تحصیل بار کھوئی رٹہ کا احتجاج جاری،راجہ ناظم ایڈووکیٹ کی بازیابی تک احتجاج رکھنے کا اعلان
  17  اپریل‬‮  2017     |      کشمیر

کھوئی رٹہ (آن لائن ) تحصیل بار کھوئی رٹہ کا احتجاج پانچویں روز بھی جاری ، عدالتی کارروائی کا مکمل بائیکاٹ، راجہ ناظم ایڈووکیٹ کی بازیابی تک احتجاج رکھنے کا اعلان،واقع کی ایف آئی تک درج نہ ہو سکی ،حکومتی نمائندوں کی خاموشی لمحہ فکریہ ہے ذمہ داران واقع کا نوٹس لیں وکلا برادری کا مطالبہ، سول سوسائٹی، سیاسی و سماجی رہنما ؤں کا وکلا ء کی احتجاج تحریک میں بھرپور حصہ لینے کا فیصلہ، تفصیلات کے مطابق ممبر تحصیل بار کھوئی رٹہ راجہ ناظم ایڈووکیٹ کی پر اسرار گمشدگی پرتحصیل بار کھوئی رٹہ کے عہدیداران و ممبران نے آج پانچویں روز بھی عدالتوں کا بائیکات کیا اور راجہ ناظم ایڈووکیٹ کی بازیابی تک احتجاج جاری رکھنے کا فیصلہ کیا ہے راجہ ناظم ایڈووکیٹ 10اپریل کو گجرانوالہ کاموں کی سے پر اسرار طور پر گمشدہ ہو گئے تھے آج 9روز گزرنے کے باوجود بھی کوئی سراغ نہ ملا سکا ۔ تحصیل بار کھوئی رٹہ کے عہدیداران و ممبران نے آج پانچویں روز بھی احتجاج جاری رکھتے ہوئے احتجاج میں بھرپور شرکت کی ۔ احتجاج سے صدر بار تحصیل کھوئی رٹہ عارف ایڈووکیٹ، شکیل رضا ایڈووکیٹ ،چوہدری بشیر ناز ایڈووکیٹ، چوہدری جاوید شاہد ایڈووکیٹ، وسیم مصطفائی ایڈووکیٹ، اکمل چوہان ایڈووکیٹ، جواد خان ایڈووکیٹ، راجہ ضمیر ایڈووکیٹ، نعیمہ اعظم ایڈووکیٹ، راجہ پرویز ایڈووکیٹ،راجہ بنارس ایڈووکیٹ، چوہدری فاروق ایڈووکیٹ، میاں عثمان ایڈووکیٹ، چوہدری پرویز ایڈووکیٹ، چوہدری شہزاد ایڈووکیٹ، چوہدری ظفر ایڈووکیٹ اور دیگر نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ راجہ ناظم ایڈووکیٹ کی پر اسرار گمشدگی کو9روز گز چکے ہیں مگر آج تک ایف آئی آر تک درج نہیں ہو سکی وزیر اعظم پاکستان میاں محمد نواز شریف، وزیر اعلیٰ پنجاب، وزیر داخلہ چوہدری، وزیر اعظم آزاد کشمیر راجہ فاروق حیدر خان ، صدر آزاد کشمیر سردار مسعود خان، وزیر برقیات نوٹس لیں اور چیف جسٹس پاکستان اور چیف جسٹس آزاد کشمیر اس معاملہ پر سوموٹو ایکشن لیں ۔ مقررین نے خطاب کرتے ہوئے مزید کہا کہ اس سے قبل بھی راجہ ناظم ایڈووکیٹ کے بڑے راجہ انور 15سال قبل گجرانوالہ میں گم ہو گئے تھے جن کا تاحال پتہ نہ چلا سکا اور اب راجہ ناظم ایڈووکیٹ کا غائب ہو جانا تشویش کا باعث ہے اور اداروں کی کمزوری ہے لاء اینڈآرڈر والے اپنے اندر جان ڈالیں۔ انھوں نے کہا کہ ہم احتجاجی سلسلہ کو پورے آزاد کشمیر اور پاکستان میں شروع کر یں گے جس کی ذمہ دار حکومت پاکستان اور حکومت آزاد کشمیر ہو گی۔ احتجاج میں سیکرٹری جنرل بشیر ناز ایڈووکیٹ، سابق وائس چےئرمین آزاد جموں و کشمیر راجہ صغیر خان ایڈووکیٹ، سابق صدر ڈسٹرکٹ بار راجہ خورشید خان، سابق صدر ینگ لائزر محمد فاروق ایڈووکیٹ،عبدالقیوم شاکر ایڈووکیٹ، شہزاد چوہدری ایڈووکیٹ، میاں محمد عثمان ایڈووکیٹ، راجہ شاداب سکندر ایڈووکیٹ، سابق ڈسٹرکٹ بار کوٹلی چوہدری محبوب الہی ایڈووکیٹ ، وسیم کفایت ایڈووکیٹ،راجہ پرویز ایڈووکیٹ، محمد وسیم مصطفائی ایڈووکیٹ،راجہ عبد القیوم ایڈووکیٹ، خراجہ نثار ایڈووکیٹ، چوہدری سجاد ایڈووکیٹ، بنارس زیب چوہدری، چوہدری سجاد ایڈووکیٹ، سجاد یوسف ایڈووکیٹ، راجہ محبوب ایڈووکیٹ، راجہ نظر ایڈووکیٹ، چوہدری پرویز ایڈووکیٹ، جاوید شاہد ایڈووکیٹ، چوہدری جاوید ایڈووکیٹ، جابر شاد ایڈووکیٹ، زبیر قیوم ایڈووکیٹ، یاسر مشاق ایڈووکیٹ، نثار ایڈووکیٹ، راجہ ممنون ایڈووکیٹ، چوہدری اکمل محمود چوہان ایڈووکیٹ، عثمان قریشی ایڈووکیٹ، زاہد بوستان ایڈووکیٹ، راجہ نوید ایڈووکیٹ، راجہ نوید رفیق ایڈووکیٹ اور راجہ وقاص ایڈووکیٹ، راجہ اظہر ظفر ایڈووکیٹ، مرزا ابرار الیاس جرال ایڈووکیٹ، چوہدری بشارت ایڈووکیٹ، راجہ عابد ایڈووکیٹ، رخسار احمد چوہدری ایڈووکیٹ، جواد خان ایڈووکیٹ، چوہدری یاسر مشتاق ایڈووکیٹ اور دیگر ممبران کی کثیر تعدادنے شرکت کی۔ ادھر کھوئی رٹہ سول سوسائٹی سمیت سیاسی و سماجی رہنماؤں نے وکلاء کی احتجاج تحریک میں بھرپور شمولیت کا فیصلہ کیا ہے


اس خبر کے بارے میں اپنی رائے دیجئے
پسند آئی
 
ٹھیک ہے
 
کوئی رائے نہیں
 
پسند ںہیں آئی
 
رپورٹر   :  


 سب سے زیادہ پڑھی جانے والی مقبول خبریں






آج کا مکمل اخبار پڑھیں

کار ٹونز

کشمیر

کالم /بلاگ


     
     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ روزنامہ اوصاف محفوظ ہیں۔
Copyright © 2016 Daily Ausaf. All Rights Reserved