پاکستان اسٹیل کی جانب سے بل ادا، ٹائون کی گیس بحال
  14  فروری‬‮  2018     |      کاروبار

اسلام آباد(نیوز ڈیسک)پاکستان اسٹیل کی انتظامیہ کی جانب سے 98 لاکھ روپے کا چیک سوئی سددرن گیس کمپنی کو دے دیا گیا جس کے بعد منگل کو سوئی سدرن گیس کمپنی نے پاکستان اسٹیل کی ٹاؤن شپ کی گیس بحال کردی ،جبکہ پلانٹ کی گیس تاحال بند ہے۔پلانٹ کی گیس بندش کے باعث پیداوار عمل صفر پر ہے،جبکہ ملاز مین کو 5 ماہ سے تنخواہوں کی ادائیگی نہیں کی جاسکی ہے اور 4 ہزار سے زائد ملاز مین اپنے

بقایاجات کی وصولی کے لئے پریشان ہیں ، ادارے میں ٹریڈ یونیوں کی باہمی چپقلش کے باعث ملازمین کے مسائل کے حل میں مشکلات کا سامنا ہے۔پاکستان اسٹیل میں اس وقت انتظامیہ کا مکمل اسٹرکچر موجود نہیں ہیں ، صرف دو افسران مل کو چلا رہے ہیں ،وفاقی اور سندھ حکومت پاکستان اسٹیل کو بحال کرنے کے بجائے اس کی زمینوں پر نظر جمائے ہوئے ہیں۔واضح رہے کہ پاکستان اسٹیل کی دو ہزار ایکٹر سے زیادہ زمین پر قبضہ ہوا ہے ،ڈھائی سال سے اسٹیل مل کی پیداوار بند ہے جبکہ قرضوں کا میٹر پھر بھی ڈائون ہے، حکومت چار سال میں تنخواہوں کی ادائیگی کے لئے ساڑھے اٹھارہ ارب روپے قرض دے چکی ہے، ادائیگی کے لئے مل کی زمین فروخت کرنے کی تیاریاں جاری ہیں۔پاکستان اسٹیل کو گیس سپلائی 31 مہینوں پہلے 45 ارب روپے ادا نہ کرنے پر بند کردی گئی، اس روز سے مل کی پیداوار بند ہے لیکن مزدوروں کی تنخواہیں تو ادا کرنی ہیں جس کے لئے حکومت 47 مہینوں سے قرض دے رہی ہے جو ساڑھے اٹھارہ ارب روپے تک جاپہنچا ہے، حکومت جو تنخواہ ادا کرتی ہے اس رقم کو پاکستان اسٹیل پر قرضہ تصور کیا جاتا ہے


اس خبر کے بارے میں اپنی رائے دیجئے
پسند آئی
 
ٹھیک ہے
 
کوئی رائے نہیں
 
پسند ںہیں آئی
 


 سب سے زیادہ پڑھی جانے والی مقبول خبریں






آج کا مکمل اخبار پڑھیں

کاروبار

کالم /بلاگ


     
     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ روزنامہ اوصاف محفوظ ہیں۔
Copyright © 2016 Daily Ausaf. All Rights Reserved