یورپ اور امریکا میں شدید سردی سے 23 افراد ہلاک
  9  جنوری‬‮  2017     |     دنیا
رومٗ وارسا(روزنامہ اوصاف) یورپ اور امریکابھر میں شدید سردی کی لہر کے باعث 23 افراد ہلاک جبکہ ہزاروں پروازیں منسوخ ہوگئیں۔ مرنے والوں میں زیادہ تر بے گھر اور تارکین وطن افراد شامل ہیں۔ صرف پولینڈ میں 2 روز کے دوران شدید ترین سردی کے باعث 10 افراد ہلاک ہوئے۔پولینڈ کے حکومتی مرکز برائے سیکیورٹی کا کہنا ہے کہ نومبر سے اب تک سردی کے باعث 53 افراد ہلاک ہوچکے ہیں۔ اٹلی میں سردی کے باعث 7 افراد کی ہلاکت کی اطلاع ہے، جن میں 5 بے گھر افراد شامل ہیں، جبکہ شدید برف باری کے باعث ملک بھر کے متعدد ایئرپورٹس بند رہے اورسیکڑوں فلائٹس منسوخ کردی گئیں۔دوسری جانب چیک ری پبلک میں شدید سردی کے باعث 3 افراد ہلاک ہوئے۔ اس کے علاوہ بلغاریہ میں 2 عراقی تارکین وطن جبکہ یونان سے ایک افغان تارک وطن کی لاش ملی ہے۔ امریکامیں بھی برف باری کے باعث سردی کی شدت برقرار ہے۔ اس کے علاوہ ریاست میساچوسٹس کے شہر بوسٹن میں 12 انچ تک برف باری ریکارڈ کی گئی جبکہ محکمہ موسمیات نے مزید برف باری کی پیش گوئی بھی کی ہے۔

اس خبر کے بارے میں اپنی رائے دیجئے
پسند آئی
 
ٹھیک ہے
 
کوئی رائے نہیں
 
پسند ںہیں آئی
 





آج کا مکمل اخبار پڑھیں

کار ٹونز

دنیا

کالم /بلاگ


     
     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ روزنامہ اوصاف محفوظ ہیں۔
Copyright © 2016 Daily Ausaf. All Rights Reserved