شگر،محکمہ تعلیم شگر کی جانب سے یونین کونسل داسو کی ساتھ سوتیلی ماں جیسا سلوک جاری
  17  مئی‬‮  2018     |     گلگت بلتستان

شگر(نامہ نگار) محکمہ تعلیم شگر کی جانب سے یونین کونسل داسو کی ساتھ سوتیلی ماں جیسا سلوک جاری۔ این ٹی ایس کے ذریعے تعینات دو اساتذہ کو دوسری جگہ تبادلہ کردیا گیا۔ مزید ایک ٹیچر تبادلے کیلئے پر تول رہے ہیں۔ اساتذہ کا بحران شدت اختیار کرگیا۔زیادتی بند نہ ہوا تو سخت احتجاج پر مجبور ر ہوں گے۔ داسو کی ایل پی سی پر تعینات اساتذہ کو فور واپس لایا جائے۔ اسلامی تحریک شگر کے رہنماء و تعلیمی کمیٹی کے ممبرشیخ ہاشم نے کہا ہے کہ محکمہ تعلیم شگر کا یونین کونسل داسو کیساتھ زیادتی ہمیشہ سے رہا ہے۔

یہاں کے ایل پی سی پر دیگر علاقوں سے اساتذہ کی تعیناتی یہاں کے پڑھے لکھے افراد اور علاقے کیساتھ ظلم ہے۔کیونکہ دیگر علاقوں سے تعینات اساتذہ سفارش کے بل بوتے پر اپنے علاقوں میں تبادلہ کرکے واپس جاتے ہیں اس طرح سکول میں اساتذہ کا بحران پیدا کرتے ہیں۔لہذا داسو کو ہارڈ ایریا قرار دیکر مقامی افراد کو تعینات کیا جائے۔انہوں نے محکمہ تعلیم کے حکام سے مطالبہ کیا ہے کہ فوری طور داسو ہائی سکول کی سیٹ پر تعینات اساتذہ کو فور طور واپس کیا جائے ورنہ سخت احتجاج کیا جائے گا


اس خبر کے بارے میں اپنی رائے دیجئے
پسند آئی
 
ٹھیک ہے
 
کوئی رائے نہیں
 
پسند ںہیں آئی
 


 سب سے زیادہ پڑھی جانے والی مقبول خبریں






آج کا مکمل اخبار پڑھیں

اوصاف سپیشل

کالم /بلاگ


     
     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ روزنامہ اوصاف محفوظ ہیں۔
Copyright © 2016 Daily Ausaf. All Rights Reserved