بھارتی طیارہ اور ٹلرسن کی نئی دھمکیاں
  29  اکتوبر‬‮  2017     |     کالمز   |  مزید کالمز

٭بھارت کایک ڈرون طیارہ کنٹرول لائن پرگرالیا گیا۔ یہ طیارے امریکہ نے بھارت کودفاعی معاہدہ کے تحت فراہم کئے ہیں۔ اس طرح امریکہ نے اپنے ڈرون طیاروں کے ذریعے پاکستان کے مغربی علاقوں کے علاوہ مشرقی میں بھی حملے شروع کردیئے ہیں۔ گزشتہ روز گرایا جانے والاطیارہ پاکستان کی جاسوسی کررہاتھا،اس سے بم باری بھی کی جاسکتی ہے۔ وزارت خارجہ کی طرف سے رسمی احتجاج کیاگیا ہے۔ بھارت نے ڈرون طیارے کے ذریعے سرجیکل سٹرائیک کی ابتدا کردی ہے جس کا وہ بار بار اعلان کررہاہے۔ اس کے ساتھ ہی جنیوا میں امریکہ کے وزیر خارجہ ریکس ٹلرسن نے پھر پاکستان کو دھمکی دی ہے کہ اس نے اپنے ہاں دہشت گردوں کے محفوظ اڈے ختم نہ کئے تو امریکہ خود یہ کارروائی کرے گا۔ ٹلرسن نے واضح کیاکہ پاکستانی حکام کو ہم نے کوئی لیکچر نہیں دیابلکہ واضح طورپر یہ بتادیاہے کہ ہم کیا کرسکتے ہیں اورکیا کریں گے۔ ٹلرسن نے اس بات کو بھی اہمیت دی کہ پاکستان کے آرمی چیف جنرل باجوہ کے ساتھ وزیراعظم کے مشترکہ اجلاس میں ملاقات ہو گئی تھی مگر پھر آرمی چیف سے جی ایچ کیو میں علیحدہ ملاقات بھی ہوئی ۔ حکومت ابھی تک وضاحت نہیں کرسکی کہ ٹلرسن نے براہ راست آرمی چیف سے کیوں ملاقات کی جب کہ وزیر دفاع کو نظر انداز کردیاگیا ؟ ویسے اس ملک کا وزیردفاع ہوتابھی کیا ہے؟ عام آدمی کوشائد علم بھی نہ ہوکہ اس وقت وزیردفاع کون ہے۔ اس عہدہ کی اہمیت تو یہ ہے کہ ایک سابق وزیر دفاع کو اسلام آباد کے ہوائی اڈے پرچین جانے سے روک دیاگیا تھااور اس نے بڑ ی خاموشی کے ساتھ یہ ''عزت افزائی '' قبول کرلی تھی۔ ٭بھارت کے ٹکڑوں پر پلنے والے افغانستان کے کسی حکمران کو مقبوضہ کشمیر کے عوام پر بھارت کے ظلم و تشدد کی مذمت کی توفیق نہ ہوئی مگر وہاں کے عوام نے یہ فرض ادا کردیاہے۔ جلال آباد افغانستان کا مشہور اور بڑا شہر ہے۔ گزشتہ روز وہاں افغان باشندوں نے مقبوضہ کشمیر کے عوام کے حق میں مظاہرہ کیا۔ ایسے مظاہرے برطانیہ، امریکہ اور ناروے وغیرہ میں ہوتے رہتے ہیں مگر افغانستان میں ایسا مظاہرہ پہلی بار ہواہے۔ یہ بات افغانستان کے سرپرست بھارت کوکیسے گوارا ہوسکتی ہے؟ افغان کٹھ پتلیاں کیسے اس بات کو آگے بڑھنے دیں گی؟ ٭گزشتہ روز پشاور کے ضمنی الیکشن کے ابتدائی نتائج کے مطابق تحریک انصاف نے کل ڈالے گئے ووٹوں میں سے48فیصد ووٹ حاصل کیے تھے۔ پشاور کی نئی خبروں کے مطابق یہ شرح35 فیصد بنتی ہے۔ تاہم اصل نتائج پیر کے روز سرکاری اعلان میں واضح ہو جائیں گے۔ مسئلہ 48 فیصد یا35 فیصد اور صرف پشاور کے انتخابات کا نہیں، یہ ملک بھرکا مسئلہ ہے کہ کسی الیکشن میں دس امیدوار میں سے ایک امیدوار20یا25 فیصد ووٹ حاصل کرکے کامیاب ہوجاتا ہے اور باقی 9امیدوار مجموعی طور پر75 یا80 فیصد حاصل کرکے ہار جاتے ہیں ۔اس مسئلے کاحل فرانس، ملائیشیا اور بعض دوسرے ممالک نے ڈھونڈ رکھا ہے کہ الیکشن میں کسی خاص امیدوارکی بجائے پارٹیوں کووٹ دیئے جاتے ہیں اورپارٹیاں بعد میں اپنے حاصل کردہ ووٹوں کے تناسب سے متعلقہ حلقوں میںاپنے امیدوار مقررکردیتی ہیں۔ اس طرح امیدوار کے بے حساب اخراجات اور ذاتی لڑائی جھگڑے بچ جاتے ہیں۔ ٭کراچی میں بلدیہ فیکٹری میں259 محنت کشوں کو زندہ جلائے جانے کے ہولناک واقعہ کے مرکزی ملزم حماد صدیقی کو دبئی میں گرفتار کرلیاگیا۔ اسے ایک دوروز میں پاکستان لایاجارہاہے۔ حکومت پاکستان نے اس کی گرفتاری کے لیے ریڈ وارنٹ جاری کیے تھے۔ حماد صدیقی پر الزام ہے کہ اس نے بلدیہ فیکٹری سے 20 کروڑ روپے کا بھتہ مانگا تھا۔ اس کے انکارپر اپنے غیر ملکی باس الطاف حسین کی ہدایت پر اپنے کارندوں کے ذریعے فیکٹری کو نذرآتش کردیا تھا۔ اس کیس کے باقی مجرم کو گرفتار ہوچکے ہیں۔ حماد صدیقی دبئی بھاگ گیا تھا! ہرمجرم کو بالآخر انجام بھگتنا پڑتا ہے مگر اسی دبئی میں پرویز مشرف نام کا ایک مفرور مجرم بھی رہتاہے۔ اس کی گرفتاری کے بار بار وارنٹ جاری ہوئے ،اس کی جائیداد کی قرقی کا حکم جاری ہوچکا مگر ابھی تک اسے واپس نہیں لایاگیا۔حماد صدیقی کاجرم نہائت خوفناک ہے مگر پرویزمشرف نے تو چار سو سے زیادہ پاکستانی ( عافیہ صدیقی سمیت) امریکہ کو فروخت کردیئے تھے۔ اس شخص کو کیوں پاکستان نہیں لایا جارہا ؟ بلکہ و ہ تو پاکستان میں ایک سیاسی پارٹی چلا رہاہے، اسے ختم کرکے دوسر ی پارٹی بنانے کی تیاریاں کررہاہے۔ اس کے پہلو میں سندھ پر 13سال تک مسلط رہنے والا گورنر عشرت العباد بھی موجود ہے۔ جو گورنری سے فارغ ہوتے ہی رات کے اندھیرے میں دبئی بھاگ گیا ! ٭میاںنوازشریف کی صاحبزادی مریم نواز کاایک امریکی صحافی کو دیاجانے والا انٹرویو تقریباً ٹیلی ویژنوں میں ایک جیسے جملوں اور الفاظ کے ساتھ نشر ہوا۔ اس کے مطابق مریم نواز نے کہا ہمارے خاندان کا فیصلہ تھا کہ میں پارٹی (ن لیگ) کو سنبھال لوں۔ میر ے دادا ( محمد شریف) اور والد بھی میری انتظامی اور سیاسی اہلیت اور قابلیت کے قائل رہے ہیں۔ میرے چچا شہبازشریف سب سے زیادہ اہل ہیں( نوازشریف سے بھی زیادہ!) ۔ ہم نے جیلیں، نظر بندیاں، مقدمے نااہلی، سب کچھ دیکھ لیا ہے! میرے مشورے میرے والد بھی خوش دلی سے سنتے ہیں، مریم کی یہ باتیں باربار نشر ہوئیں، پھراچانک مریم نوازکی وضاحت آئی کہ میں نے پارٹی سنبھالنے کی بات نہیں کی، میں تو محض ایک ورکرہوں۔ پارٹی کے سربراہ تو نوازشریف ہیں اور نوازشریف ہی رہیں گے۔ مریم کی کون سی بات صحیح ہے،اس کا علم تو امریکی میڈیا کی تفصیل سے لگ جائے گا مگر خاتون کو کون سمجھائے کہ ہر وقت بولتے رہنا بہت نقصان دہ ثابت ہوسکتا ہے! ٭سندھ کے وزیر ثقافت نے نیا مسئلہ چھیڑ دیا ہے کہ کراچی کام نام تبدیل کرکے پرانا نام 'کلاچی ' رکھاجا سکتا ہے۔ قطع نظر اس کے کہ یہ ضرورت کیوں پیش آئی ہے، ایک قاری نے جواز پیش کیا ہے کہ کراچی کے نام میں 'کچرا' کا لفظ شامل ہے۔ جو شہر میں ہر طرف بکھرا پڑا ہے۔ شائد اس وجہ سے نام تبدیل کرنے کا سوچا جارہا ہے۔ ویسے فاروق ستار نے اس تجویزکو مسترد کردیاہے۔ ٭روزنامہ اوصاف کے قطعہ نگار اقبال راہی (0322-4534350)نے قارئین سے اپیل کی ہے کہ ان کے بڑے بیٹے کامران اقبال کے لیے دعائے صحت فرمائیں۔ کامران کے خون میں انفیکشن اور پِتّے میں پتھری ہے۔ ٭ایس ایم ایس : ہمارے علاقے میں 40سکول ہیں۔ کسی میں پڑھائی نہیں ہوتی۔ موسم سرما میں ان میں جانور باندھے جاتے ہیں۔ اس علاقے میں کوئی ہسپتال ، کوئی سڑک نہیں۔ بلدیاتی انتخابات بھی نہیں ہوئے۔ ہماری بات کوئی نہیں سنتا! عبدالقدیر کو لائے کوہستان (0355-5432713) ٭ ایک قاری کا دلچسپ لطیفہ( نام نہیں لکھا)

