تحریک انصاف ہی ملک کے روشن مستقبل کی ضامن ہے،ملک نعیم اختر
  13  اگست‬‮  2017     |     یورپ

وٹفورڈ (مسرت اقبال) تحریک انصاف ہی ملک و قوم کو روشن مستقبل کی ضمانت دے سکتی ہے عوام کی اکثریت تحریک انصاف کے ساتھ ہے' تحریک انصاف کا منشور ملک سے سرمایہ داری' وڈیرہ شاہی' دہشت گردی' گن کلچر' غربت اور ناانصافی کے فرسودہ نظام کے خاتمے میں اہم کردار ادا کرے گی۔ ملک کی نئی نوجوان نسل روشن مستقبل کی خاطر جدوجہد کررہی ہے فرسودہ نظام جمہوریت نے نواز شریف اور پی پی پی قیاددت کو مسترد کردیاہے تحریک انصاف کے سربراہ عمران خان ہی قوم کی قیادت کرسکتے ہیں۔ ان خیالات کا اظہار امریکہ کی ریاست ٹیکساس کے شہر ڈیلاس فورتھ دڈرتھ سے آئے ہوئے پی ٹی آئی کے مرکزی ایگزیکٹو ممبر ملک نعیم اختر نے وٹفورڈ میں میڈیا کے نمائندوں سے بات چیت کرتے ہوئے کیا۔ اس موقع پر تحریک انصاف وٹفورڈ برانچ کے صدر چوہدری محمد شاہپال ' چوہدری محمد افسر' امجد امین بوبی' پروفیسر لیاقت علی خان ' ریٹائرڈ بریگیڈیئر سلیمان خان' شیراز احمد دیگر افراد موجود تھے۔ ملک نعیم اختر نے کہا کہ ملک میں جمہوریت کے نام پر عوام کا استحصال کیا جارہاہے پانامہ کیس میں اعلیٰ عدلیہ نے لوٹ کھسوٹ کے ان سرمایہ داروں ' وڈیروں' جاگیر داروں اور شیشے کے محلات میں رہنے والوں کو بے نقاب کیا ہے اب یہ جمہوریت کشی' انسانی حقوق کے نام نہاد دعویدار نواز شریف اور ان کے ہمنوا اپنی غلطیوں پر پردہ ڈالنے کے لئے جی ٹی روڈ پر پاور شو کا مظاہرہ کررہے ہیں اور نئے انقلاب کے جھوٹے دعوے کررہے ہیں۔ عوام ان کو مسترد کرچکے ہیں اب یہ نیب میں ریفرنس کیسوں کا سامنا کرنے کے لئے تیاری کریں۔ ملک نعیم اختر نے کہا کہ عوام اب بیدار ہوچکے ہیں وہ ان سرمایہ داروں' جاگیر داروں سے نجات چاہتے ہیں جنہوں نے جمہوریت کے نام پر ملک کے قومی خزانے پر ہاتھ صاف کیا آج پاکستان کا بچہ بچہ غیر ملکی قرضوں میں ڈوبا ہوا ہے۔ پورا ملک لوڈشیڈنگ کا شکار ہے جس ملک میں پن بجلی نہیں وہاں سی پیک کا عظیم منصوبہ کس طرح کامیاب ہوگا۔ انہوں نے کہا کہ یہ بہت بڑا المیہ ہے موجودہ اور سابقہ حکومتوں نے بھاشا ڈیم اور کالا باغ ڈیم کے نام پر عالمی بینک سے اربوں روپے لئے مگر تاحال ایک بھی ڈیم تعمیر نہیں کراسکے ہمارے مقابلے میں بھارت ہمارے دریائوں پر ڈیم تعمیر کرکے بجلی کی لوڈشیڈنگ اور اپنی انڈسٹری کو چلانے کے لئے کام کررہا ہے آخر اس پر مسلم لیگ گورنمنٹ نے عالمی ثالثی بینک میں یہ مسئلہ کیوں نہیں اٹھایا دریائوں سمیت کشمیر ایک متنازعہ ریاست ہے عالمی بینک بھارت کو پابند کرے کہ مسئلہ کشمیر حل ہونے تک بھارت کشمیر کے دریائوں پر مزید ڈیم تعمیر نہیں کرسکتا۔ ملک نعیم اختر نے کہا کہ عالمی ثالثی بینک پر ذمہ داری عائد ہوتی ہے کہ وہ سندھ طاس معاہدے کے حوالے سے پاکستان بھارت اور کشمیری قیادت کا سہ فریقی اجلاس فوری بلائے سندھ طاس معاہدہ اور مقبوضہ کشمیر میں مظلوم کشمیریوں کے خلاف بھارتی افواج کی ریاستی دہشت گردی ایک ساتھ نہیں چل سکتے۔ انہوں نے کہا کہ بھارت پہلے مسئلہ کشمیر حل کرے ملک نعیم اختر نے وزیراعظم پاکستان شاہد خاقان عباسی' وزیر خارجہ خواجہ آصف سے بھی مطالبہ کیا کہ اگلے ماہ ستمبر میں ہونے والے سندھ طاس معاہدہ کے تحت ہونے والے پاک بھارت مذاکرات میں کشمیری قیادت کا وفد بھی ان مذاکرات میں شامل کرے کیونکہ کشمیری مسئلہ کشمیر کے بنیادی فریق ہیں کیونکہ اس طرح کے یک طرفہ معاہدوں سے یہ تاثر ملتا ہے کہ پاکستان اور بھارت اقوام متحدہ کی قراردادوں کو نظر انداز کرکے اپنے مفادات کو ترجیح دے رہے ہیں جو کہ کشمیری عوام کے مطالبہ حق خود ارادیت کے خلاف ہے لہٰذا عالمی ثالثی بینک پر ذمہ داری عائد ہوتی ہے کہ وہ کشمیری عوام کی رائے کا احترام کرے۔


اس خبر کے بارے میں اپنی رائے دیجئے
پسند آئی
100%
ٹھیک ہے
 
کوئی رائے نہیں
 
پسند ںہیں آئی
 


 سب سے زیادہ پڑھی جانے والی مقبول خبریں





  اوصاف سپیشل

آج کا مکمل اخبار پڑھیں

  قائد اعظم محمد علی جناح  
  اسکندر مرزا  
  لیاقت علی خان  
  ایوب خان  
آج کا مکمل اخبار پڑھیں

کار ٹونز

اہم خبریں

کالم /بلاگ


     
     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ روزنامہ اوصاف محفوظ ہیں۔
Copyright © 2016 Daily Ausaf. All Rights Reserved