کشمیر بھی مجاہدین ہی آزاد کرائیں گے، حافظ محمد سعید
  11  جنوری‬‮  2017     |      کشمیر
مظفرآباد(سٹاف رپورٹر)امیرجماعۃالدعوہ پاکستان پروفیسر حافظ محمد سعید نے کہاہے کہ آزادخطہ کے لوگوں کی شرعی ذمہ داری جہاد ہے ،مقبوضہ کشمیرکی آزادی کی سب سے بڑی ذمہ داری آزادکشمیر اور پھرپاکستان کے لوگوں پر عائد ہوتی ہے ۔مسئلہ کشمیر کا حل صرف جہادہے آزادخطہ کسی حکومت نے نہیں مجاہدین نے آزادکروایا مقبوضہ کشمیربھی مجاہدین ہی آزادکروائیں گے ہم کرسی کی سیاست نہیں کرتے ،ہم دعوت کی جماعت ہیں ہم نے وہ جماعت بنانی ہے جو نبی رحمت نے بنائی قرآن وحدیث پر مبنی ، فرقہ پرستی سے بالاتر ،ہمارے مسائل کا حل اتحاد ہے ، لوگوں کو دین کی طرف بلانا ہمارافرض ہے ،فرقہ واریت کا خاتمے کے لیے اپنے اسٹیج پر سب کو بلاتے ہیں کشمیرکانفرنس کی تکلیف بھارت کو اب تک ہورہی ہے اس کو ہونی بھی چاہیے ،بھارت کو تکلیف ہوتو مقبوضہ کشمیرکے مسلمان خوش ہوتے ہیں ہمیں ان کو یہ خوشیاں لوٹانی ہیں۔شہداء کے نقش قدم پرچل کرکشمیرآزادکرواناہے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے گزشتہ جماعۃ الدعوہ کے زیراہتمام مرکزام القریٰ نلوچھی میں منعقدہ کارکنان کی تربیتی نشست سے خطاب کرتے ہوئے کیا ۔انہوں نے کہاکہ آج مقبوضہ کشمیر میں وہی حالات ہیں جو آل یاسر پرتھے کوئی ان کی مدد کوتیار نہیں جو تیارہیں انہیں دہشتگردقراردیا جاتاہے لیکن ہم نے اللہ اور اس کے رسول کے حکم کو مانتے ہوئے جہاد کرنا ہے جس طرح نبی نے مکہ فتح کیا تھا ہم ان شاء اللہ سرینگر آزاد کراکردکھائیں گے مظلومیت کو ختم کرنے کا بہترین طریقہ جہاد ہے فرقہ وارانہ ذہنیت نے بہت نقصان پہنچایاہے لوگوں کو ابھی تک جماعۃ الدعوہ کی سمجھ نہیں آئی جوقرآن و حدیث پڑھے گا اس کو جماعۃ الدعوہ کی سمجھ آجائے گی جس نے کلمہ پڑھا ہے وہ جماعت ہے تنقید کی بجائے اسوہ حسنہ اپنائیں لوگ آپ کے ساتھ ملتے جائیں گے کشمیرکی آزادی کا یہ ہی طریقہ ہے ۔جو قربانیاں کشمیر میں ہورہی ہیں اس کے نتیجے میں اللہ آزادیاں دے گا یہ میرایقین ہے جہاں شہداء کا خون گرجائے وہ علاقے غلام نہیں رہاکرتے ۔ہمیں اپنے حصے کی ذمہ داری ادا کرنی ہے جس کا ہم سے اللہ نے پوچھناہے ۔زبانی باتیں کرنے سے وہ اثر نہیں ہوتاجو کردارسے ہوتاہے دشمن جماعۃالدعوہ کے کام سے پریشان ہے ہم پرپابندیاں لگانے میں مصروف ہے مجھ پر 10لاکھ ڈالر کا انعام رکھتے ہیں مگر ہم اللہ کے نبی کے ماننے والے ہیں ان پابندیوں کی کوئی پرواہ نہیں ۔انہوں نے کہاکہ 15دسمبر کو مظفرآبا میں ہونے والی کشمیر کانفرنس پربھارتی واویلا اب بھی جاری ہے اس دن یوں لگ رہاتھا جیسے پورا آزادکشمیر بھارت کے خلاف کھڑاہوگیاہے یہ ہی بات بھارت کو اندر ہی اندر کھائے جارہی ہے شرعی حوالے سے مقبوضہ کشمیرکی آزادی کی پہلی ذمہ داری آزاد کشمیر کے لوگوں پر عائد ہوتی ہے پھر پاکستان پر ۔بھارت فلمیں بنانے میں بڑاماہر ہے سرجیکل سٹرائیک پر جھوٹی فلم بناکر اپنی ہی عوام کو بے وقوف بنارہاہے دنیا نے اس کوماننے سے انکار کردیا ہے سرجیکل سٹرائیک وہ ہے جوکشمیری مجاہدین نے دودن پہلے اکھنورجموں میں کی مجاہدین نے کیمپ حملہ کیا بھارتی فوجیوں کو نشانہ بنایا اور واپس اپنی پناگاہوں میں پہنچ گئے یہ ہوتی سرجیکل سٹرائیک ۔جس دن بھارت نے سرجیکل سٹرائیک کی اس کا کوئی فوجی صحیح سلامت واپس نہیں پہنچے گا۔اپنے گھرمیں بیٹھ کر اورفلمیں بناتے رہو۔دنیاحقیقت جان چکی ہے بھارتی فوج لڑنے کے قابل نہیں ہے فوجیوں کی خوراک توان کے افسر کھاجاتے ہیں لڑنا انہوں نے خاک ہے ۔بھارت دہشتگردملک ہے وہ دہشتگردی کرتا ہے لڑنا اس کے بس کی بات نہیں ۔حافظ محمد سعید نے کشمیرکانفرنس کے کامیاب شاندار انعقاد مولاناعبدالعزیزعلوی،حمیدالحسن سمیت تمام مسؤلین اور کارکنا ن کو شاباش دی اورانکی دل کھول کر تعریف کی ۔اس موقع پر امیرجماعۃالدعوہ آزادکشمیرمولاناعبدالعزیزعلوی،زونل مسؤل کشمیرزون حمیدالحسن ،سیف اللہ خالد سمیت ہزاروں کارکنان شریک تھے۔

اس خبر کے بارے میں اپنی رائے دیجئے
پسند آئی
 
ٹھیک ہے
 
کوئی رائے نہیں
 
پسند ںہیں آئی
 

رپورٹر   :  


 سب سے زیادہ پڑھی جانے والی مقبول خبریں






آج کا مکمل اخبار پڑھیں

کار ٹونز

کشمیر

کالم /بلاگ


     
     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ روزنامہ اوصاف محفوظ ہیں۔
Copyright © 2016 Daily Ausaf. All Rights Reserved