سرینگر،مقبوضہ وادی اور جموں خطے کے علاقو ں میں مکمل ہڑتال کی گئی
  12  اگست‬‮  2017     |      کشمیر

سرینگر ۔ (اے پی پی) مقبوضہ کشمیر میں مسلمانوں کی اکثریت کو اقلیت میں تبدیل کرنے کی غرض سے بھارتی آئین کے آرٹیکل 35اے کی منسوخی کے بھارتی منصوبوں کے خلاف ہفتہ کومقبوضہ علاقے میں مکمل ہڑتال کی گئی ۔کشمیر میڈیاسروس کے مطابق ہڑتال کی کال سید علی گیلانی ، میر واعظ عمر فاروق اور محمد یاسین ملک پر مشتمل مشترکہ مزاحمتی قیادت نے دی تھی جبکہ تاجروں نے اسکی حمایت کی تھی۔ ہڑتال کا مقصد بھارتی فورسز کے ہاتھو ں نہتے کشمیریوں کے قتل عام اور بھارتی تحقیقاتی ادارے ’نیشنل انویسٹی گیشن ایجنسی‘ اور’انفورسمنٹ ڈائریکٹوریٹ‘ کی طرف سے حریت رہنماؤں کی گرفتاری کے خلاف بھی احتجاج کر نا تھا۔

مقبوضہ علاقے میں تمام دکانیں، کاروباری مراکز اور تعلیمی ادارے بند رہے جبکہ سڑکوں پر ٹریفک معطل تھی۔ کٹھ پتلی انتظامیہ نے لوگوں کو بھارت مخالف مظاہروں سے روکنے کے لیے مقبوضہ وادی بھر میں بڑی تعداد میں بھارتی فوجی اور پولیس اہلکار تعینات کر دیے تھے۔ تمام حریت قیادت کو بدستورگھروں ، تھانوں اور جیلوں میں نظر بندرکھا گیا ۔ انتظامیہ نے وادی میں ریل سروس بھی معطل کر دی تھی جبکہ کشمیر یونیورسٹی اور بورڈ آف سکول ایجوکیشن نے آج ہونے والے تمام امتحانات ملتوی کر دیے ۔ دریں اثنا مقبوضہ کشمیر میں مسلمانوں کی اکثریت کو اقلیت میں تبدیل کرنے کی غرض سے بھارتی آئین کے آرٹیکل 35 اے کی منسوخی کے بھارتی منصوبوں کے خلاف جموں خطے کے مختلف علاقوں میں بھی ہفتے کو مکمل ہڑتال کی گئی ۔سید علی گیلانی، میر واعظ عمر فاروق اور محمد یاسین ملک پر مشتمل مشترکہ مزاحمتی قیادت کے علاوہ انجمن اسلامیہ بھدرواہ، مرکزی سیرت کمیٹی ڈوڈہ، مجلس شوریٰ کشتواڑ، انجمن اسلامیہ گندوہ اور مسجد کمیٹی ٹھاٹھری نے بھی جموں کے علاقوں میں ہڑتال کی کال دی تھی۔ بھدرواہ، ڈوڈہ، کشتواڑ اور دیگر علاقوں میں تمام دکانیں اور کاروباری مراکز بند رہے جبکہ سڑکوں پر ٹریفک معطل تھی۔


اس خبر کے بارے میں اپنی رائے دیجئے
پسند آئی
 
ٹھیک ہے
 
کوئی رائے نہیں
 
پسند ںہیں آئی
 


 سب سے زیادہ پڑھی جانے والی مقبول خبریں





  اوصاف سپیشل

آج کا مکمل اخبار پڑھیں

آج کا مکمل اخبار پڑھیں

کار ٹونز

کشمیر

کالم /بلاگ


     
     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ روزنامہ اوصاف محفوظ ہیں۔
Copyright © 2016 Daily Ausaf. All Rights Reserved