گو نواز گو کا نعرہ انتخابی مہم کا سب سے بڑا نعرہ بننے جا رہا ہے،شیخ رشید
  21  اپریل‬‮  2017     |     اہم خبریں

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک) عوامی مسلم لیگ کے سربراہ شیخ رشید نے کہا ہے کہ وزیر اعظم نواز شریف کا مقام سپریم کورٹ کے فیصلے کے بعد حکمران جیسا نہیں رہا ۔ اب نواز شریف کو استعفی دے دینا چاہئے ۔ مٹھائی کھانے والے ساٹھ دن بعد شام غریباں منائیں گے ۔ سینئر ججز نے قطری خط کو کچرے کی ٹوکری میں پھینک دیا ۔ ان خیالات کا اظہار عوامی مسلم لیگ کے سربراہ شیخ رشید نے مارننگ شو میں کیا ۔ انہوں نے کہاکہ پانامہ کیس کے فیصلے کے بعد تمام اپوزیشن جماعتوں کے ساتھ رابطے میں ہیں سراج الحق کے ساتھ بھی بات ہوئی ہے ان کی والدہ بیمار ہیں جس کی وجہ سے وہ لال حویلی نہیں آ سکے انہوں نے کہا کہ 2017 حکومت کا حتمی سال ہے اسی میں سب کچھ ہونا ہے کیونکہ اب ووٹر کو سمجھ آ گئی ہے کہ اس وقت چور اور چوکیدار کون ہے ۔شیخ رشید نے دعویٰ کیا ہے کہ ساری سیاسی جماعتیں الیکشن کے عمل میں داخل ہو چکی ہیں اور گو نواز گو کا نعرہ انتخابی مہم کا سب سے بڑا نعرہ بننے جا رہا ہے ۔شیخ رشید نے کہا کہ اپوزیشن جماعتوں کا کام حکومت پر تنقید کرنا ہوتا ہے اگر نواز شریف استعفیٰ نہ بھی دیں تو پھر بھی ہم اسی تنخواہ پر کام کرتے رہیں گے ۔لیکن ہو سکتا ہے کہ بجٹ کے بعد نواز شریف الیکشن کی طرف چلے جائیں ۔ایک سوال کے جواب میں شیخ رشید نے کہا کہ وزیر اعظم کا مقام اب حکمراں جیسا نہیں رہا انہیں اخلاقی طور پر استعفیٰ دے دینا چاہئے اور تمام اپوزیشن جماعتوں کو بھی متحد ہو کر تحریک چلانی چاہئے کہ وزیر اعظم کی ساکھ اور مقام پہلا جیسا نہیں رہا ۔ شیخ رشید نے شکر ادا کرتے ہوئے کہا کہ پیپلزپارٹی میں بھی جان پڑ گئی ہے پہلے تو وہ پانامہ اور نیوز لیکس پر بات بھی نہیں کرتے تھے لیکن اب وہ بھی اس معاملے میں حصہ لے رہے ہیں ۔ شیخ رشید نے کہا کہ پانامہ کیس ابھی ختم نہیں ہوا بلکہ جاری رہے گا مٹھائی کھانے والے ساٹھ دن بعد شام غریباں منائیں گے ۔پانامہ کیس میں دو ججز ادھر اور تین ادھر ہو گئے لیکن دو سینئر ججز جنہوں نے مستقبل میں چیف جسٹس بننا ہے کہ انہوں نے واضح کہا کہ وزیر اعظم صادق اور امین نہیں رہے اور نواز شریف کے تمام قطری خط بھی کچرے کی ٹوکری میں پھینک دیئے ۔


اس خبر کے بارے میں اپنی رائے دیجئے
پسند آئی
50%
ٹھیک ہے
50%
کوئی رائے نہیں
 
پسند ںہیں آئی
 


 سب سے زیادہ پڑھی جانے والی مقبول خبریں






آج کا مکمل اخبار پڑھیں

کار ٹونز

اہم خبریں

کالم /بلاگ


     
     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ روزنامہ اوصاف محفوظ ہیں۔
Copyright © 2016 Daily Ausaf. All Rights Reserved