سکیورٹی معاملات پر عمائدین اور علمائے کرام کیساتھ مشاورتی عمل جاری رہیگا، ڈپٹی کمشنر سکردو
  11  ستمبر‬‮  2017     |     گلگت بلتستان

سکردو(اوصاف نیوز)سکردو میں ماہ محرم کے تقدس کو برقرار رکھنے اور علاقے میں اتحاد بین المسلمین کے سازگار ماحول کو قائم رکھنے کیلئے انتطامیہ علاقے کے علمائے کرام کے تعاون سے بھرپور اقدامات کریگی ۔ بلتستان بلخوص ضلع سکردو کے تمام مکاتب فکر کے علمائے کرام نے ہمیشہ انتظامی مشینری سے تعاون کیا ہے اور ماہ محرم میں بہتر ماحول کے قیام میں بھی ان کا تعاون شامل حال رہے گا۔ ضلعی انتظامیہ نے سکیورٹی کے انتظامات پہلے سے بھی بہتر بنائے ہیں اور سکیورٹی کے حوالے سے علاقے کے عمائدین اور علمائے کرام کے ساتھ مشاورتی عمل بھی جاری رہے گا۔ یہ بات ڈپٹی کمشنر سکردو عدیل حیدر نے سکردو میں ضلع سکردو کے مختلف مکاتب فکر کے علمائے کرام کے اجلاس میں گفتگو کرتے ہوئے کیا ۔ اجلاس میں ایس ایس پی سکردو راجہ مرزہ حسن اور اسٹنٹ کمشنر سکردو نے بھی شرکت کیں۔ اجلاس میں گفتگو کرتے ہوئے ڈپٹی کمشنر نے علمائے کرام کو ماہ محرم کی مجالس اورجلوس کی سکیورٹی اور دیگر انتظامات کے حوالے سے ذکر کرتے ہوئے کہا کہ ضلع سکردوعلاقے کے علمائے کرام کی آپس میں بہترین مذہبی ہم آہنگی کی وجہ سے پر آمن علاقہ ہے اور علاقے کے علمائے کرام نے ہمیشہ انتظامیہ اور پولیس سے بھرپور تعاون کیا ہے جس کے باعث علاقے کا پرامن ماحول پورے خطے کے لیے مثالی ہے۔ انہوں نے کہا کہ ضلع سکردو کے داخلی اور خارجی راستوں میں موثر سکیورٹی کے انتظامات عمل میں لائے گئے ہیں۔ اس کے علاوہ محرم سے قبل تمام ہوٹل میں چیکنگ کا نظام بھی موثر کردیا جائے گا اور ضلع بھر میں دفعہ144 سی ار پی سی کے تحت اسلحے کی نمائش اور لیکر گھومنے ، بلاسٹنگ وغیرہ کرنے اور فائر کریکرز پر موثر پابندی عائد کردی جائے گی انہوں نے علمائے کرام کو مزید اقدامات کے حوالے سے ذکر کرتے ہوئے کہا کہ مجالس اور جلوس کے راستوں میں صفائی ستھرائی کو بہتر کرنے ، جلوس کے راستوں میں میڈیکل سہولیات کی فراہمی ،پانی بجلی کی فراہمی اور دیگر امورکی بجااوری کے لیے موثر اقدامات کرنے کی یقین دھانی کی ۔ اس موقع پر علمائے کرام نے داخلی اور خارجی راستوں پر سیکورٹی کو موثر کرنے اور ماہ محرم میں ممبر سے عوام الناس کو اسلامی بھائی چارگی اور اتحاد و اتفاق کا درس دینے اور جلوس کے راستوں میں سکیورٹی کے حوالے سے تبادلہ خیال کیا ۔ انہوں نے کہا کہ انتظامیہ نے بہتر انتظامات کیے ہیں اور ضلع کے تمام مکاتب فکر کے علمائے کرام ڈپٹی کمشنر اورایس ایس پی ے بھرپور تعاون کرینگے اور علاقے کے پرامن ماحول کو خراب کرنے والوں کا ہرگز ساتھ نہیں دیا جائے گا ۔ اجلاس میں ایس ایس پی سکردو نے اظہار خیال کرتے ہوئے کہا

کہ سکردو کا پرامن ماحول مثالی ہے تاہم سکیورٹی کے حوالے سے بعض اوقات پولیس کو سخت مسائل درپیش ہوتے ہیں کیونکہ علاقے میں مختلف مقامات سے جلوس برآمد ہوتے ہیں جس کی وجہ بعض اوقات پولیس کو سکیورٹی کے حوالے سے مشکلات پیش آتی ہیں انہوں نے کہا علاقے میں پرامن ماحول کے قیام کے لیے علمائے کرام کی ذمہ داریوں دیگر عام لوگوں کے مقابے میں زیادہ ہیں۔ اور پولیس اپنے فرائض کو بہتر انداز میں انجام دینے کیلئے تیار ہے۔ اور لوگوں کو ہر طریقے سے سیکورٹی کے موثر انتظامات کیے جائے۔انہوں نے کہا کہ علاقے میں سیکورٹی کو زیادہ موثر کرنے کے لیے اضافی پولیس مہیا کرنے کے لیے بھی پروپوزل ارسال کردیا گیا ہے۔ تاہم پولیس اپنی ذمہ داریوں کو احسن طریقے سے انجام دینے کے لیے کوشاں ہے ۔ انہوں نے کہا کہ سیکورٹی پلان کے تیاری کے بعد پولیس پیٹرولینگ میں اضافہ کیا جائے گا اور داخلی اور خارجی راستوں میں چیکنگ کو موثر کی جائے گی اور کسی بھی شخص کو بغیر شناختی کارڈ کے داخل ہونے نہیں دیا جائے گا ۔اور تمام ہوٹلوں میں چیکنگ کی جائے گی اور مشکوک افراد کی کٹری نگرانی کی جائے گی۔ انہوں نے علمائے کرام کے بہترین مشوروں کی تعریف کیں اور کہا کہ قانون نافذ کرنے والے ادارے علاقے کے علمائے کرام کے مشوروں کو اولیت دینگے


اس خبر کے بارے میں اپنی رائے دیجئے
پسند آئی
 
ٹھیک ہے
 
کوئی رائے نہیں
 
پسند ںہیں آئی
 


 سب سے زیادہ پڑھی جانے والی مقبول خبریں






  قائد اعظم محمد علی جناح  
  اسکندر مرزا  
  لیاقت علی خان  
  ایوب خان  
آج کا مکمل اخبار پڑھیں

کار ٹونز

گلگت بلتستان

کالم /بلاگ


     
     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ روزنامہ اوصاف محفوظ ہیں۔
Copyright © 2016 Daily Ausaf. All Rights Reserved