ویدااحمدنے جدیددورمیں پاکستانی روایتی آرٹ کوزندہ رکھاہے،سیدابن عباس
  11  اکتوبر‬‮  2017     |     یورپ

لندن( ا و صا ف نیو ز )معروف پاکستانی مصورہ ڈاکٹر ویدا احمد کے فن پاروں کی نمائش لندن کے مایہ ناز پرنس سکول آف ٹریڈیشنل آرٹس میں منعقد کی جا رہی ہے۔ اس نمائش میں عصر حاضر کی مصورہ کے طور پر ویدا احمد کی مہارتوں کو اجاگر کیا گیا ہے جو اپنے کام میں پینٹنگ کے روایتی منی ایچر طریقوں اور مواد کا استعمال کرتی ہیں۔ ''ایکوز آف کنٹمپلیشن'' کے عنوان سے یہ نمائش 10 سے 20 اکتوبر تک جاری رہے گی۔ افتتاحی تقریب میں فن کے مداحوں کی ایک بڑی تعداد نے شرکت کی۔ پاکستان ہائی کمیشن لندن کی جانب سے پاکستان کے 70 ویں یوم آزادی کے سلسلے میں منعقد کی جانے والی سرگرمیوں کے طور پر اس نمائش کی معاونت کر رہا ہے۔ برطانیہ میں پاکستان کے ہائی کمشنر سید ابن عباس نے نمائش کی افتتاحی تقریب میں شرکت کی۔ مصورہ کے کام کو سراہتے ہوئے ہائی کمشنر نے کہا کہ ڈاکٹر ویدا احمد نے دور حاضر میں پاکستان کے روایتی آرٹ کو زندہ رکھا ہوا ہے۔ انہوں نے یقین ظاہر کیا کہ اس نمائش کی بدولت پاکستان کا حقیقی امیج پیش کرنے میں مدد ملے گی جو ایک جدید اور اعتدال پسند ملک ہے اور ہم اپنے شاندار ثقافتی ورثے سے رہنمائی حاصل کرتے ہیں۔ نمائش کا تعارف کراتے ہوئے ڈاکٹر ویدا احمد نے کہا کہ ''ایکوز آف کنٹمپلیشن'' کے عنوان سے ان کے یہ فن پارے عصرحاضر کی ایسی تخلیقی کاوشیں ہیں جن میں قدیم منی ایچر پینٹرز کی تاریخی تحریروں، مواد اور کام کرنے کے طریقوں سے استفادہ کیا گیا ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ یہ انداز مصوری کئی سالوں سے میرے کام کا حصہ رہا ہے۔ اس روایت کو زندہ رکھنے کے لئے ضروری ہے کہ ان طریقوں کو تسلسل دیا جائے اور آرٹسٹوں کی آئندہ نسل کو ان علوم سے آگاہ کیا جائے۔ انہوں نے کہا کہ اگرچہ اس میں وقت لگتا ہے لیکن اگر ہم پرانے طریقوں کو آگے بڑھانے کا سلسلہ جاری رکھیں تو آنے والے سالوں میں آرٹ کو ایک شاندار درخشاں رخ دیا جا سکتا ہے۔ڈاکٹر ویدا ایک جانی مانی مصورہ ہیں اور دنیا بھر میں چالیس سے زائد نمائشوں میں حصہ لے چکی ہیں۔ انہوں نے ابتدائی تربیت یونیورسٹی آف پنجاب لاہور اور پھر رسکن سکول آف ڈرائنگ اینڈ فائن آرٹس، اوکسفرڈ یونیورسٹی سے حاصل کی۔ وہ پرنس سکول آف ٹریڈیشنل آرٹس، لندن کی طالبہ بھی رہی ہیں جہاں سے انہوں نے فارسی، مغل اور پہاڑی ڈرائنگ اور پینٹنگ میں پی ایچ ڈی کی ڈگری حاصل کی۔


اس خبر کے بارے میں اپنی رائے دیجئے
پسند آئی
 
ٹھیک ہے
 
کوئی رائے نہیں
 
پسند ںہیں آئی
 


 سب سے زیادہ پڑھی جانے والی مقبول خبریں





  اوصاف سپیشل

آج کا مکمل اخبار پڑھیں

آج کا مکمل اخبار پڑھیں

کار ٹونز


یورپ

کالم /بلاگ


     
     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ روزنامہ اوصاف محفوظ ہیں۔
Copyright © 2016 Daily Ausaf. All Rights Reserved