02:36 pm
100کروڑ کے بدلے ناموراداکارہ کوانتہائی شرمناک پیش کش،بولی وڈ گرل کو کون سی آفر کی گئی؟

100کروڑ کے بدلے ناموراداکارہ کوانتہائی شرمناک پیش کش،بولی وڈ گرل کو کون سی آفر کی گئی؟

02:36 pm

ممبئی (ویب ڈیسک )بولی وڈ فلم ساز 48 سالہ ساجد خان پر ررواں برس اکتوبر میں داکارہ سلونی چوپڑا، صحافی کرشمہ اوپاڈہے اور اداکارہ ریچل وائٹ نے انہیں جنسی ہراساں کرنے کا الزام عائد کیا تھا۔ان اداکاراؤں نے الزام عائد کیا تھا کہ ساجد خان نے ان سے نازیبا مطالبے کیے اور ان سے قابل اعتراض تصاویر مانگنے سمیت اڈھنگے انداز میں ان سے گفتگو کرتے تھے۔ساجد خان نے ان اداکاراؤں کے الزامات کو مسترد کردیا تھا، تاہم بعد ازاں کچھ اور اداکارائیں بھی ساجد خان کے خلاف سامنے آئیں۔اداکارہ اہانا کمرا نے بھی ساجد خان پر الزام عائد کرتے ہوئے کہا تھا
کہ فلم ساز نے ان سے انٹرویو کے دوران انتہائی نازیبا اور قابل اعتراض بات کرتے ہوئے انہیں پیش کش کی تھی اگر وہ انہیں 100 کروڑ دیں تو وہ کسی جانور کے ساتھ سوئیں گی؟اسی طرح اداکارہ بپاشا باسو نے بھی ساجد خان کے رویے پر شکایت کی تھی اور کہا تھا کہ وہ ہمیشہ خواتین کے ساتھ نازیبا گفتگو اور قابل اعتراض مذاق کرنے کے عادی ہیں۔ساجد خان پر جنسی ہراساں کے الزام کے بعد انہیں ان کی آنے والی فلم ’ہاؤس فل 4‘ سے بھی الگ کردیا گیا تھا، تاہم اب انڈین فلمز اینڈ ٹی وی ڈائریکٹرز ایسوسی ایشن (آئی ایف ٹی ڈی اے) نے ان کی رکنیت معطل کرتے ہوئے ان پر ایک سال کی پابندی عائد کردی۔آئی ایف ٹی ڈی اے کی جانب سے کی گئی ٹوئیٹ میں کہا گیا کہ ساجد خان نے کام کی جگہوں پر خواتین کو جنسی طور پر ہراساں کرکے ادارے کا نام خراب کیا۔بیان میں بتایا گیا کہ ساجد خان پر لگائے گئے الزامات کی شکایت کے بعد تفتیش کے لیے ایک کمیٹی تشکیل دی گئی تھی، جس نے ان پر لگے الزامات کی تحقیقات کی۔بیان میں کہا گیا کہ کمیٹی کی تفتیش کے بعد ساجد خان کو بھی صفائی کا بھرپور موقع دیا گیا اور انہیں اپنا مؤقف پیش کرنے کے لیے کہا گیا، تاہم فلم ساز مکمل طور پر اپنے اوپر لگے الزامات کا دفاع نہیں کر سکے۔کمیٹی کی جانب سے جاری کیے گئے بیان میں بتایا گیا کہ فلم ساز نے طاقت اور اختیارات کا استعمال کرتے ہوئے خواتین کو جنسی طور پر ہراساں کیا، اس وجہ سے انہیں ایک سال تک معطل کیا گیا۔ادارے کی جانب سے معطل کیے جانے کے بعد ساجد خان ایک سال تک کوئی بھی کام نہیں کر سکیں گے۔خیال رہے کہ 47 سالہ ساجد خان نے اب تک صرف 6 فلموں کی ہدایات دی ہیں، ان کی سب سے کامیاب فلم ‘ہاؤس فل‘ ہی ہے، جو 2010 میں ریلیز ہوئی تھی، جس کے بعد انہوں نے اسی فلم کی مزید 2 فلمیں بھی بنائیں۔ساجد خان کی بطور ہدایت کار پہلی فلم ‘ڈرنا ضروری ہے’ 2006 میں ریلیز ہوئی، ان کی دیگر فلموں میں ‘ہے بیبی‘ 2007 اور ‘ہم شکلز’ 2014 میں ریلیز ہوئی۔