06:13 pm
23مارچ کو کیاکام کرنا ہے

23مارچ کو کیاکام کرنا ہے

06:13 pm

اسلام آباد(آئی این پی ) نواز شریف نے کارکنوں کو 23مارچ کو جیل کے باہر جمع ہونے سے روکتے ہوئے کہا ہے کہ 23 مارچ کو اپنے اپنے علاقوں میں صرف یوم پاکستان منائیں ، پاکستان کی ترقی اور خوشحالی کے لئے دعا کریں،صبر کا دامن ہاتھ سے نہ چھوڑیں۔ اللہ تعالی کے فضل و کرم سے میرے دامن پر کرپشن یا بدعنوانی کا کوئی داغ نہیں،اسی لئے میں نے ملک کے قانون اور انصاف پر مسلسل اعتماد کیا
،میں آپ سب کی محبت و خلوص اور قربانیوں کا مقروض رہوں گا،جیل کی کوٹھری میں اللہ رب العزت پر توکل کے بعد آپ کی یہی محبت اور جذبہ مجھے حوصلہ اور تقویت دیتا ہے۔ پاکستان مسلم لیگ (ن)کے قائد اور سابق وزیراعظم نوازشریف نے کوٹ لکھپت جیل لاہور سے کارکنوں کے نام پیغام جاری کیاہے ۔مسلم لیگ ن کی ترجمان مریم اورنگزیب کی طرف سے میڈیا کو جاری کیے گئے بیان میں نواز شریف نے کہا ہے کہ میں اپنی صحت کے حوالے سے قوم کی فکرمندی، دعاوں اور نیک تمناوں کے لئے تہہ دل سے مشکور ہوں۔نواز شریف نے کہا مسلم لیگ (ن)کے ووٹر، کارکن اور چاہنے والوں نے جس طرح میرے مشکل وقت میں ثابت قدم رہ کر میرا ساتھ نبھایا اور نبھاہ رہے ہیں، اس کی شاید مثال ملنا مشکل ہے،میں آپ سب کی محبت و خلوص اور قربانیوں کا مقروض رہوں گا۔انہوں نے کہا مجھے علم ہوا ہے کہ میری صحت کے حوالے سے فکرمند اور پریشان کارکن اپنے جذبات کے اظہار کے لئے اکٹھا ہونا چاہتے ہیں اورمیرے حق میں آواز اٹھانے کے لئے شاید کوئی احتجاج ترتیب دینا چاہتے ہیں،میں اپنے چاہنے والوں کے جذبے کی بے حد قدر کرتا ہوں۔نواز شریف نے کہا جیل کی کوٹھری میں اللہ رب العزت پر توکل کے بعد آپ کی یہی محبت اور جذبہ مجھے حوصلہ اور تقویت دیتا ہے۔ مگر میں آپ سب سے اپیل کرتا ہوں کہ میری طرح اللہ تعالی کی رحیم ذات پر بھروسہ رکھیں۔نواز شریف نے کہا صبر کا دامن ہاتھ سے نہ چھوڑیں۔ اللہ تعالی کے فضل و کرم سے میرے دامن پر کرپشن یا بدعنوانی کا کوئی داغ نہیں،اسی لئے میں نے ملک کے قانون اور انصاف پر مسلسل اعتماد کیا ہے۔نواز شریف نے کہا مسلم لیگ (ن) ایک ذمہ دار جماعت ہے اور ہم نے ہمیشہ فیصلہ سازی میں ملکی مفاد کو مقدم رکھتے ہوئے سیاسی یا ذاتی مفاد کو پس پشت رکھا اور عجلت سے کام نہیں لیا۔ کسی بھی طرح کا فیصلہ کرنے سے پہلے پارٹی ہائی کمان کی ہدایات، پارٹی ڈسپلن کا احترام اور پارٹی پلیٹ فارم کا استعمال ضروری ہے۔انشااللہ کسی بھی امتحان کی صورت میں جماعت کارکنوں کے جذبات کی ترجمانی کرے گی اور ان کی امیدوں پر پورا اترے گی۔نواز شریف نے کارکنوں سے کہا کہ میں آپ سے التماس کرتا ہوں کہ 23 مارچ کو اپنے اپنے علاقوں میں صرف یوم پاکستان منائیں ، پاکستان کی ترقی اور خوشحالی کے لئے دعا کریں۔