بچوں کو ہرگز موبائل استعمال کرنے نہ دیں ۔۔۔ورنہ؟ جدید ٹیکنالوجی کے ماہر بل گیٹس نے حقیقت بتا دی
  18  جون‬‮  2017     |     سائنس/صحت
اسلام آباد(روز نامہ اوصاف ) اپنے بچوں کو جدید موبائل اور گیجٹس فراہم کرکے خوشی محسوس کرنے والے والدین یہ جان کر حیران رہ جائیں گے کہ دنیا کا امیر ترین آدمی بل گیٹس جو دنیا بھر کو نت نئی چیزوں سے متعارف کرواتا ہےاس نے اپنے بچوں کے موبائل فون اور دیگر گیجٹس کے استعمال پر پابندی عائد کر رکھی ہے۔ بل گیٹس کا ماننا ہے کہ مخصوص عمر سے قبل موبائل فون کا استعمالبچوں کی ذہنی اور جسمانی صحت دونوں کیلئے مضر ہے۔ بچوں کی ذہنی اور جسمانی صحت کو ملحوظ خاطر رکھتے ہوئے بل گیٹس اور ان کی بیوی نے باہم صلاح مشورے سے فیصلہ کیا کہ 14سال کی عمر تک بچوں کو موبائل فون استعمال نہیں کرنے دیا جائے گا ۔ یہ فیصلہ انہوں نے اس لئے کیا تاکہ ان کے بچے نیند پوری کر سکیں اور صحت مند رہیں۔ ایک برطانوی اخبار سے بات کرتے ہوئے بل گیٹس کا کہنا تھا کہ ان کے تین بچے ہیں اور وہ سمجھتے ہیں کہ ہر چیز کے استعمال کے لئے اعتدال ضروری ہے اور وہ یہ چاہتے ہیں کہ ان کے بچے معتدل رہتے ہوئے اپنی زندگی گزاریں ۔ اس کیلئے انہوں نے ان پر پابندی عائد کر رکھی ہے کہ وہ رات کے وقت گیجٹس اور موبائل فون کا استعمال محدود کر دیں ، کھانے کی میز پر بھی موبائل فون استعمال کی اجازت نہیں ہوتی۔ ہم نے ایک ٹائم ٹیبل بنا رکھا ہے جس کے مطابق بچوں کے موبائل فون استعمال کے اوقات کا تعین کیا گیا ہے۔
واضح رہے کہ بل گیٹس کے تین بچوں کی عمریں اس وقت بالترتیب20،17اور 14سال ہیں۔ سے سوسکیں۔“گیٹس کا کہنا ہے کہ ہر چیز کے استعمال کے لئے اعتدال ضروری ہے اور وہ یہ چاہتے ہیں کہ ان کے بچے معتدل رہتے ہوئے اپنی زندگی گزاریں،اگر ان کا دھیان موبائل کی طرف ہوگا تو وہ اپنی نیند پوری نہیں کرسکیں گے اور صحت مند بھی نہیں ہوں گے۔۔2013ءکے ایک انٹرویو میں بل گیٹس کا کہنا تھا کہ انہوں نے اپنی بیوی سے مشورے کے بعد یہ فیصلہ کیا کہ بچوں کو 13سال کی عمر تک پہنچے تک موبائل کی ہرگز اجازت نہیں دینی۔”میرے بچے شکایت بھی کرتے تھے لیکن مجھے معلوم ہے کہ ان کے لئے ایک خاص عمر سے قبل یہ اچھی نہیں۔“اس وقت بل گیٹس کے بچوں کی عمر 20،17اور 14سال ہیں ۔

اس خبر کے بارے میں اپنی رائے دیجئے
پسند آئی
82%
ٹھیک ہے
18%
کوئی رائے نہیں
 
پسند ںہیں آئی
 




  اوصاف سپیشل

آج کا مکمل اخبار پڑھیں

آج کا مکمل اخبار پڑھیں

کار ٹونز

سائنس/صحت

کالم /بلاگ


     
     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ روزنامہ اوصاف محفوظ ہیں۔
Copyright © 2016 Daily Ausaf. All Rights Reserved