مقبوضہ کشمیرمیں مظالم رکوانے کیلئے تحریک حق خودارادیت نے لائحہ عمل طے کرلیا
  13  ‬‮نومبر‬‮  2017     |     یورپ

بریڈ فورڈ(نمائندہ اوصاف) جموں کشمیر تحریک حقِ خودارادیت انٹرنیشنل کے عہدیداروں کے دورہ یورپ کے بعد برطانیہ اور یورپ میں کشمیری عوام کا نکتہ نظر پیش کرنے اور مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی مسلسل خلاف ورزیاں بند کروانے کیلئے جدید تقاضوں کے مطابق لائحہ عمل طے کرلیاگیا۔ برسلز میں یورپی تنظیموں سے مشاورت، ممبران پارلیمنٹ کی معاونت اور تحریکی عہدیداروں کی کاوشوں سے جہاں صدر آزاد کشمیر سردار محمد مسعود خان کے دورہ برطانیہ میں بھرپور تعاون کیا جائے گا۔ وہیں یکم دسمبر سے 21 دسمبر تک تین ہفتے کیلئے برطانیہ اور یورپ کے 15 سے زائد شہروں میں تقریبات کیلئے منصوبہ بندی کرلی گئی ہے جس کیلئے برطانوی اور یورپی پارلیمنٹ میں قائم کشمیری گروپوں سے بھی ہر سطح پر تعاون لیا جائے گا جس کیلئے تحریک کے چیئرمین راجہ نجابت حسین، سیکرٹری جنرل محمد اعظم، سرپرست سردار عبدالرحمان خان، برطانیہ کی چیئرپرسن کونسلر یاسمین ڈار، وائس چیئرمین امجد حسین مغل، مانچسٹر کی چیئرپرسن روبینہ خان، ثمینہ خان، کونسلر عاصم رشید اور پامیلا اشرف ملک نے مختلف تنظیموں اور ممبران پارلیمنٹ سے رابطے مکمل کرلئے ہیں۔ ان تمام پروگراموں میں جہاں آزاد کشمیر، پاکستان سے ممبران ایجنٹ، یوتھ لیڈر شپ اور انسانی حقوق کے نمائندے بھی شرکت کریں گے جبکہ برطانیہ اور یورپ میں کام کرنے والی تنظیموں کے نمائندوں کی شرکت کو بھی یقینی بنایا جائے گا۔ مسلم کانفرنس کے مرکزی صدر سردار عتیق احمد خان کے دورہ برطانیہ کے دوران بھی ہر سطح پر تعاون کیا جائے گا اور تحریکی عہدیدار انکے پروگراموں میں شرکت کریں گے۔برطانوی پارلیمنٹ میں 14 دسمبر سے شروع ہونے والی پارلیمنٹری انکوائری میں مقبوضہ کشمیر کے انسانی حقوق کے نمائندوں کی شرکت کو یقینی بنانے کیلئے بھی آل پارٹیز کشمیر پارلیمنٹری گروپ کے چیئرمین کرس لیزلے سے بھرپور تعاون کیا جائے گا جبکہ برطانیہ کے مختلف اعلیٰ تعلیمی اداروں اور پاکستان و آزاد کشمیر کے پڑھے لکھے طبقے کو بھی تحریکی سرگرمیوں میں شامل کرنے کیلئے بھی رابطوں کو تیز کیا جائے گا تاکہ مقبوضہ کشمیر اور آزاد کشمیر کی سول سوسائٹی کو یکجا کرکے ریاستی عوام کو عالمی سطح پر پہنچایا جاسکے جبکہ ریاست کے دونوں اطراف میں عوام کی بہتری کیلئے بھی اقدامات میں برٹش کشمیریوں کی صلاحیتوں سے فائدہ اٹھایا جاسکے۔ اس موقع پر راجہ نجابت حسین نے ممبران پارلیمنٹ کو آزاد کشمیر اور پاکستان کے دورے کرانے کے علاوہ ان سے برطانوی اور یورپی پارلیمنٹ مختلف سرگرمیوں میں تعاون لینے کے حوالے سے بھی تحریکی رہنماؤں کو آگاہ کرتے ہوئے کہا کہ جو ارکان آزاد کشمیر میں کشمیری عوام اور قیادت سے عالمی سطح پر مسئلہ کشمیر پر کام کا وعدہ کرکے آئے ہیں ان سے رابطوں میں رہ کر اس پر مشترکہ لائحہ عمل طے کیا جائے گا تاکہ تحریک حق خودارادیت عالمی سطح پر کشمیری عوام کے حقیقی سفارتکاروں اور نمائندوں کا مشترکہ کردار کرسکیں۔ اس موقع پر راجہ نجابت حسین نے تمام تحریکی عہدیداروں، ممبران پارلیمنٹ، پاکستان اور آزاد کشمیر کے ہمدردوں اور تحریکی ارکان کی کاوشوں اور معاونت پر خصوصی خراج تحسین پیش کیا اور کہا کہ برٹش کشمیری مقبوضہ کشمیر کے عوام کا کیس عالمی سطح پر ہر فورم میں اٹھائیں گے اور ماضی کی طرح مستقبل میں اس کے مثبت نتائج نکلیں گے۔ان خیالات کا اظہار جموں کشمیر تحریک حق خودارادیت انٹرنیشنل کے چیئرمین راجہ نجابت حسین اور دیگر عہدیداروں نے یہاں بریڈ فورڈ ویست کی ممبر پارلیمنٹ ناز شاہ کے ساتھ ایک خصوصی نشست میں کیا جس میں فیصلہ کیا گیا کہ 10دسمبر کو بریڈ فورڈ میں انسانی حقوق کے عالمی دن کے موقع پر خصوصی تقریب منعقد ہوگی جس میں یورپی پارلیمنٹ میں لیبر پارٹی کے گروپ لیڈر رچرڈ Richard Corleet MEP ناز شاہ ایم پی اور امجد بشیر کے علاوہ آزاد کشمیر اسمبلی کی ممبران اور پاکستانی قومی اسمبلی میں کشمیری نژاد ارکان بھی شریک ہونگی جس کیلئے راجہ نجابت حسین، صبیحہ خان اور ہیری بوٹا کے علاوہ راجہ غضنفر خالق اپنے اپنے حلقہ اثر سے لوگوں کی شرکت کو یقینی بنائیں گے جبکہ ناز شاہ ایم پی اور بیرسٹر یاسمین قریشی ایم پی کی معاونت سے 02دسمبر کو برطانوی کو برطانوی پارلیمنٹ میں خواتین کی عالمی کانفرنس منعقد کی جائے گی جس کیلئے تحریک کی برطانیہ کی چیئرپرسن کونسلر یاسمین ڈار اور ممتاز کشمیری اینکر پرسن ثمینہ خان انتظامات کو آخری شکل دیں گی جبکہ قائد ملت چوہدری غلام عباس کی برسی کے موقع پر 18دسمبر کو برمنگھم میں کشمیریوں کی قومی کانفرنس منعقد ہوگی جس میں کشمیری تنظیمیں 2018 کیلئے مشترکہ لائحہ عمل طے کریں گی اور یورپ بھر میں مسئلہ کشمیر کو مشترکہ طورپر اجاگر کیا جائے گا۔ برطانوی اور یورپی پارلیمنٹ میں 5,6اور 7 دسمبر کو نوجوانوں کو مسئلہ کشمیر میں متحرک کرنے کے علاوہ کشمیری گروپوں کی معاونت کیلئے مزید ارکان پارلیمنٹ کو شامل کرنے کیلئے لابی کی جائے گی جس کیلئے تحریک کے سیکرٹری جنرل محمد اعظم اور سردار عبدالرحمان خان و دیگر تنظیموں سے روابط استوار کریں گے۔ اس موقع پر ناز شاہ نے تحریک کی سرگرمیوں پر انکے تمام عہدیداروں کو شاندار الفاظ میں خراج تحسین پیش کیا اور اپنی طرف سے ہر سطح پر معاونت کی بھی یقین دہانی کراتے ہوئے کہا کہ وہ کشمیر کی بیٹی کی حیثیت سے اپنے مظلوم بہن بھائیوں کا کیس اپنی لیڈر شپ کے تعاون اور ہم خیال ساتھیوں کی معاونت سے پارلیمنٹ میں بھی اٹھائیں گی اور پارلیمنٹ میں چوتھی بحث کیلئے بھی درخواست جمع کرائیں گے تاکہ مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں کو اجاگر کیا جاسکے۔ نشست کے صدر اور سرپرست تحریک سردار عبدالرحمان خان نے ناز شاہ ایم پی اور تحریکی عہدیداروں کے علاوہ ان تمام ممبران پارلیمنٹ کا بھی شکریہ ادا کی جنہوںنے تحریکی سرگرمیوں میں شامل ہوکر مسئلہ کشمیر پر آواز بلند کی۔


اس خبر کے بارے میں اپنی رائے دیجئے
پسند آئی
 
ٹھیک ہے
 
کوئی رائے نہیں
 
پسند ںہیں آئی
 


 سب سے زیادہ پڑھی جانے والی مقبول خبریں





  اوصاف سپیشل

آج کا مکمل اخبار پڑھیں

  قائد اعظم محمد علی جناح  
  اسکندر مرزا  
  لیاقت علی خان  
  ایوب خان  
آج کا مکمل اخبار پڑھیں

کار ٹونز


یورپ

کالم /بلاگ


     
     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ روزنامہ اوصاف محفوظ ہیں۔
Copyright © 2016 Daily Ausaf. All Rights Reserved