کراچی اور گوادر بند ر گاہیں ہز ہائنس کی مرہون منت ہیں، فدا کریم
  18  مارچ‬‮  2017     |     گلگت بلتستان
ہنزہ (روزنامہ اوصاف) گوادر پورٹ آغاخان کا تحفہ ہے۔ سابق صدر پاکستان پیپلز پارٹی ہنزہ فداء کریم نے کہا ہے کہ پاکستان کے دو بڑے بندرگاہیں کراچی اور گوادر بندرگاہیں ہز ہائنس کی مرہون منت ہیں ۔ تیسری گول میز کانفرنس (لندن) کے دوران جوئینٹ سلیکٹ کمیٹی کے قائد کی حیثیت سے سَر آغاخان نے بمبئی کو سندھ سے جدا کر نے کے کامیاب مطالبہ کے بعد کراچی کی بندگاہ تقسیم ہند کے بعد یہ بندرگاہ پاک پاکستان کے حصّے میں آیا جب کہ دوسرا بڑا بندرگاہ گوادر کو انگریزوں نے فروخت کیا تھا اور یہ برصغیر کا حصہ تک نہ تھا اس کو بھی سابق وزیر اعظم فیروز خان نون کے دور حکومت میں تا خنجراب تک کے تمام ڈرائیپورٹس ہز ہائنس آغاخان سوئم نے خرید کر پاکستان کا حصہ بنوایا گیا ۔ اس حکومت حقائق سے روگردانی کر رہی ہے ۔ گوادر کے عوام کو بنیادی حقوق سے محروم رکھا جا رہی ہے جو کہ قابل مُذمت ہے۔ وفاقی حکومت گوادر تا خنجراب تک کے تمام بندگاہوں اور خاص کر پاک چین اقتصادی راہداری منصوبے کی ریالٹی اور بنیادی غقوق مقامی لوگوں کو ادا کرنے میں کنجوسی کا مظاہرہ نہ کرے

اس خبر کے بارے میں اپنی رائے دیجئے
پسند آئی
 
ٹھیک ہے
 
کوئی رائے نہیں
 
پسند ںہیں آئی
 

رپورٹر   :  


 سب سے زیادہ پڑھی جانے والی مقبول خبریں





 انٹر نیٹ کی دنیا میں سب سے زیادہ پڑھے جانے والے مضا مینں
loading...

  اوصاف سپیشل

آج کا مکمل اخبار پڑھیں

آج کا مکمل اخبار پڑھیں

کار ٹونز

گلگت بلتستان

کالم /بلاگ


     
     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ روزنامہ اوصاف محفوظ ہیں۔
Copyright © 2016 Daily Ausaf. All Rights Reserved