائی کے لئے ہائی کمیشن کی کوششوں کے بارے میں آگاہ کیا گیا۔ چیئرمین بورڈ آف گورنرز اوورسیز پاکستانیز بیرسٹر امجد ملک بھی پیرصدرالدین کے ہمراہ تھے۔ بیرسٹر امجد ملک نے کمیونٹی کو درپیش مسائل ترجیحی بنیاد پر حل کرنے کے عزم کا اظہار کیا۔ پیرصدرالدین گزشتہ ہفتے برطانیہ کے سرکاری دورے پر آئے ہوئے تھے جہاں انہوں نے مشن اور قونصلیٹ کا دورہ کیا اور وہاں فراہم کی جانے والی خدمات کا جائزہ لیا۔ انہوں نے پاکستانی کمیونٹی سے بھی ملاقاتیں کیں، ان سے ان کے مسائل کے بارے میں دریافت کیا اور ان سے تجاویز لیں۔ انہوں نے کمیونٹی کو یقین دلایا کہ حکومت سمندر پار پاکستانیوں کی بہتری اور فلاح کے لئے پرعزم ہے۔ پیرصدرالدین نے یوم پاکستان کے موقع پر پرچم کشائی کی تقریب میں بھی شرکت کی۔ قبل ازیں ہائی کمشنر نے ان کے اعزاز میں ایک عشائیہ دیا جہاں نے کمیونٹی ارکان اور میڈیا کے نمائندوں سے ملاقات کی۔


اس خبر کے بارے میں اپنی رائے دیجئے
پسند آئی
 
ٹھیک ہے
 
کوئی رائے نہیں
 
پسند ںہیں آئی
 


 سب سے زیادہ پڑھی جانے والی مقبول خبریں





  اوصاف سپیشل

آج کا مکمل اخبار پڑھیں

آج کا مکمل اخبار پڑھیں

کار ٹونز


یورپ

کالم /بلاگ


     
     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ روزنامہ اوصاف محفوظ ہیں۔
Copyright © 2016 Daily Ausaf. All Rights Reserved