شوکت علی برمنگھم کمیونٹی فورم کے چیئرمین،فیصل محمودسیکرٹری نامزد
  8  اکتوبر‬‮  2017     |     یورپ

برمنگھم (پ ر) برمنگھم کمیونٹی فورم کا ایک اعلیٰ سطحی اجلاس جامعہ مسجد ہارونیہ برمنگھم میں ہوا اجلاس میں شوکت علی خان کو چیئرمین اور فیصل محمو دکو جنرل سیکرٹری متفقہ طور پر نامزد کیا گیا اس کے علاوہ وائس چیئرمین چوہدری نجابت علی اسسٹنٹ چیئرمین مفتی عبدالمجید ندیم اسسٹنٹ وائس چیئرمین راجہ جاوید انکروی اسسٹنٹ سیکرٹری بابر باز فنانس سیکرٹری منیر مغل پریس سیکرٹری غضنفر محمود اور ایگزیکٹو کمیٹی میں مولانا محمد سجاد' چوہدری رضوان علی گجر' چوہدری امین' چوہدری محمد بشیر' راجہ رجاسب علی' محمد لطیف کے علاوہ خالد محمود کو نامزد کیا گیا اجلاس میں بہت سے اہم فیصلے کئے گئے برمنگھم کمیونٹی فورم کا آئین اجلاس میں پیش کیا گیا جس کی ڈرافٹنگ آئرش کمیونٹی کے ممبر جیری نے کی جیری نے آئین میں موجود تمام نکات پر مختصر روشنی ڈالی اس کے بعد تمام اراکین اجلاس نے آئین متفقہ طور پر منظور کردیا گیا برمنگھم کمیونٹی فورم کے قیام پر روشنی ڈالتے ہوئے فورم کے جنرل سیکرٹری فیصل محمود نے کہا کہ جب سے سابق کونسلر شوکت علی خان اور دیگر نے برمنگھم میں کچرے کے خلاف مہم شروع کی تھی تو انہوں نے کمیونٹی کے دیگر افراد کے ساتھ مل کر ایسی مہم چلائی جس کی وجہ سے برمنگھم کی روڈوں سے کچرا اٹھنا شروع ہوگیا تھا اور برمنگھم سٹی کونسل کے سینئر لیڈر کلنسینے برمنگھم کے معاملات کو مس ہینڈ کرنے کی وجہ سے استعفیٰ دے دیا تھا اس کچہرے اٹھائی والی مہم میں راجہ شوکت کیساتھ کونسلر ذاکر اﷲ' سابق کونسلر سعید' فیصل محمود کے علاوہ کمیونٹی کے دیگر افراد بھی تھے جنہوں نے برمنگھم کے مختلف جگہوں پر کامیاب مظاہرے کئے تو برمنگھم کے عوام نے ان افراد کی توجہ اس جانب مبذول کرائی کہ کیوں نہ ایسا فورم تشکیل دیا جائے جس کی بنیاد پر برمنگھم کے دیگر مسائل کو نہ صرف اجاگر کیا جائے بلکہ ٹھوس بنیادوں پر ان مسائل کا حل بھی کیا جائے جس میں تدفین سے جڑے تمام مسائل جس میں کارانر کا مسئلہ دیگر شہروں میں کارانر ساتوں دن کام کرتا ہے اور برمنگھم برطانیہ کا دوسرا بڑا شہر اور یورپ کی سب سے بڑی کونسل ہے کانر کیوں ساتوں دن کام نہیں کرتا اس مسئلے کی وجہ سے نہ صرف مسلم کمیونٹی بلکہ کرسچن کے علاوہ یہودی کمیونٹی بھی مشکلات کا شکار ہے دوسرا مسئلہ آٹو پسی سکینر کا نہ ہونا ہے یہ اسکینر نہ ہونے کی وجہ سے پوسٹ مارٹم سے جڑا ہوا ہے تیسرا بڑا مسئلہ برمنگھم برمنگھم میں تدفین کے لئے قبریں دوسرے شہروں