تم دونو ں مان جائو تو پھر ۔۔۔!  پی سی بی نے خالد لطیف اور شرجیل خان کو بڑی آفر کر دی
  15  فروری‬‮  2017     |      سپورٹس

لاہور(مانیٹرنگ ڈیسک) پاکستان کرکٹ بورڈ کے سربراہ شہر یار خان نے کہا ہے کہ،معطل کھلاڑیوں شرجیل خان اور خالد لطیف کوبورڈ کے اینٹی کرپشن یونٹ کے سربراہ کرنل(ر) اعظم نے سنا ہے ، اگر کھلاڑیوں نے اعتراف کر لیا تو پھر کسی ٹربیونل کی ضرورت نہیں رہے گی اور ایسی سزا دیں گے کہ آئندہ کوئی کھلاڑی ایسا اقدام کرنے سے پہلے ہزار بارسوچے گا۔ قذافی اسٹیڈیم میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے شہر یار خان نے کہا کہ معطل کئے گئے کھلاڑیوں شرجیل خان اور خالد لطیف بورڈ کے اینٹی کرپشن یونٹ کے سربراہ کرنل (ر) اعظم کے سامنے پیش ہوئے ہیں جنہیں سنا گیا ہے کیونکہ ہماری سوچ ہے کہ جنہیں ملزم ٹھہرایاگیا ہے انہیں ضرور سنا جائے۔ بورڈ کے پاس اس حوالے سے جو شواہد ہیں وہ کھلاڑیوں کو دکھائے جائیں گے اور پھر جواب دینے کیلئے ایک سے دو ہفتے کی مہلت دی جائے گی ۔ اگر ٹربیونل بنانے کی ضرورت ہوئی تو یہ سینئر جج کی سربراہی میں قائم ہوگا اور وہ کھلاڑیوں کو سزا دینے کے حوالے سے فیصلہ کرے گا ۔ دوسری طرف اگر کھلاڑی خود ہی اعتراف کر لیتے ہیں تو پھر ٹربیونل کی ضرورت نہیں ہو گی ۔ انہوں نے معطل کھلاڑیوں سے محمد عامر کی طرح رعایت برتنے کے سوال کے جواب میں کہا کہ ایسا نہیں ہوگا بلکہ اس کے برعکس ہوگا ،کھلاڑیوں سے کوئی رعایت نہیں ہو گی بلکہ انہیں زیادہ سے زیادہ سزا دیں گے تاکہ آئندہ کوئی بھی کھلاڑی ایسا کرنے سے پہلے ہزار بار سوچے او رایسی حرکت نہ کرے ۔ انہوں نے اس سوال کہ بورڈ کو سارے معاملے کا علم تھا کیوں پیشگی اقدام نہیں کیا گیا جس پر انہوں نے کہا کہ ایسا علم میں نہیں تھا بلکہ اسی دن یہ ہوا کہ ڈیڑھ بجے دونوں ٹیموں کے کھلاڑیوں کو بلا کر کہا گیا کہ بکیے نظر آرہے ہیں آپ محتاط رہیں ں اگر کوئی آپ سے رابطہ کرے تو سکیورٹی آفیسرکو بتائیں ۔


اس خبر کے بارے میں اپنی رائے دیجئے
پسند آئی
81%
ٹھیک ہے
6%
کوئی رائے نہیں
 
پسند ںہیں آئی
13%


 سب سے زیادہ پڑھی جانے والی مقبول خبریں





  اوصاف سپیشل

آج کا مکمل اخبار پڑھیں

  قائد اعظم محمد علی جناح  
  اسکندر مرزا  
  لیاقت علی خان  
  ایوب خان  
آج کا مکمل اخبار پڑھیں

کار ٹونز

سپورٹس

کالم /بلاگ


     
     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ روزنامہ اوصاف محفوظ ہیں۔
Copyright © 2016 Daily Ausaf. All Rights Reserved