05:20 pm
(کے آئی یوسپورٹس فیسٹیول اختتام پذیر)جامعہ میں صحت مندانہ سرگرمیاں حوصلہ افزاء ہیں،ڈاکٹراقبال

(کے آئی یوسپورٹس فیسٹیول اختتام پذیر)جامعہ میں صحت مندانہ سرگرمیاں حوصلہ افزاء ہیں،ڈاکٹراقبال

05:20 pm

گلگت (جونیئر شگری)جامعہ قراقرم میں رنگا رنگ سپورٹس فیسٹول کی اختتامی تقریب منعقد ، صوبائی وزیر تعمیرات گلگت بلتستان کی حصوصی شرکت۔قراقرم انٹرنیشنل یونیورسٹی سپورٹس فیسٹول کی رنگارنگ اختتامی تقریب والی بال گراؤنڈ میں منعقد کی گئی۔سپورٹس فیسٹول میں فٹ بال،کرکٹ،والی بال،بٹ منٹن،رسہ کشی کے مقابلے منعقد کیے گئے۔ سپورٹس فیسٹول کی اختتامی تقریب سے مہمان خصوصی کی حیثیت سے خطاب کرتے ہوئے
۔ڈاکٹر محمد اقبال وزیر تعمیرات گلگت بلتستان نے کہا طلبہ وطالبات کی کارکردگی نے زبردست متاثر کیا، یونیورسٹی میں صحت مند انہ سرگرمیاں حوصلہ افزا ہیںتعلیمی ادارے تعلیم کے ساتھ ساتھ طلبا و طالبات کو کھیلوں میں شرکت کا بھر پور موقع دیں ،ملک کی تیز رفتارترقی کے لئے نوجوان نسل کی ذہنی اور جسمانی مضبوطی انتہائی ضروری ہے جس کے لئے کھیلیں اور ہم نصابی سرگرمیاں اہم کردار ادا کرتی ہیں، تعلیمی اداروں کو چاہیے کہ وہ تعلیم کے ساتھ ساتھ طلبا و طالبات کو کھیلوں میں شرکت کا بھر پور موقع دیں۔تقریب میں سے خطاب کرتے ہوئے ۔وائس چانسلر قراقرم انٹرنیشنل یونیورسٹی ڈاکٹر عطاء اللہ شاہ نے کہا کہ طلبا و طالبات کی ذہنی ،جسمانی نشورونما کے لئے ہر ممکن اقدامات بھی اٹھائے جا رہے ہیں۔ ہم نصابی سرگرمیاں نصاب کی جان ہیں ، ہم نصابی سرگرمیوں کے بغیر نصاب کا تصور ممکن نہیں ، ہم طلباء کو یونیورسٹیوں میں صحت مند ماحول دیتے ہیں ، پڑھائی کے ساتھ ساتھ کھیلوں کے میدانوں کو بھی اباد کرنے کی ضرورت ہے ، کھیلوں کے میدانوں کو آباد کر کے ہم معاشرتی برائیوں سے چھٹکارہ حاصل کر سکتے ہیں۔ انہوں نے مزید کہا کہ جب میں گلگت آیا ہوں تو نوجوانوں کی صلاحیتوں کو دیکھتا ہوں۔اْن کی فیزیکل پوٹینشنل سپورٹس اور تعلیم کے میدان میں دیکھتا ہوں تو کے ٹوکے پہاڑ مجھے چھوٹے نظر آتے ہیں۔اْنہوں نے نوجوانوں پر زور دیتے ہوئے کہا کہ اس ٹیلنٹ کو اور بڑھا کر نیشنل لیول پر سامنے لے آئیں۔تاکہ سب لوگوں کو پتہ چلے کہ گلگت بلتستان میں کتنے ہیرے چھپے ہوئے ہیں۔ وائس چانسلرنے سپورٹس ایونٹ میں حصہ لینے والے ٹیموں کی کارکردگیوں کو سراہااور تعلیم کی اہمیت پر بھی زوردیا۔