محکمہ برقیات دیامر کرپشن کا گڑھ بن چکا ہے،محمد قریشی
  12  اگست‬‮  2017     |     گلگت بلتستان

چلاس(بیوروچیف)محکمہ برقیات دیامر کرپشن کا گڑھ بن چکا ہے۔بجلی فراہمی کے نام پر چھوٹے ملازمین بھی بڑی بڑی گاڑیوں کے مالک بن چکے ہیں۔عوام بجلی کے لئے ترس رہے ہیں جبکہ شہر میں بجلی کا نام و نشان ہی نہیں ہے۔لوڈشیڈنگ کے خاتمے کے لئے کھرنوں روپے سرکاری خزانے سے نکالے گئے ہیں۔تمام منصوبے ادھورے کئی منصوبوں کی بنیاد ہی رکھی جا سکی ہے۔جبکہ رقم ایڈوانس میں ہی نکالی جا چکی ہے۔ان خیالات کا اظہار سابق صدر پی وائی او نور محمد قریشی نے اپنے

ایک بیان میں کیا ۔انہوں نے کہا کہ لوڈشیڈنگ سے عوام کے صبر کا پیمانہ لبریز ہو چکا ہے۔فوری طور پر چلاس شہر کے لئے بجلی فراہم کی جائے۔واپڈا عوام کو بجلی فراہم کرنے کے بجائے تھور پاور ہاؤس کی تمام بجلی راستے میں ہی روک کر استعمال کر رہا ہے۔دن بھر دفاتر میں اے سی چلائے جا رہے ہیں۔دوسری جانب عوام پنکھے کے لئے بجلی نہ ہونے سے جان لیوا گرمی میں تڑپ رہے ہیں۔


اس خبر کے بارے میں اپنی رائے دیجئے
پسند آئی
 
ٹھیک ہے
 
کوئی رائے نہیں
 
پسند ںہیں آئی
 


 سب سے زیادہ پڑھی جانے والی مقبول خبریں





  اوصاف سپیشل

آج کا مکمل اخبار پڑھیں

آج کا مکمل اخبار پڑھیں

کار ٹونز

گلگت بلتستان

کالم /بلاگ


     
     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ روزنامہ اوصاف محفوظ ہیں۔
Copyright © 2016 Daily Ausaf. All Rights Reserved