محکمہ تعمیرات کی نا اہلی، شنا کی خضر آباد تا خانہ آبادروڈمنصوبہ 10ماہ سے التوا کا شکار
  18  اپریل‬‮  2017     |     گلگت بلتستان

گلگت ( نمائندہ خصوصی ) محکمہ تعمیرات کی نا اہلی سے شنا کی خضر آباد تا خانہ ٓباد روڑ منصوبے پر کام سست روی کا شکار ہوگیا ہے ۔ ہنزہ میں گزشتہ ہونے والے ضمنی انتخابات سے قبل وزیر اعلیٰ گلگت بلتستان ،وزیر تعمیرات اور حلقے سے منتخب نمائندوں نے ہنزہ شناکی کے عوام کو خضرآباد تا خانہ آباد روڑ منصوبے کو ایک سال میں مکمل کر نے کے دعوے اور اعلانات کرتے ہوئے شناکی کے عوام کو سبز باغ دکھاکر ضمنی انتخابات میں شناکی سے ووٹ لئے تھے مگر الیکشن جیتنے کے بعد منصوبے پر کام انتہائی سست روی کا شکار ہے گزشتہ سال 11 جون میں منصو بہ کا افتتاح کر تے ہوئے وزیر تعمیرات ڈاکٹر اقبال نے شناکی کے عوام سے وعدہ کی تھا کہ منصوبہ ایک سال میں مکمل ہوگا مگر دس ماہ کا عر صہ گزر نے کے بعد بھی منصوبے پر نصب کام بھی نہیں ہوا ہے ۔ شناکی کے تین گاوں کو شاہراہ قراقرم سے ملانے والا واحد راستے کی خاستہ حالی سے نہ صرف عوام کو سفری مشکلات کا سامنا کر نا پڑرہا ہے بلکہ روڑ کی خاستہ حالی کے باعث کئی قیمتی جانیں بھی اس شاہراہ پر ضائع ہو چکی ہے ۔ وزیر اعلیٰ اور وزیر تعمیرات کے وعدوں کے باوجود اہم منصوبے پر کام میں تاخیر پر تاحال وزیر اعلیٰ ،وزیر تعمیرات سمیت کسی ذمہ دار نے نوٹس نہیں لیا ہے اور نہ ہی جھوٹے اعلانات کے ذریعے شناکی کے عوام سے ووٹ حاصل کر نے والے ہنزہ کے منتخب نمائندوں نے اس منصوبے سے کوئی کام کیا ہے ۔ شناکی کے عوام نے وزیر تعمیرات اور وزیر اعلیٰ سے اپیل کی ہے کہ وہ اپنے کئے گئے وعدوں کو عمل جامعہ پہنانے کے لئے اس منصوبے کی تکمیل میں تاخیر کا نوٹس لیں اور منصوبے کی جلد تکمیل کے لئے اقدامات کرے ۔


اس خبر کے بارے میں اپنی رائے دیجئے
پسند آئی
 
ٹھیک ہے
 
کوئی رائے نہیں
 
پسند ںہیں آئی
 


 سب سے زیادہ پڑھی جانے والی مقبول خبریں






  قائد اعظم محمد علی جناح  
  اسکندر مرزا  
  لیاقت علی خان  
  ایوب خان  
آج کا مکمل اخبار پڑھیں

کار ٹونز

گلگت بلتستان

کالم /بلاگ


     
     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ روزنامہ اوصاف محفوظ ہیں۔
Copyright © 2016 Daily Ausaf. All Rights Reserved