بیس کیمپ میں انتشار پھیلاکر مسئلہ کشمیر کو کمزور نہیں کرنا چاہئے،راجہ امجد
  12  ‬‮نومبر‬‮  2017     |     یورپ

برمنگھم(نمائندہ اوصاف) صدر مسلم لیگ ن مڈ لینڈ زون راجہ امجد خان نے کہا ہے کہ تحریک آزادی کو اس مقام تک پہنچانے میں شہداء کی قربانیاں شامل ہیں۔ آزادی کی شمع کی اپنے خون سے آبیاری کرنے والے شہداء اور انکے ورثاء ہی کشمیر کے اصلی وارث ہیں۔ بیس کیمپ کے سیاستدانوں نے وقت کے علاوہ کوئی خونی جانی قربانی نہیں دی ہے اور جب تحریک عالمی دنیا کی توجہ کا مرکز بن چکی ہے فلش پوائنٹ تک آن پہنچی ہے تو اس نازک مرحلے پر کوئی جذباتی عمل کرکے اپنی مظلومیت کو دہشت گردی کا نام حاصل کرکے غلامی کو مزید طوالت دینا اور عالمی دنیا کو باور کروانا کہ ہم غیر مہذب منتشر قوم ہیں۔ ایسے جذباتی عوامل قابل نقصان نہیں۔ آج عالمی دنیا جانتی ہے کہ کشمیری پرامن اور مظلوم ہیں ہر مقام پر کشمیریوں کی حمایت میں پرامن آوازیں اٹھتی ہیں آج کشمیریوں نے بڑی محنت اور جدوجہد سے دنیا کے کونے کونے میں اپنی مظلومیت سے دنیا کی توجہ کشمیر کی طرف مبذول کروائی ہے۔ اب بڑی سوچ سمجھ سے اور ہوش سے کام لینے کی ضرورت ہے جوش سے حالات منطقی بھی ثابت ہوسکتے ہیں۔ لہٰذا بیس کیمپ کی قیادت کو مل جل کر عالمی اداروں تک لابنگ کرنی چاہئے۔ بیس کیمپ کے اندر انتشار پھیلاکر مسئلہ کشمیر کو کمزور نہیں کرنا چاہئے۔ اتحاد و اتفاق سے مل کر حکمت عملی تیار کرنی چاہئے۔ اپوزیشن جماعتوں کو لائن آف کنٹرول کی طرف مارچ کرنے سے اور اپنے لوگوں کو اپنی فوج سے مرواکر عالمی دنیا کو کیا ثابت کرنا ہوگا۔ لاشوں کی سیاستاور تحریک کو کمزور کرنے کے ساتھ عالمی برادری کو دیا جانے والا پیغام مثبت نہیں ہوگا اور دوسری طرف نوجوان نسل بھی مایوس ہوگی۔آج کشمیر کے اندر نوجوانوں کو کشمیر کی تاریخ سے وابستہ تربیت اور بارڈر ایریا میں رہنے والے کشمیریوں کو سول ڈیفنس کی تربیت کے لئے کوئی اقدامات نہیں ہیں ہماری جغرافیائی حیثیت بالکل ختم کی جارہی ہے بیس کیمپ کے سیاستدانوں کو اندرونی معاملات پر توجہ دے کر پہلے بیس کیمپ کو مضبوط اور متحد کرنا چاہئے۔ جماعتی وابستگیوں سے بالاتر ہوکر سیاست کو چھوڑ کر کشمیریت کو اپناکر ذاتی مفادات کو قومی مفادات پر ترجیح دینی ہوگی۔ ہماری تقسیم پہلے کی لمحہ فکریہ ہے خدارا اب مزید ایسا بلنڈر نہ کرنا جس سے ہم غیر سنجیدہ لگیں اور انٹرنیشنل کمیونٹی، ہمارے مؤقف کو سیاست سے منسوب کرکے سیرس نہ لے۔ اس تحریک کے پیچھے ہزاروں جانوں کے نذرانے دئے ہیں۔ ان سب کو مدنظر رکھ کر بہتری کی طرف گامزن ہونا پڑے گا۔


اس خبر کے بارے میں اپنی رائے دیجئے
پسند آئی
 
ٹھیک ہے
 
کوئی رائے نہیں
 
پسند ںہیں آئی
 


 سب سے زیادہ پڑھی جانے والی مقبول خبریں





  اوصاف سپیشل

آج کا مکمل اخبار پڑھیں

  قائد اعظم محمد علی جناح  
  اسکندر مرزا  
  لیاقت علی خان  
  ایوب خان  
آج کا مکمل اخبار پڑھیں

کار ٹونز


یورپ

کالم /بلاگ


     
     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ روزنامہ اوصاف محفوظ ہیں۔
Copyright © 2016 Daily Ausaf. All Rights Reserved