مفاد پرست عناصر علاقائی تعصب کو ہوا دیکرحکومت کو بدنام کرنا چاہتے ہیں، عبدالطیف
  17  اپریل‬‮  2017     |     گلگت بلتستان
گلگت(اوصاف نیوز)پاکستان مسلم لیگ ن گلگت بلتستان کے نائب صدر عبداللطیف نے کہا ہے کہ چند مفاد پرست عناصر علاقائی تعصب کو ہوا دیکر صوبائی حکومت کو بدنام اور علاقے کے پر امن ماحول کو خراب کرنا چاہتے ہیں،بی اینڈ آرگلگت،واٹر اینڈ اینڈ پائور اور واسا میں ٹھیکوں کی لئے مقامی اور غیر مقامی کا تعصب پھیلانا علاقے کے مفاد میں نہیں نام نہاد یونین ایسے غیر ذمہ دارانہ حرکتوں سے باز رہے جس سے علاقے کی بھائی چارگی کے فضاء کو نقصان پہنچنے کا خدشہ ہو۔گلگت بلتستان کے دیگر اضلاع ہنزہ،نگر،ضلع دیامر،ضلع استور اور بلتستان ریجن ،میں ہونے والے ٹینڈرز میں ہر ضلع کے افراد نے شرکت کی اور ان اضلاع میں باہر سے آنیوالے کنٹریکٹرز کو بطور مہمان ٹھیکوں کیلئے آفر بھی کی گئی اور ان اضلاع میں ٹینڈرز کا عمل خوش اسلوبی سے انجام پائے۔لیکن ضلع گلگت اور ضلع غذر میں ٹھیکوں کے دوران مقامی اور غیر مقامی کا تاثر پیدا کرکے تعصب پھیلانے کی کوشش کی گئی ہے جو علاقے کے مفاد میں نہیں دوسرے اضلاع میں بھی مقامی اور غیر مقامی کا تعصب شروع ہو گیا تو علاقے میں قائم بھائی چارگی کو نقصان پہنچے گااہے کہ ضلع گلگت اور ضلع غذرمیں ٹینڈرز کے دوران پاکستان انجینئرنگ کونسل کے قواعد کی بجائے علاقائی تعصب پر یونین بنائے گئے تو نہ صرف کنٹریکٹرز میں تعصب پیدا ہوگی بلکہ یہ ہوا دوسرے اضلاع کے بعد عام عوام میں بھی پھیل جائے گی جو علاقے کے پر امن ماحول کے لئے خطرناک ثابت ہو سکتی ہے۔ انہوں نے فورس کمانڈر گلگت بلتستان،ثاقب محمود ملک وزیر اعلیٰ گلگت بلتستان حافظ حفیظ الرحمن اور چیف سیکریٹری گلگت بلتستان سید طاہر حسین سے پر زور الفاظ میں اپیل کی ہے کہ علاقے کے مفاد سے متصادم اقدامات کا سختی سے نوٹس لیا جائے اور نام نہاد یونین بنا کر علاقے میں تعصب کو ہوا دینے والوں کے خلاد فوری کارروائی کے احکامات جاری فرمائیں۔

اس خبر کے بارے میں اپنی رائے دیجئے
پسند آئی
 
ٹھیک ہے
 
کوئی رائے نہیں
 
پسند ںہیں آئی
 

رپورٹر   :  


 سب سے زیادہ پڑھی جانے والی مقبول خبریں





 انٹر نیٹ کی دنیا میں سب سے زیادہ پڑھے جانے والے مضا مینں
loading...


آج کا مکمل اخبار پڑھیں

کار ٹونز

گلگت بلتستان

کالم /بلاگ


     
     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ روزنامہ اوصاف محفوظ ہیں۔
Copyright © 2016 Daily Ausaf. All Rights Reserved