کرپشن کیخلاف قوانین بنانے کی ضرورت ہے،جمیل اختر
  8  اکتوبر‬‮  2017     |     یورپ

شفیلڈ ( پ ر) پاکستان رابطہ کونسل شفیلڈکے چیئرمین راجہ جمیل اختر نے کہا ہے کہ پانامہ کیس میں میاں نواز شریف کو نا اہل قرار دینے کے بعد عدالتیں خاموش ہوگئی ہیں پانامہ کی فہرست بڑی لمبی ہے دوسروں کو اگر قانون کے کٹہرے میں نہ لایا گیا تو پھر یہی سمجھا جائے گا کہ میاں نواز شریف کو محض نشانہ بنایا گیا ہے عوام کے اندر عدالتوں کے بارے شک و شبات پیدا ہو جائیں گے عدل اور انصاف کی توقعات ختم ہو جائیں گی اور ملک مذید بحرانوں کا شکار ہوگا ہر آدی قانون کو اپنے مفاد کے لیے استعمال کرئے گا۔ انہوں نے کہا کہ ستر سال سے اس ملک میں ایسا ہی ہوتا آرہا ہے ہر ادارے میں کرپشن پھیل چکی ہے کرپشن کے خلاف سخت قوانین کی ضرورت ہے یہ ایک ایسی دہشت گردی ہے کہ اس میں ملوث افراد کو پھانسی کی سزا ہونی چاہے اور قانون سے کوئی بالاتر نہیں ہونا چاہے۔ راجہ جمیل نے کہا کہ ملک کے ہر ادارے کا احتساب ہونا چاہے نیب کے چیئرمین کے انتخاب کے لیے اس لیے مشکلات سامنے آرہی ہیں کہ سیاسی جماعتوں کے سربراہوں پر کرپشن کے مقدمات ہیں کوئی کسی پر اعتماد کرنے کے لیے تیار نہیں یہ فیصلے وہی لوگ کر سکتے ہیں جو کرپشن سے پاک ہیں ملک میں ایک ایسے ادارے کی ضرورت ہے جس پر کوئی انگی نہ آٹھا سکے آئین کی دفعہ62/62 کا جب ہر فرد پر اطلاق ہو گا تو پھر ملک کو صاف کرنے میں مدد ملے گی اور ایسے لوگوں کی کمی نہیں ہے سیاسی اور سفارشی کلچر کو ختم کرنا ہو انتخابی عمل میںکروڑوں کی دولت خرچ کر پر پابندی لگائی جائے اور ایک صاف اور شفاف احتساب کا ادارہ قائم کیا جائے۔


اس خبر کے بارے میں اپنی رائے دیجئے
پسند آئی
 
ٹھیک ہے
 
کوئی رائے نہیں
 
پسند ںہیں آئی
 


 سب سے زیادہ پڑھی جانے والی مقبول خبریں





  اوصاف سپیشل

آج کا مکمل اخبار پڑھیں

  قائد اعظم محمد علی جناح  
  اسکندر مرزا  
  لیاقت علی خان  
  ایوب خان  
آج کا مکمل اخبار پڑھیں

کار ٹونز


یورپ

کالم /بلاگ


     
     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ روزنامہ اوصاف محفوظ ہیں۔
Copyright © 2016 Daily Ausaf. All Rights Reserved