سے زیادہ مہنگی ہیں چوتھا مسئلہ جو اس ہی مسئلے کے ساتھ جڑا ہوا ہے کہ قبرستان میں جگہ کم پڑتی جارہی ہے اس کا مطلب ہے ہمیں مزید قبرستان کی جگہ بھی چاہئے یہ تو تدفین سے جڑے ہوئے مسائل تھے اب آگے چلیں تو دیکھا گیا ہے کہ ہمارے نوجوان نسل میں (ڈرگ) منشیات کا رجحان بہت زیادہ بڑھتا جارہا ہے اس مسئلہ کو ہنگامی بنیادوں پر حل کرنے کی ضرورت ہے منشیات ہماری نوجوان نسل کو دیمک کی طرح چاٹ رہی ہے ہماری آنے والی نسل اندر سے کھوکھلی ہورہی ہے اس کے علاوہ تعلیم سے جڑے ہوئے مسائل ہیں اور بھی دیگر مسائل ہیں جو ہم برمنگھم کمیونٹی فورم کے ذریعے حل کرنے کی کوشش کریں گے برمنگھم کمیونٹی فورم کے چیئرمین سوکت علی خان نے فورم کے آئین پر روشنی ڈالتے ہوئے کہا یہ فورم مکمل طور پر غیر سیاسی اور فرقہ واریت سے پاک ہوگا اسسٹنٹ وائس چیئرمین مفتی عبدالمجید ندیم نے کہا کہ ہم تمام مکاتب فکر کے لوگوں کو ساتھ لے کر چلیں گے اور برمنگھم کی عوام کے مسائل حل کریں گے جامعہ مسجد ہارونیہ کے خلیفہ صفدر نے اپنے مکمل تعاون کا یقین دلاتے ہوئے کہا کہ مساجد آپ کے مرکز ہیں اور تمام مساجد کے لوگوں کو ساتھ ملا کر آپ جو بھی مسئلہ کا حل ڈھونڈنا چاہیں گے تو آپ کا ہر مسئلہ حل ہوگا برمنگھم سٹی کونسل کے اداروں کے ساتھ آپ مل کر ہر مسئلہ کی تحقیق کرکے پلان A' Bاور C کے ذریعہ ہر مسئلہ حل کرسکتے ہیں پاکستانی قوم میں ایسے مخیر افراد کی کمی نہیں جو راہ خدا میں دل کھول کر نہ دیتے ہوں اسی طرح کے خیالات کا اظہار انوار مدینہ کے حافظ صاحب نے دیتے ہوئے کہا کہ ہمارا پورا تعاون برمنگھم کمیونٹی فورم کے ساتھ رہے گا اجلاس سے چوہدری نجابت علی' غضنفر محمود' چوہدری امین' مولانا محمد سجاد' محمد لطیف اور دیگر نے بھی اظہار خیال کیا اجلاس میں شوکت علی خان کی خالہ کے انتقال پر دعائے مغفرت بھی کی گئی شوکت علی خان چیئرمین برمنگھم فورم نے کہا کہ ہمارا اگلا ہدف ایک ایسی پٹیشن کی تشکیل ہے جس کے ذریعے سے ہم تمام مساجد میں رابطہ کریں گے اور اس پٹیشن کو آن لائن بھی پیش کیا جائے گا جس پر ڈرافٹنگ کا کام شروع کردیا گیا ہے۔


اس خبر کے بارے میں اپنی رائے دیجئے
پسند آئی
 
ٹھیک ہے
 
کوئی رائے نہیں
 
پسند ںہیں آئی
 


 سب سے زیادہ پڑھی جانے والی مقبول خبریں





  اوصاف سپیشل

آج کا مکمل اخبار پڑھیں

آج کا مکمل اخبار پڑھیں

کار ٹونز


یورپ

کالم /بلاگ


     
     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ روزنامہ اوصاف محفوظ ہیں۔
Copyright © 2016 Daily Ausaf. All Rights Reserved