03:51 pm
ایسے کپڑے پہنوگی توکون چھوڑے گا۔۔۔

ایسے کپڑے پہنوگی توکون چھوڑے گا۔۔۔

لاہور(ویب ڈیسک )پاکستانی معروف ماڈل صدف کنول کبھی اپنے بیانات اور کبھی لباس کے انتخاب پر تنقید کا نشانہ بنی رہتی ہیں اور اب ایک بار پھر وہ غیر اخلاقی کپڑے پہن کر تنقید کا نشانہ بن گئیں ۔سوشل میڈ یا ایپ انسٹا گرام پر صدف کنول نے اپنی تصاویر شیئر کیں جوکہ بنکاک میں کسی شاپنگ مال میں بنائی گئیں تھی۔تصاویر کے ساتھ صدف کنول نے کیپشن لکھا کہ ’کیونکہ میں خوش ہوں‘۔

ان تصاویر کو دیکھا جن میں ماڈل نے صرف سفید رنگ کی شرٹ زیب تن کی ہوئی ہے اور وہ مسکراتی ہوئی دکھائی دے رہی ہیں۔جیسے ہی سوشل میڈیا صارفین نے ان نیم عریاں تصاویر کو دیکھا تو وہ غصے سے آگ بگولہ ہوگئے اور اس لباس کو اخلاقی اورپاکستانی ثقافت کے برخلاف قرار دیکر شدید تنقید کا نشانہ بنایا۔مداحوں نے اداکارہ کے فوٹو شوٹ پر نہایت افسوس اور غصے کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ اداکارہ نے پر حد پار کر دی ہے۔یاد رہے کہ اداکارہ نے نامعلوم افراد میں آئٹم نمبر کیا تھا جس پر ان کو شدید تنقید کا نشانہ بنایا گیا تھا۔اس سے قبل صدف کنول نے جنسی ہراسگی کے متعلق ایک بیان دیا تھا جس پر خوب ہنگامہ ہوا تھا۔ انہوں نے کہا تھا کہ ”اگر خواتین کو جنسی طور پر ہراساں کیا جاتا ہے تو انہیں واقعے کو فوراً منظرعام پر لانا چاہیے، وہ کیوں اس کے لیے 10سال انتظار کرتی ہیں۔