غذر،عوام اس جدید دور میں بھی بجلی بنیادی صحت ،پینے کا صاف پانی اور امدورفت کے سلسلے میں شدید مشکلات کا شکار
  13  ستمبر‬‮  2017     |     گلگت بلتستان

غذر(بیورو رپورٹ) ڈسٹرکٹ ہیڈ کوارٹر گاہکوچ سے چالیس کلومیٹر دوردرمدر (ڈولی )کے عوام اس جدید دور میں بھی بجلی بنیادی صحت ،پینے کا صاف پانی اور امدورفت کے سلسلے میں شدید مشکلات کا شکار ہیں گاہکوچ سے تیس کلومیٹر دور واقع اس گاؤں کے عوام کو ایک طرف بجلی کی عدم دستیابی تو دوسری طرف بنیادی صحت کی سہولتیں دستیاب نہ ہونے کی وجہ سے ان لوگوں کو سخت پرشانیوں کا سامنا کرنا پٹرتا ہے جس کی اصل وجہ دشوار گزار راستہ بتایا جاتا ہے جبکہ حکومت کی طرف سے پینے کا صاف پانی یہاں کے مکینوں کو دستیاب نہ ہونے کی وجہ یہاں کے مکینوں کو پینے کا صاف پانی کا حصول بھی مشکل ہوگیا ہے مین روڈ سے علاقہ درمدر تک خستہ حال سڑک کی وجہ سے یہاں کے عوام کو آمدورفت کے سلسلے میں سخت مشکلات کا سامنا کرنا پڑتا ہے غذر کا یہ واحد علاقہ ہے جہاں کے عوام کو تاحال بجلی فراہم نہیں کی

ہر وقت یہاں کے عوام کو بیوقوف بناکر ووٹ لینے کے بعد عوامی نمائندوں کا پانچ سال تک کوئی پتہ نہیں چلتایہاں پر موجود ڈسپنسری میں ادویات نام کی کوئی چیز موجود نہیں ہے جس کی وجہ سے معمولی مریض کو بھی گاہکوچ لے جانا پڑتا ہے گاؤں میں لوگ طرح طرح کے مسائل کا شکار ہے گاؤں کے مکینوں قیوم خان ،گل بادشاہ،محمد دین ،لال خان اورکھوترخان نے نے حکومت سے مطالبہ کیا ہے کہ درمدر کے علاقے کو فوری طور پر بجلی فراہم کیا جائے اور درمدر تک جیپ ایبل روڈ کی تعمیر کے علاوہ پینے کا صاف پانی اور یہاں کے عوام کو صحت کی بنیادی سہولتیں فراہم کی جائے لوگوں کا کہنا تھا کہ الیکشن کے دوران بلند بانگ دعوے کرنے والے ممبران کامیاب ہونے کے بعد اس علاقے کو مڑ کر بھی نہیں دیکھتے ہیں جس کا صلہ اس الیکشن میں دیا جائے گا۔


اس خبر کے بارے میں اپنی رائے دیجئے
پسند آئی
 
ٹھیک ہے
 
کوئی رائے نہیں
 
پسند ںہیں آئی
 


 سب سے زیادہ پڑھی جانے والی مقبول خبریں






آج کا مکمل اخبار پڑھیں

کار ٹونز

گلگت بلتستان

کالم /بلاگ


     
     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ روزنامہ اوصاف محفوظ ہیں۔
Copyright © 2016 Daily Ausaf. All Rights Reserved