مہمند ایجنسی میں چھ خودکش حملہ آوروں کے داخلے کی اطلاع، کرفیو نافذ
  19  مئی‬‮  2017     |     پاکستان
غلنئی/پشاور(مانیٹرنگ ڈیسک )مہمند ایجنسی میں چھ خودکش حملہ آوروں کے داخلے کی اطلاع، کرفیو نافذ ، تمام تعلیمی ادارے، دفاتر اور بازار بند ہیں اور نقل و حرکت پر مکمل پابندی ،ادھرپشاور کے علاقے داد و¿زئی میں یکے بعد دیگرے تین دھماکے ، ایک گھر کو شدید نقصان پہنچا ، کوئی جانی نقصان نہیں ہوا ۔میڈیارپورٹ کے مطابق پولیٹیکل انتظامیہ کے ایک افسر نے نام ظاہر نہ کرنے کی شرط پر بتایا کہ ایجنسی میں چھ خودکش حملہ آوروں کے داخلے کی اطلاع پر کسی بھی ناخوشگوار واقعے سے بچنے کے لیے پوری ایجنسی میں کرفیو لگا دیا گیا اور ایجنسی اس وقت شدید سیکورٹی خطرات سے دوچار ہے۔ کرفیو کے نفاذ کے بعد ایجنسی میں تمام تعلیمی ادارے، دفاتر اور بازار بند ہیں اور نقل و حرکت پر مکمل پابندی ہے۔ ایک سیکورٹی اہلکار نے بتایا کہا کہ انھیں کسی بھی مشکوک حرکت پر گولی مارنے کے احکامات جاری کیے گئے ہیں۔ علاوہ ازیں مہمند ایجنسی کی تحصیل حلیمزئے میں شدت پسندوں نے رات کی تاریکی میں ایک سیکورٹی اہلکار کے گھر پر ہینڈ گرنیڈ بھی پھینکے، تاہم واقعے میں کسی جانی نقصان کی اطلاع نہیں ملی۔ واضح رہے کہ مہمند ایجنسی میں گزشتہ کئی مہینوں سے حالات انتہائی کشیدہ ہیں اور متعدد مرتبہ یہاں سیکورٹی فورسز اور امن کمیٹی کے سربراہوں کو نشانہ بنایا جاچکا ہے۔ پاک افغان سرحد پر ان قبائلی علاقوں میں فوج متعدد آپریشنز کر چکی ہے جس کے بعد یہاں سیکیورٹی صورتحال بہتر کرنے کا دعوی کیا جاتا ہے۔ مہمند ایجنسی کے ساتھ واقع خیبر ایجنسی میں گذشتہ 2 برس میں 2 آپریشن خیبر-ون اور خیبر-ٹو کیے گئے جبکہ شمالی وزیر ستان میں جون 2014 سے آپریشن ضرب عضب جاری ہے۔ ماضی میں مہمند ایجنسی دہشت گرد تنظیم کالعدم جماعت الحرار کا گڑھ رہا ہے اور یہاں سیکورٹی فورسز کی جانب سے جماعت الحرار کے سہولت کاروں کے خلاف گھیرا تنگ کیا جارہا ہے۔دوسری جانب پشاورکے علاقے دادو¿زئی میں جمعہ کی صبح سویرے بارودی موادکے تین دھماکوں سے ایک گھر کو شدید نقصان پہنچا تاہم کوئی جانی نقصان نہیں ہوا۔ دوسرے دھماکے میں گھر سے کچھ فاصلے پر کھڑی گاڑی کو نشانہ بنایا گیا جبکہ تیسرے دھماکے جائے حادثے پر آنے والی پولیس موبائل کے گزرنے کے کچھ دیر بعد ہوا جس کے باعث پولیس اہلکار محفوظ رہے۔ تینوں بم دھماکوں میں کوئی جانی نقصان نہیں ہوا ۔ بم ڈسپوزل اسکواڈ کے مطابق تینوں بم دیسی ساختہ تھے ۔ حکام نے باردوی مواد کے نمونے حاصل کرکے تفتیش شروع کردی تاہم ابھی تک کوئی گرفتاری عمل میں نہیں آئی۔

اس خبر کے بارے میں اپنی رائے دیجئے
پسند آئی
100%
ٹھیک ہے
 
کوئی رائے نہیں
 
پسند ںہیں آئی
 



 سب سے زیادہ پڑھی جانے والی مقبول خبریں






آج کا مکمل اخبار پڑھیں

کار ٹونز

پاکستان

کالم /بلاگ


     
     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ روزنامہ اوصاف محفوظ ہیں۔
Copyright © 2016 Daily Ausaf. All Rights Reserved