06:16 am
 1900 کلو   چرس سمگلنگ  میں ملوث ملزم کی عمر قید کالعدم قرار

1900 کلو چرس سمگلنگ میں ملوث ملزم کی عمر قید کالعدم قرار

06:16 am

پشاور(بیورو رپورٹ)سپریم کورٹ کے چیف جسٹس کی سربراہی میں تین رکنی بینچ نے 1900 کلو گرام چرس سمگل کرنے کے الزام میں عمر قید پانے والے ملزم کی اپیل منظور کرتے ہوئے اس کی سزا اور جرمانے کی رقم کالعدم قرار دیدی عدالت عظیٰ کے چیف جسٹس آصف سعید کوسہ، جسٹس منظور احمد ملک اور جسٹس سجاد علی شاہ پر مشتمل تین رکنی بینچ نے ملزم فضل عظیم کی اپیل کی سماعت کی دوران سماعت ملزم کے وکیل الطاف خان نے عدالت کو بتایا کہ اس کے موکل پر الزام ہے کہ انہوں نے 19 سو کلو گرام چرس 26 مارچ 2010 کو پنجاب سمگل کرنے کی کوشش کی تھی جس پر کسٹم حکام نے اس کو گرفتار کرلیا ماتحت عدالت نے جرم ثابت ہونے پر ملزم کو جرمانہ اور عمر قید کی سزا دی اس کے ساتھ ساتھ ملزم ٹرک کے کلینر گل زمان کو بھی عمر قید کی سزا سنا دی گئی تاہم ہائیکورٹ نے ملزم گل زمان کو کلینر ہونے کا فائدہ دیکر بری کردیا جبکہ درخواست گزار ملزم فضل عظیم کی اپیل مسترد کردی ملزم کے وکیل نے عدالت کو بتایا کہ اس کے موکل پر الزام لگایا گیا کہ وہ ایک ٹرک کے زریعے 19 سو کلو گرام چر پنجاب سمگل کرنے کی کوشش کر رہا تھا تاہم اس حوالے سے پیش کی گئی شہادتوں میں کافی تضاد ہے انہوں نے عدالت کو بتایا کہ صرف پانچ گرام سیمپل لیبارٹری بھیجوائے گئے جبکہ پارسل سیل بھی نہیں کیا گیا اس کے ساتھ ساتھ جس سپاہی نے پارسل لیبارٹری پہنچائے تھے اس کو عدالت میں پیش ہی نہیں کیا گیا ۔ عدالت نے دلائل مکمل ہونے کے بعد ملزم کو بری کر دیا۔ سزا کالعدم

تازہ ترین خبریں