پیرس ‘کشتی نما جمنازیم لوگوں کی توجہ کا مرکز بن گیا
  4  جنوری‬‮  2017     |     سائنس/صحت
پیرس(روزنامہ اوصاف) اطالوی کمپنی نے لوگوں کو ورزش کی رغبت دلانے کے لیے ایک انوکھی کشتی تیار کی ہے جو ان کی جسمانی مشقت سے آگے بڑھتی ہے۔اس خوبصورت کشتی کو پیرس کے قریب دریائے سَین میں آزمایا جائے گا۔ یہ شیشے میں بند ایک چھوٹا سا جمنازیم ہے جس کے اندر ورزشی سامان ہے، مثلاً یہ ٹریڈ مل اور سائیکل وغیرہ کو چلانے سے کسی کشتی کی طرح آگے بڑھتا ہے جب کہ اس کا مقصد لوگوں میں ورزش کے متعلق دلچسپی پیدا کرنا ہے۔کشتی 65 فٹ لمبی ہے جس میں ایک وقت میں 45 افراد آسکتے ہیں۔ اسے دریائی جمنازیم کہا گیا ہے جو انسانی قوت مثلاً ورزشی سائیکل چلانے سے آگے بڑھتا ہے۔ کمپنی کے مطابق اس میں لوگ اپنی جسمانی قوت سے کشتی کو آگے لے جاتے ہیں اور لوگ اسے خود آگے بڑھتا ہوا دیکھ سکتے ہیں۔کمپنی کے مطابق یہ ایک منفرد احساس ہے کہ لوگ اسے اپنی قوت سے دھکیلتے ہیں اور اگر مطلوبہ تعداد میں لوگ اس پر سوار نہ ہوں گے تو کشتی نما جمنازیم قابلِ تجدید توانائی مثلاً سورج کی روشنی سے آگے بڑھے گا۔

اس خبر کے بارے میں اپنی رائے دیجئے
پسند آئی
 
ٹھیک ہے
 
کوئی رائے نہیں
 
پسند ںہیں آئی
 



 سب سے زیادہ پڑھی جانے والی مقبول خبریں






آج کا مکمل اخبار پڑھیں

کار ٹونز

سائنس/صحت

کالم /بلاگ


     
     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ روزنامہ اوصاف محفوظ ہیں۔
Copyright © 2016 Daily Ausaf. All Rights Reserved