آسٹریلیا میں شارک مچھلی کے حملے میں نوجوان لڑکی جان سے ہاتھ دھوبیٹی
  20  اپریل‬‮  2017     |     سائنس/صحت
سڈنی ( ویب ڈیسک)مغربی آسٹریلیا میں ایک 17 سالہ لڑکی سرفنگ کے دوران شارک کے حملے میں ہلاک ہو گئی ہے۔پولیس کے مطابق پیر کو شام چار بجے جب لڑکی کو ان کے والد نے سمندر سے نکالا تو وہ شدید طور پر زخمی تھی اوربعد میں ہسپتال میں ان کی موت ہو گئی۔خیال رہے کہ گذشتہ ایک سال میں مغربی آسٹریلیا میں شارک کا یہ تیسرا حملہ ہے جس میں لوگوں کی موت ہوگئی ہے۔اسی علاقے میں آخری بار شارک کا حملہ 2014 میں ہوا تھا جس میں ایک شخص کو اپنے بازوؤں سے ہاتھ دھونا پڑا تھا۔ایک پیشہ ور ماہی گیر نیول مانسٹیڈ نے کہا کہ اب وہ وہاں سرفنگ نہیں کریں گے۔ویسٹ آسٹریلین نامی اخبار کو انھوں نے بتایا کہ اسی جگہ پر اس طرح کا یہ دوسرا واقعہ ہے۔ ’اس میں میرا بیٹا بھی شامل ہو سکتا تھا۔بیچ کو کم از کم 48 گھنٹوں کے لیے بند کر دیا گیا ہے اور اس دوران حکام اس واقعے کی جانچ کر رہے ہیں۔

اس خبر کے بارے میں اپنی رائے دیجئے
پسند آئی
 
ٹھیک ہے
 
کوئی رائے نہیں
 
پسند ںہیں آئی
100%




  اوصاف سپیشل

آج کا مکمل اخبار پڑھیں

آج کا مکمل اخبار پڑھیں

کار ٹونز

سائنس/صحت

کالم /بلاگ


     
     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ روزنامہ اوصاف محفوظ ہیں۔
Copyright © 2016 Daily Ausaf. All Rights Reserved