مظفر آباد،پنجاب سے لائے جانیوالے غیر معیاری دودھ سے شہری بیمار
  11  جنوری‬‮  2017     |      کشمیر
مظفرآباد ( آن لائن) دارلحکومت مظفرآباد کے مختلف علاقوں میں قائم پنجاب سے لائے جانے والے غیر معیاری دودھ کی بھر سے شہری بیمار ہونے لگے ۔ تفصیلات کے مطابق پنجاب کے مختلف علاقوں سے لائے جانیوالا دودھ زیادہ تر مخصوص قسم کی کھاد ڈالی جاتی ہے جس سے دودھ گھاڑہ اور خراب نہیں ہوتا جبکہ ضلعی انتظامیہ کی بے بسی باہر سے دودھ لانے کی کھلی چھٹی دے رکھی ہے جو مختلف بیماریوں کے باعث عوام میں پھیلنے لگی جن میں موشن ، الٹی ، جسم پر دانے ، معدہ میں تکلیف سمیت دیگر وباعام ہوگئی ہے ڈپٹی کمشنر مظفرآباد اس پر پابندی عائد کریں تفصیلات کے مطابق دارلحکومت مظفرآباد کے مختلف علاقے چہلہ بانڈی ، لوئر پلیٹ ، گوجر ہ سمیت دیگر مقامات پر پنجاب ڈیری فارم کے نام سے دکانیں کھول رکھی ہیں جہاں سے دودھ مظفرآباد کے مقامی دودھ فروشوں سے دودھ نہیں خریدا جاتابلکہ یہ دودھ سیالکوٹ اور پنجاب کے دیگر علاقوں سے لاکر فروخت کیا جاتاہے جبکہ اس دودھ کا کوئی میڈیکل چیک اپ نہیں کیا جاتا جس سے معلوم ہوسکے دودھ کی کوالٹی کیسے ہے جبکہ زرائع کے مطابق معلوم ہو اہے کہ ا س دودھ میں کھاد استعمال کی جاتی ہے جس سے دودھ گاڑھا اور ذائقہ دار نظر آتا ہے جس کو گاہک بڑے زور و شور سے خرید کر استعمال کرتے ہیں دراصل یہ مضر صحت ہوتا ہے ضلعی انتظامیہ فوری طور پر باہر سے لائی جانے والی دودھ پر پابندی لگائیں جبکہ مقامی دودھ فروشوں کی دودھ کو مکمل چیک کرکے ا ن دکانوں پر سپلائی کرنے کی تجزیہ کار کو موثر بنائیں تاکہ دارلحکومت مظفرآباد کی عوام موضی امراض سے بچ سکے جس کے سب سے بڑے خطرات ہپٹائٹس سی کی شرخ بڑھنے کی ہے ضلعی انتظامیہ عوام کو اس موضی امراض سے بچانے کے لئے باہر سے لائے جانے والے دودھ پر فوری پابندی عائد کریں بصورت دیگر عوام احتجاج کرنے پر مجبور ہوجائے گی۔

اس خبر کے بارے میں اپنی رائے دیجئے
پسند آئی
 
ٹھیک ہے
 
کوئی رائے نہیں
 
پسند ںہیں آئی
 

رپورٹر   :  



 انٹر نیٹ کی دنیا میں سب سے زیادہ پڑھے جانے والے مضا مینں
loading...

  اوصاف سپیشل

آج کا مکمل اخبار پڑھیں

آج کا مکمل اخبار پڑھیں

کار ٹونز

کشمیر

کالم /بلاگ


     
     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ روزنامہ اوصاف محفوظ ہیں۔
Copyright © 2016 Daily Ausaf. All Rights Reserved