رمضان کے آخری عشرہ میں شاپنگ کم عبادت زیادہ کریں،ڈاکٹرعبدالرب
  19  جون‬‮  2017     |     یورپ
برمنگھم (پ ر) سخت گرمی میں روزے اﷲ کی طرف سے آزمائش ہوسکتے ہیں لہٰذا ان دنوں بلا وجہ بازاروں میں نہ گھومیں' مساجد یا گھروں میں عبادات میں وقت صرف کریں' سخت گرمی میں خواتین اور بچوں کا شاپنگ میں مصروف رہنا مناسب نہیں ہے ان خیالات کااظہارڈاکٹر عبدالرب ثاقب نے کیا انہوں نے مزیدکہاکہ عام طور پر رمضان المبارک میں سخت گرمی کا شکوہ ہوتا ہے اور ان دنوں لمبے روزوں کے ساتھ گرمی ایک آزمائش ہوسکتی ہے لہٰذا ان دنوں کو صبر و شکر اور عبادت میں گزاریں اس لئے کہ رمضان کے آخری دن اجر و ثواب کو لوٹنے کے دن ہوتے ہیں مگر ان ہی قیمتی دنوں کو مسلمان شاپنگ کی نذر کردیتے ہیں ضرورت کی حد تک شاپنگ کریں مگر زیادہ وقت عبادت میں یا آرام میں گزاریں تاکہ ان کی راتوں میں زیادہ جاگ کر عبادت کرسکیں اﷲ کے نبی صلی اﷲ علیہ وسلم آخری عشرہ ک پانچ طاق راتوں اکیسویں' بائیسویں' تئیسویں' پچیسویں' ستائیسویں' انتیسویں رات کو پوری طرح جاگ کر عبادت کرتے اور اپنے اہل و عیال کو بھی اس کی ترغیب دیتے رمضان المبارک کی ان پانچ راتوں کے علاوہ احادیث صحیحہ میں کسی اور رات کو پوری طرح جاگ کر عبادت کرنے کا ذکر نہیں ہے۔ بعض لوگ شب برات اور شب معراج میں رتجگا کرتے ہیں یہ بدعت ہے اﷲ کے نبی صلی اﷲ علیہ وسلم اور حضرات صحابہ و تابعین و محدثین و فقہا اور آئمہ سے اس کا ثبوت نہیں ہے اﷲ کریم رمضان المبارک کے بقیہ دنوں اور اس کی بقیہ مقدس راتوں کی عبادت کرنے کی ہمیں توفیق رفیق فرمائے اور مسلمانوں کو صراط مستقیم کی ہدایت عطا فرمائے۔

اس خبر کے بارے میں اپنی رائے دیجئے
پسند آئی
 
ٹھیک ہے
 
کوئی رائے نہیں
 
پسند ںہیں آئی
 




  اوصاف سپیشل

آج کا مکمل اخبار پڑھیں

آج کا مکمل اخبار پڑھیں

کار ٹونز

اہم خبریں

کالم /بلاگ


     
     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ روزنامہ اوصاف محفوظ ہیں۔
Copyright © 2016 Daily Ausaf. All Rights Reserved