جبری فیصلوں سے عوام کونوازشریف سے دورنہیں کیاجاسکتا،طارق فاروق
  28  اگست‬‮  2017     |     یورپ

برمنگھم(پ ر) سینئر وزیر آزاد کشمیر چوہدری طارق فاروق نے کہا کہ مسئلہ کشمیر اس وقت اقوام متحدہ کے پلیٹ فارم پر سب سے طویل حل طلب مسئلہ ہے۔ عالمی برادری مقبوضہ کشمیر میں عالمی مبصرین اور امدادی اداروں کی رسائی کو یقینی بنائے تاکہ دنیا حقائق سے آگاہ ہوسکے۔ سابق وزیراعظم پاکستان میاں محمد نواز شریف عوام کے دلوں پر حکومت کرتے ہیں۔ جی ٹی روڈ سے لاہور تک عوام کے والہانہ استقبال نے نہ صرف ماضی کے ریکارڈ توڑے بلکہ کئی نئے ریکارڈ قائم کئے۔ پانامہ سے کچھ نہ ملا تو اقامہ بنیاد بناکر جبری فیصلوں سے عوام کو میاں نواز شریف سے دور نہیں کیا جاسکتا۔ برطانیہ سمیت پاکستان و آزاد کشمیر کے غیور عوام چٹان کی طرح میاں نواز شریف کے ساتھ کھڑے ہیں۔ آزاد خطہ کا ترقیاتی بجٹ دوگنا کرکے سی پیک میں آزاد کشمیر کو حصہ دیکر میاں نواز شریف نے ذاتی دلچسپی سے جو اقدامات کئے کشمیری قدر کی نگاہ سے دیکھتے ہیں۔ ان خیالات کا اظہار سینئر وزیر آزاد کشمیر(ڈپٹی وزیر) چوہدری طارق فاروق نے برمنگھم میں پاکستان مسلم لیگ ن آزاد کشمیر کی جانب سے منعقدہ اپنے اعزاز میں استقبالیہ جو عوامی جلسہ کی شکل اختیار کرگیا خطاب کرتے ہوئے کیا جسکی صدارت مسلم لیگ ن آزاد کشمیر کے صدر زبیر اقبال کیانی نے کی جبکہ نظامت کے فرائض معروف کاروباری شخصیت اور سینئر نائب صدر آزاد کشمیر مسلم لیگ ن برطانیہ چوہدری عبدالرحمٰن آرائیں نے سرانجام دئیے جبکہ میزبانی کے فرائض میڈ لینڈ کے صدر راجہ امجد خان اور چوہدری عبدالرحمٰن آرائیں نے کئے۔ جلسہ میں اولڈھم کے سابق میئر کونسلر عتیق الرحمٰن، آفتاب شریف، اسلم آزاد،معروف قانون دان تصور الحق نقوی، چوہدری سعید سابق کونسلر ڈربی سے اشرف قادری، وحید مغل، محمود مغل، راجہ گل نواز، مصدق چھتروی، احمد یعقوب سمیت دیگر رہنماؤں نے شرکت کی جبکہ سینئر وزیر طارق فاروق کی آمد پر نعروں تالیوں کی گونج میں پھولوں کے ہار ڈال کر پرتپاک استقبال کیا گیا۔ سابق امیدوار اسمبلی راجہ علی زمان کاتقریب میں آمد پر بھرپور استقبال کیا گیا۔ آغاز تلاوت کلام پاک سے اور ہدیہ نعت سے ہوا۔ تقریب میں سابق وزیراعظم میاں نواز شریف اور راجہ فاروق حیدر کے ساتھ والہانہ عقیدت کا اظہار کرتے ہوئے جذباتی تقریریں کی گئیں۔سینئر وزیر چوہدری طارق فاروق نے مزید کہا کہ مسلم لیگ ن آزاد کشمیر برطانیہ کی تنظیم نے آزاد کشمیر میں الیکشن جیت میں اہم کردار ادا کیا ہمیں آپ پر فخر ہے۔ قائد جماعت میاں محمد نواز شریف کی دی گئی تربیت کا نتیجہ ہے کہ لیگی کارکن بات کرنا بھی جانتے ہیں اور قائدین تک اپنا مؤقف پہنچانا بھی جانتے ہیں۔ جس ملک کا منتخب وزیراعظم انصاف حاصل نہ کرسکے اس ملک کے عوام کا کیا بنے گا لیکن اب وہ وقت گیا عوام کا ٹھاٹھیں مارتا ہوا سمندر میاں نواز شریف کے ساتھ چٹان کی طرح کھڑا ہے اب آپ کے ووٹ کا تقدس بحال ہوگا۔ انتخابی اصلاحات کی اشد ضرورت ہے۔ انگلیوں کے اشاروں پر چلنے والوں کو جلد اپنی اوقات معلوم ہوجائیگی۔ آئندہ الیکشن بھی پاکستان مسلم لیگ ن بھاری اکثریت سے جیت کر عوامی حکومت تشکیل دے گی۔ پاکستان میں میاں نواز شریف اور آزاد کشمیر میں منتخب عوامی وزیراعظم راجہ فاروق حیدر خان ہمارے لیڈر ہیں کسی بھی قسم کی نازیبا زبان ہم اپنے قائدین کے خلف ہر گز سننا نہیں چاہتے۔راجہ فاروق حیدر کو پارلیمانی پارٹی کا اعتماد حاصل ہے۔ سابق امیدوار اسمبلی راجہ علی زمان نے کہ کہ صرف ڈیڑھ برس میں ہماری حکومت نے ترقیاتی کاموں کا اچھا آغاز کیا۔ میرٹ کی بالادستی قائم کی۔ راجہ زبیر اقبال کیانے نے کہا کہ مسلم لیگ ن برطانیہ میاں نواز شریف کے ساتھ چٹان کی طرح کھڑی ہے۔ اب بھی میاں نواز شریف عوامی وزیراعظم ہیں۔ راجہ امجد خان نے کہا کہ عوام میاں نواز شریف کے ساتھ ہونے والی سازش سے جلد پردہ اٹھائیں گے۔اور عوامی ووٹ کا تقدس بحال ہوگا۔ چوہدری عبدالرحمٰن آرائیں نے کہا کہ آزاد کشمیر کے لوگ عزت کرنا اور عزت کروانا جانتے ہیں۔ تم جیتو یا ہارو ہمیںتم سے پیار ہے۔ کونسلر عتیق الرحمن نے ووٹ کے تقدس کے حوالے سے میاں نواز شریف کی حمایت کا اعلان کردیا۔ یہ کام ہونا چاہئے۔ عوام میاں نواز شریف کے ساتھ والہانہ عقیدت کا اظہار کرتے ہیں۔ تقریب سے تجمل نوابی، آفتاب شریف، راجہ ثقلین، محفوظ مغل، چوہدری جبار، سلیم بٹ، آفتاب الٰہی، مرزا توقیر، ساجد نذیر ایڈووکیٹ، چوہدری جہانگیر، محمد شفیق، راجہ ایاز ایڈووکیٹ، محمد نعیم، وحید الرحمن، اشرف قادری اور دیگر نے خطاب کیا جبکہ جلسہ میں لوٹن، اولڈھم، مانچسٹر، سٹوک ٹرنٹ، ڈربی، لوٹن، لندن، کونٹری، ڈڈلی، والسل سمیت ویسٹ میڈ لینڈ کے تمام شہروں سے کمیونٹی نے شرکت کی۔


اس خبر کے بارے میں اپنی رائے دیجئے
پسند آئی
 
ٹھیک ہے
 
کوئی رائے نہیں
 
پسند ںہیں آئی
 


 سب سے زیادہ پڑھی جانے والی مقبول خبریں






آج کا مکمل اخبار پڑھیں

کار ٹونز


یورپ

کالم /بلاگ


     
     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ روزنامہ اوصاف محفوظ ہیں۔
Copyright © 2016 Daily Ausaf. All Rights Reserved