پانامہ کیس کا فیصلہ نواز شریف کیخلاف آیا تو حکومت کی چھٹی ہوجائے گی،سنیئرتجزیہ نگار
  15  فروری‬‮  2017     |     پاکستان
اسلام آباد ( روزنامہ اوصاف ) معروف صحافی اور تجزیہ کار سہیل وڑائچ نے پانامہ لیکس کیس سے متعلق بات کرتے ہوئے کہا کہ مسلم لیگ ن پانامہ کیس میں آنے والے ہر ممکنہ فیصلے کے لیے تیاری کر رکھی ہے ۔انہوں نے کہا کہ مسلم لیگ ن کے لیے سب سے بُرا فیصلہ جو پانامہ کیس میں آ سکتا ہے وہ یہ ہے کہ مریم نواز کو کمپنیوں کا بینیفیشل آنر قرار دے دیا جائے۔ تفصیلات کے مطابق نجی ٹی وی چینل کے ایک پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے سہیل وڑائچ نے کہا کہ پانامہ کیس میں فیصلہ تو ججز نے کرنا ہے ،ہم لا علم ہیں۔یہ تمام مفروضے ہیں۔ وزیر اعظم نے اپنے قریبی رفقا کے ساتھ مشاورت میں ان آپشنز پر بات چیت کی ہے ۔سہیل وڑائچ نے بتایا کہ اگر پانامہ کیس میں وزیر اعظم نواز شریف کے خلاف فیصلہ آ گیا تومیاں صاحب نامز د وزیر اعظم کو سپورٹ کر کے خود رائے ونڈ میں بیٹھ جائیں گے جس کے بعد نواز شریف صاحب الیکشن مہم کی سربراہی کریں گے جس کی انہیں اُمید ہے کہ آئندہ الیکشن میں بھی کامیابی حاصل کریں گے۔ سہیل وڑائچ نے کہا کہ نواز شریف رائے ونڈ بیٹھنے کے بعد وہاں سے حکومت چلائیں گے

اس خبر کے بارے میں اپنی رائے دیجئے
پسند آئی
52%
ٹھیک ہے
19%
کوئی رائے نہیں
5%
پسند ںہیں آئی
24%



 سب سے زیادہ پڑھی جانے والی مقبول خبریں






آج کا مکمل اخبار پڑھیں

کار ٹونز

پاکستان

کالم /بلاگ


     
     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ روزنامہ اوصاف محفوظ ہیں۔
Copyright © 2016 Daily Ausaf. All Rights Reserved