رسولیوں سے بھرا جسم ،بھارتی شہری کی زندگی تباہ
  11  ستمبر‬‮  2017     |     سائنس/صحت

ایک باپ پُر امید ہے کہ کوئی معجزہ اس کے جسم پر نہ ختم ہونے والی رسولیوں کو ختم کرے گا اور اُس کا چہرہ صاف ہوجائے گا۔بھارت سے تعلق رکھنے والے 46سالہ سریندر شرماکے چہرے پر یہ لوتھڑے بڑھنا تب شروع ہوئے جب وہ 20برس کے تھے۔غیر تصدیق شدہ حالت، جس کے بارے میں خیال ہے کہ یہ نیوروفائبرومیٹوسس ہے، سرندر نے اپنے والد سے حاصل کی، جس کے سبب لوگ ان سے ڈرتے ہیں اور ان کا مذاق بھی اڑاتے ہیں۔

سریندر کا کہنا تھا کہ یہ رسولیاں میری عمر کے ساتھ بڑھ رہی ہیں۔ ان رسولیوں نے میری زندگی برباد کردی ہے۔ لوگ مجھ پر ہنستے ہیں، بچے مجھ سے ڈرتے ہیں۔ میری کوئی معاشرتی زندگی نہیں ہے۔انہوں نے مزید کہا کہ میرے پاس پیسے نہیں ہیں لیکن امید ہے کہ حکومت مدد کرے گی۔ طب ترقی کر رہی ہے اور مجھے خدا اور ڈاکٹروں پر مضبوط یقین ہے کہ کسی دن اس بیماری ، جس نے میری زندگی برباد کردی ہے،کا علاج ہوسکے گا۔


اس خبر کے بارے میں اپنی رائے دیجئے
پسند آئی
 
ٹھیک ہے
 
کوئی رائے نہیں
 
پسند ںہیں آئی
100%


 سب سے زیادہ پڑھی جانے والی مقبول خبریں






آج کا مکمل اخبار پڑھیں

کار ٹونز

سائنس/صحت

کالم /بلاگ


     
     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ روزنامہ اوصاف محفوظ ہیں۔
Copyright © 2016 Daily Ausaf. All Rights Reserved