تقریب کے اختتام پر مہمان خصوصی نے سپورٹس میں بہترین کارکردگی کا مظاہرہ کرنے والے طلبہ وطالبات میں انعامات تقسیم کئے اور اپنی جانب سے گرونڈ لے لئے بیس لاکھ کا اعلان کیا۔ آخر میں مہمان خصوصی نے سپورٹس ویک میں حصہ لینے والے تمام ٹیموں کے ونر اور رنر اپ ٹیموں میں ٹرافی اور میڈل تقسیم کیں۔ جس میں مختلف کھیلوں میں شریک طلبا و طالبات کو انعامات دیئے گئے۔اس سے پہلے تقریب کا آغاز کھیلوں میں حصہ لینے والے کھلاڑیوں کے مارچ پاسٹ سے ہوا جس کے بعد مختلف کھیلوں کے فائنل مقابلے منعقد ہوئے ،تقریب کا سب سے دلچسپ کھیل انگلش او ر شعبہ بزنس منیجمنٹ سائنسزکے درمیان والی بال کا مقابلہ تھا جسے شعبہ بزنس مینجمنٹ سائنسزنے زبردست مقابلے کے بعد جیت لیا۔ سالانہ اسپورٹس ویک کے مقابلے بہترین اندز میں منعقد کرانے پر ڈپٹی ڈائریکٹر اورنگزیب خان کو خراجِ تحسین پیش کیاگیا۔گلگت(اوصاف نیوز)) قراقرم انٹر نیشنل یونیورسٹی میں منعقدہ رنگارنگ سپورٹس فیسٹول سال 2019 اختتام پذیر ہوگیا۔سپورٹس فیسٹول کے اختتام پر شاندار اختتامی تقریب کااہتمام کیاگیا۔اختتامی تقریب کے مہمان خصوصی صوبائی وزیر تعمیرات عامہ ڈاکٹر محمد اقبال جبکہ میر محفل وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹر عطاء اللہ شاہ تھے ۔اختتامی تقریب میں یونیورسٹی کے سینئر آفسیران ،فیکلٹی ممبران سمیت طلبہ و طالبات کی کثیرتعداد نے شرکت کی۔اختتامی تقریب سے بحیثیت مہمان خصوصی خطاب کرتے ہوئے صوبائی وزیر تعمیرات عامہ ڈاکٹر محمد اقبا ل نے قراقرم یونیورسٹی والی بال گراونڈ کو ازسرنو تعمیرکرنے کے لیے 20لاکھ روپے،یونیورسٹی مین کیمپس کے تمام رابط سٹرکو ں کو ایک ہفتے میں میٹل کرانے اور والی بال فائنل جیتنے والی ٹیم کو 20ہزار جبکہ فائنل ہارنے والی ٹیم کو 10ہزار روپے دینے کا اعلان کرتے ہوئے کہاکہ صحت مند جسم ہی صحت مند معاشرے کا ضامن ہے۔صحت مند جسم کے لیے ضروری ہے کہ صحت مندانہ سرگرمیوں کا انعقاد ہو۔صحت مند انہ سرگرمیوں کے انعقاد کے حوالے سے قراقرم یونیورسٹی کا کردار قابل تقلید ہے ۔جہاں پر تعلیم وتحقیق کے مواقعے فراہم کرنے سمیت طلبہ طالبات کو کھیل کے مواقع بہم فراہم کی جارہی ہے ۔جس پر قراقرم یونیورسٹی کے وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹر عطاء اللہ شاہ اور اس کی پوری ٹیم لائق تحسین ہے۔انہوںنے کہاکہ گلگت بلتستان کے نوجوان نسل نے جہاں تعلیم وتحقیق کے حوالے سے اپنا لوہا منوایا ہے وہی پر کھیل کے میدانوں میں بھی نمایاں مقام حاصل کیاہے ۔