ایک نوجوان نے اپنے استاد سے کہا کہ مجھے ایک جگہ انٹرویو کے لیے جانا ہے مجھے لفظ 'نٹورے' کی سمجھ نہیںآ رہی۔ یہ کیاہوتاہے؟ استاد کوخود بھی معلوم نہیں تھا۔ اس نے کہا کہ یہ لفظ لکھ کربتاؤ۔ اس نے لکھا "NATURE" (نیچر) ۔ استاد بہت ناراض ہوا کہا کہ تم انٹرویونہ دو، ناکام ہوجاؤ گے۔وہ لڑکا پریشان ہوکر بولا کہ سر! اس طرح تو میرا ''فٹورے''(FUTURE) تباہ ہو جائے گا!


اس خبر کے بارے میں اپنی رائے دیجئے
پسند آئی
 
ٹھیک ہے
 
کوئی رائے نہیں
 
پسند ںہیں آئی
 


 سب سے زیادہ پڑھی جانے والی مقبول خبریں






  قائد اعظم محمد علی جناح  
  اسکندر مرزا  
  لیاقت علی خان  
  ایوب خان  
آج کا مکمل اخبار پڑھیں

کار ٹونز

کالمز

کالم /بلاگ


     
     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ روزنامہ اوصاف محفوظ ہیں۔
Copyright © 2016 Daily Ausaf. All Rights Reserved