سلامتی کونسل کوتعصب کی عینک اتاردینی چاہیے،راجہ ابوجہاد
  5  ستمبر‬‮  2017     |     یورپ

سعودی عرب (پ ر ) پاکستان مسلم لیگ ن آزادکشمیر سعودی عرب کے رہنمائوں راجہ ابوجہاد اور راجہ بشارت نے کہا ہے کہ برمی مسلمانوں کا نہ رکنے والا قتل عام انسانیت کے علمبرداروں کے منہ پر زوردار طمانچہ ہے' اقوام متحدہ برما کے مسلمانوں کوآلام وحوادث کے گرداب سے باہر نکالنے میں ہر گز سنجیدہ نہیں ہے.عید الاضحی کے موقع پر مسلم راہنمائوں کے نام ایک پیغام میں انہوں نے کہا کہ ہمیں بتایا جائے کہ خون مسلم کب تک بہتا رہے گا؟ بر می نہتے مسلمانوں کا قتل عام کیاسلامتی کونسل کے قوانین کی کھلم کھلا خلاف ورزی نہیں ہے؟'ہم بر ما میں مسلمانوں کی نسل کشی کب تک دیکھتے رہیں گے۔انھوں نے کہا کہ ہمارا پیمانہ صبر لبریز ہوچکا ہے'مسلم حکمرانوں کو ترکی کے صدر طیب اردگان کی تقلیدکرتے ہوئے آگے بڑھ کرفوری اقدام کرنے کی ضرورت ہے' اب ہم سے مذیدخون مسلم کی ارزائی کا تماشہ نہیں دیکھا جاسکتا۔راجہ ابوجہاد نے عالمی سیاست میں اقوام متحدہ کے کردارکوشدید تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہاکہ سلامتی کونسل کوتعصب اور اندھے شیشوں کی عینک اتار کر مشکل کی اس گھڑی میں برما کے مظلوم مسلمانوں کا اس وقت تک بھر پور طریقے سے ساتھ دینا چائیے جب تک انہیں درندوں کے چنگل سے مکمل طورپر آزاد ی نہیں ملتی ہے۔


اس خبر کے بارے میں اپنی رائے دیجئے
پسند آئی
 
ٹھیک ہے
 
کوئی رائے نہیں
 
پسند ںہیں آئی
 


 سب سے زیادہ پڑھی جانے والی مقبول خبریں






آج کا مکمل اخبار پڑھیں

کار ٹونز


یورپ

کالم /بلاگ


     
     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ روزنامہ اوصاف محفوظ ہیں۔
Copyright © 2016 Daily Ausaf. All Rights Reserved