اوپی ایف کرپشن برداشت نہ کرنے کی پالیسی پرعمل پیراہے،بیرسٹرامجد
  10  اکتوبر‬‮  2017     |     یورپ

راچڈ یل ( نما ئند ہ ا و صا ف )ہالینڈ سے حاجی ادریس احمد اور سرور ایرک کی زیرقیادت ایک وفد نے 9 اکتوبر کو اوورسیز پاکستانیز فائونڈیشن کے بورڈ آف گورنرز کے چیئرمین بیرسٹر امجد ملک سے راکڈیل میں ان کے چیمبرز میں ملاقات کی۔ چیئرمین نے وفد کا خیرمقدم کیا اور دونوں کو ہالینڈ سے اور ہیگ سے جاوید ثناء کو او پی ایف کے مشاورتی پینل میں ان کی شمولیت پر مبارکباد پیش کی۔ چیئرمین نے تصدیق کی کہ یورپ کے مختلف شہروں سے پندرہ دیگر ارکان کو بھی پینل میں شامل کیا گیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ اس سے ہالینڈ میں مقیم چالیس ہزار سے زائد سمندرپار پاکستانیوں اور او پی ایف کے درمیان تعلقات کو فروغ ملے گا اور بامعنی سرگرمیوں میں اضافہ ہو گا۔ وفد نے ہالینڈ اور یورپ میں مقیم سمندرپار کمیونٹی کو درپیش مسائل کے علاوہ اس بارے میں تبادلہ خیالات کیا کہ پاکستان اور تارکین وطن کے درمیان رابطوں اور معلوماتی نیٹ ورک کو مزید کس طرح بہتر بنایا جا سکتا ہے۔ رکن او پی اے سی حاجی ادریس احمد نے ایمسٹرڈیم سے پاکستان کے لئے پی آئی اے کی پرواز بحال کرنے کا معاملہ اٹھایا اور حکومت سے اپیل کی کہ وہ ایمسٹرڈیم میں پی آئی اے کی عمارات کو کمیونٹی سرگرمیوں کے لئے استعمال میں لانے کی اجازت دے۔ رکن او پی اے سی سرور ایرک نے آئندہ نسلوں میں پاکستان کا امیج بہتر بنانے کے لئے نوجوانوں کے وفود کے دوطرفہ تبادلوں کا معاملہ اٹھایا۔ بیرسٹر امجد ملک نے گزشتہ ایک سال کے عرصے میں اوورسیز پاکستانیز فائونڈیشن کی سرگرمیوں کے بارے میں آگاہ کیا اور وفد کو جنوری 2017 میں اپنے دورہ ہیگ اور مسائل کے حوالے سے بورڈ کو بھجوائی گئی رپورٹ کے بارے میں بتایا۔ انہوں نے مزید کہا کہ اس وقت کے وزیراعظم نے 12 فروری کو اپنے خط کے ذریعے اس رپورٹ کو سراہتے ہوئے کہا تھا کہ ہماری حکومت سمندر پار پاکستانیوں کی فلاح کو اولین ترجیح دیتی ہے اور اس سلسلے میں انتھک کوششیں کر رہی ہے۔ چیئرمین او پی ایف بورڈ آف گورنرز نے وفد کو او پی اے سی کے ذریعے سرخ فیتے کے خاتمے، آن لائن شکایات نظام کے ذریعے خدمات میں بہتری، صوبوں میں اوورسیز پاکستانیز کمیشن کے قیام، ویب سائٹ میں بہتری، شکایات جمع کرانے کے لئے پورٹل، چوبیس گھنٹے ہیلپ لائن 009251-111040040، اور پاکستان کے آٹھ انٹرنیشنل ایئرپورٹس پر ہیلپ ڈیسک سمیت او پی ایف کے مختلف اقدامات کے بارے میں بتایا۔ انہوں نے مزید کہا کہ بیرون ملک مشنوں کے ذریعے اجلاس عام، خدمات کی فراہمی بہتر بنانے کے لئے مشاورتی کونسل کے ذریعے کی جانے والی سرگرمیوں، سالانہ رپورٹ اور انٹرنیشنل کنونشن کی بدولت پالیسی کی اصلاح اور بیرون ملک کمیونٹی کی بہتری کے لئے پالیسی فیصلے کرنے میں مدد ملے گی۔ انہوں نے زور دیا کہ بورڈ کرپشن کو قطعاً برداشت نہ کرنے کی پالیسی پر عمل پیرا ہے اور اٹھارہ ماہ کے دوران نوٹس میں آنے والے تمام مسائل کو دور کیا گیا۔ وفد نے امیج میں بہتری، خدمات کی فراہمی اور مہارتوں پر سرمایہ کاری کے علاوہ عمدہ ترسیل زر جیسی سرگرمیوں کو سراہا اور اس سلسلے میں او پی ایف کو اپنی غیرمشروط حمایت کا یقین دلایا۔ وفد نے چیئرمین کو جلد ازجلد ہالینڈ کا دورہ کرنے اور تارکین وطن سے ملاقات کرنے کی دعوت دی جسے چیئرمین نے قبول کرتے ہوئے 2018 کے اوائل میں آنے کی یقین دہانی کرائی۔ بیرسٹر امجد ملک نے حقوق کے بارے میں آگاہی کے علاوہ یورپی یونین اور پاکستان کے درمیان رابطوں کے سلسلے میں وفد کی خدمات کا اعتراف کیا اور وفد کے ارکان کو مشاورتی کونسل کی خصوصی رکنیت کی شیلڈ دی۔


اس خبر کے بارے میں اپنی رائے دیجئے
پسند آئی
 
ٹھیک ہے
 
کوئی رائے نہیں
 
پسند ںہیں آئی
 


 سب سے زیادہ پڑھی جانے والی مقبول خبریں





  اوصاف سپیشل

آج کا مکمل اخبار پڑھیں

آج کا مکمل اخبار پڑھیں

کار ٹونز


یورپ

کالم /بلاگ


     
     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ روزنامہ اوصاف محفوظ ہیں۔
Copyright © 2016 Daily Ausaf. All Rights Reserved