سوشل میڈیا پر عاصمہ جہانگیر کیخلاف مہم نہ چلائیں، اللہ سب کو ہدایت دے، جسٹس ہائی کورٹ
  14  ستمبر‬‮  2017     |     پاکستان

اسلام آباد(روز نامہ اوصاف )اسلام آباد ہائی کورٹ کے جسٹس شوکت عزیز صدیقی کا کہنا ہے کہ جس کسی نے بھی توہین رسالت کی وہ قانون کے شکنجے سے نہیں بچ سکتا اور خبر بیچنے کے لئے ناموس رسالت بیچنے کی ہرگز اجازت نہیں دی جا سکتی، ٹی وی والوں کو تو یہ بھی برا لگا کہ آرڈر لکھواتے ہوئے جج کے آنسو کیوں بہے، کچھ لوگ اس کو مختلف زاویے سے دیکھ رہے ہیں، اللہ سب کو ہدایت دے لیکن اپنا ایمان بیچنے والوں کوناموس بیچنے کی اجازت نہیں دی جا سکتی،عاصمہ جہانگیرنے مجھے موذن یا خطیب کہا یہ میر ے لیے اعزاز کی بات ہے۔ عوام سے اپیل ہے کہ اگر گستاخانہ عمل کسی کے علم میں ہو تو ایف آئی اے کو آگاہ کر کے تعاون کیا جائے۔ ٹی وی والوں کو تو

یہ بھی برا لگا کہ آرڈر لکھواتے ہوئے جج کے آنسو کیوں بہے، اللہ سب کو ہدایت دے۔ آخری فیصلہ لکھنے کیلئے علما، صحافیوں اور وکلا سمیت نقادوں سے بھی رائے لی جائے گی۔


اس خبر کے بارے میں اپنی رائے دیجئے
پسند آئی
100%
ٹھیک ہے
 
کوئی رائے نہیں
 
پسند ںہیں آئی
 


 سب سے زیادہ پڑھی جانے والی مقبول خبریں





  اوصاف سپیشل

آج کا مکمل اخبار پڑھیں

آج کا مکمل اخبار پڑھیں

کار ٹونز

اہم خبریں

کالم /بلاگ


     
     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ روزنامہ اوصاف محفوظ ہیں۔
Copyright © 2016 Daily Ausaf. All Rights Reserved