انہوںنے کہاکہ موجودہ دور میںصحت مند جسم و دماغ کا ہونا لازمی ہے جس کے لیے نوجوان نسل کو کھیل کے زیادہ سے زیادہ مواقعے میسر ہوں۔انہوںنے کہاکہ قراقرم یونیورسٹی جہاں طلبہ کو کھیل کے مواقع فراہم کررہی ہے وہی پر طالبات کو بھی کھیل کے مواقعے مہیا کررہی ہے جو کہ خوش آئند اقدام ہے ۔خواتین کو کھیل کے مواقعے فراہم کرنا لازمی ہے ۔کیونکہ خواتین ہی ہیں جو معاشرے کو مستقبل کے معمار فراہم کرتی ہیں۔ان سے قبل اختتامی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹر عطاء اللہ شاہ نے کہاکہ طلبہ و طالبات کی تعلیمی وتحقیقی سہولیات فراہم کرنے سمیت ان کے ذہنی ،جسمانی نشوونما کے مواقع فراہم کررہے ہیں۔تاکہ نصابی سرگرمیوں کے ساتھ ساتھ غیر ہم نصابی سرگرمیوں کے مواقع بہم پہنچ سکے ۔تعلیم کے ساتھ ساتھ کھیلوں کے میدان آباد کرنے کی ضرورت بھی ہے ، کھیلوں کے میدانوں کو آباد کر کے ہی معاشرتی برائیوں سے چھٹکارہ حاصل کی جاسکتی ہے ۔وائس چانسلر نے طلبہ وطالبات پر زور دیتے ہوئے کہا کہ طلبہ وطالبات اپنی صلاحیتوں میں مزید نکھار پید اکرتے ہوئے ملکی و بین الاقوامی سطح کے مقابلوں تک اپنے آپ کو لے جانے کا سوچ پیداکریں۔تاکہ سب پر یہ حقیقت عیاں ہوجائے کہ گلگت بلتستان میں قدرت کے حسین نظارے اوردلفریب وادیوں اور نعمتوں سمیت نوجوانوں میں بے شمار صلاحیتیں موجود ہیں۔وائس چانسلرنے سپورٹس فیسٹول کے کامیاب انعقاد پر سپورٹس کمیٹی کی تعریف کی اورسپورٹس فیسٹول میں حصہ لینے والی تمام ٹیموں کی کارکردگی کو سراہا۔اور کہاکہ اسی گیم سپرٹ کو جاری رکھیں اور ملک و یونیورسٹی کو مزید بلندیوں تک پہنچانے میں اپنا حصہ ڈالے۔سپورٹس فیسٹول کی تقریب میں اختتامی کلمات پیش کرتے ہوئے پرووسٹ ڈاکٹر منظورعلی نے صوبائی وزیر تعمیرات عامہ ،وائس چانسلر ،یونیورسٹی کے سینئر منیجمنٹ و فیکلٹی آفیسران ، ڈپٹی ڈائریکٹر سپورٹس اور اس کا عملہ ، سپورٹس کمیٹی ،پرووسٹ آفس ،پروکٹرز،سپورٹس فیسٹول کے دیگر آرگنائزر سمیت طلبہ وطالبات کی سپورٹس فیسٹول میں دلچسپی کے ساتھ حصہ لینے پر شکریہ ادا کیا۔ اختتامی تقریب میں فیکلٹی کرکٹ ٹیم کے کپتان راجہ مشتاق احمد،ڈائریکٹر دیامر کیمپس چلاس ڈاکٹر محمد شاہنواز ان کی ٹیم نے روایتی رقص پیش کرکے اختتامی تقریب کے شرکاء سے خوب داد حاصل کیا۔تقریب کے آخر میں صوبائی وزیر تعمیرات ڈاکٹر محمد اقبال اور وائس چاسلر ڈاکٹر عطاء اللہ شاہ نے سپورٹس فیسٹول میں نمایاں پوزیشن حاصل کرنے و الے طلبہ و طالبات میں کپ ، میڈلز، شیلڈسمیت تعارفی اسناد تقسیم کیئے۔

تازہ ترین خبریں