آزادجموں وکشمیر یونیورسٹی شعبہ اردو نے تحقیقی سرگرمیوں کاآغاز کر دیا
  20  مارچ‬‮  2017     |      کشمیر
مظفرآباد(روزنامہ اوصاف) آزادجموں وکشمیر یونی ورسٹی شعبہ اردو نے تحقیقی سرگرمیوں کاآغاز کر دیا،ملک کے ممتاز محقق ، نقاد ، ادیب سید معراج جامی کا جامعہ کشمیر شعبہ اردو میں تحقیق پر توسیعی لیکچر ،طلبہ کا بھرپور خیر مقدم ،اپنے لیکچر میں سید معراج جامی نے تحقیق کی اہمیت ،طریقہ کار اور اس کے مختلف پہلوؤ ں پر روشنی ڈالی ،اپنے خطاب میں انہوں نے کہا کہ کشمیر آکر ایسا لگا جیسے میرا خمیر یہاں سے ہی اٹھا ہے ،انہوں نے کہا کہ تحقیق کا عمل عہد آفرینش سے ہی جاری ہے ،تمام علوم اللہ کی عطا ہیں مگر تحقیق کرنا انسان کا فرض ہے ،تحقیق کے بغیر کوئی بھی عمل مکمل نہیں ،انہوں نے طلبہ کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ وقت تیزی سے بدل رہاہے ،اس قیمتی وقت کی قدر کرتے ہوئے اچھا کرنے کی کوشش کریں ،اس موقع پر سید معراج جامی نے اپنی غزلیں بھی سنائیں ،سربراہ شعبہ اردو ڈاکٹر عبدالکریم نے اس موقع پر اپنے خطاب میں کہا کہ معراج جامی تخلیق کاروں کے تخلیق کار ہیں ،اور خاموشی سے ادب کے لیے اپنے حصے کا کردار ادا کر رہے ہیں ،ہر ایک اپنا کام اسی طرح کرے تو معاشرہ خود بہ خود ٹھیک ہو جائے گا ،انہوں نے کہا کہ معراج جامی نے ادب کو روایت سے جوڑا ،پاکستان کے ادب کو ان کی شخصیت پر ہمیشہ ناز رہے گا ،ان کی جامعہ کشمیر شعبہ اردو آمد باعث اعزاز ہے ،تحقیقی سرگرمیوں کو مستقبل میں بڑھایا جائے گا، قبل ازیں فرہاد احمد فگار نے سید معراج جامی کا تفصیلی تعارف پیش کرتے ہوئے کہا کہ معراج جامی کئی کتابوں کے مصنف ہیں ،جنھوں نے ہائیکو ،سفر نامہ ،نظم ،تنقید ،تحقیق ،صحافت ،کالم نگاری ،اداریہ نگاری اور غزل میں طبع آزمائی کی۔اس موقع پر اسٹیج سیکرٹری کے فرائض سمسٹر سوم کے اسکالر افضال عالم نے سر انجام دیے جب کہ قمر الزمان قمر نے اپنی شاعری پیش کی۔

اس خبر کے بارے میں اپنی رائے دیجئے
پسند آئی
 
ٹھیک ہے
 
کوئی رائے نہیں
 
پسند ںہیں آئی
 

رپورٹر   :  


 سب سے زیادہ پڑھی جانے والی مقبول خبریں






آج کا مکمل اخبار پڑھیں

کار ٹونز

کشمیر

کالم /بلاگ


     
     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ روزنامہ اوصاف محفوظ ہیں۔
Copyright © 2016 Daily Ausaf. All Rights Reserved