بدھ‬‮   23   مئی‬‮   2018
کشمیری نوازشریف کی کشمیرپالیسی سے متفق ہیں،راجہ انعام اللہ
  7  فروری‬‮  2018     |     یورپ

ہائی ویکمب(مسرت اقبال) مسلم لیگی رہنما راجہ انعام اللہ خان نے آصف زرداری کے نواز شریف کے خلاف بیان پر تنقید کرتے ہوئے کہا کہ آصف زرداری نے ثابت کیا ہے کہ باوجود اس امر کے کہ انہیں عظیم بھٹو کے داماد بنے ہوئے دہائیاں بیت گئیں ہیں لیکن آصف زرداری کی تربیت جو سینما گھر کے ماحول میں ہوئی میاں نواز شریف کے خلاف اس بیان میں اس کا بھرپور عکس گواہی ہے کہ آصف زرداری بلکہ تبدیل نہیں ہوئے۔ راجہ انعام اللہ خان نے کہا کہ میاں نواز شریف نے ہر سطح پر مسئلہ کشمیر کو اٹھایا ہے اور تمام کشمیری میاں نواز شریف کی کشمیر پالیسی سے متفق اور خوش ہیں جن کا ثبوت 5 فروری کا مظفر آباد کا جلسہ اور ان سے قبل آزاد کشمیر اسمبلی کے انتخابات ہیں اس لئے مسئلہ کشمیر پر میاں نواز شریف کو آصف زرداری سے سرٹیفکیٹ لینے کی ضرورت نہ ہے۔ راجہ انعام اللہ خان نے کہا کہ خود آصف زرداری پر کرپشن اور محترمہ بے نظیر بھٹو کے قتل جیسے سنگین الزامات ہیں جن سے وہ اب تک پاکستان کے معروضی حالات کی وجہ سے بچے ہوئے ہیں لیکن وہ وقت دور نہیں جب خود بلاول بھٹو آصف زرداری کو اپنی ماں کے قتل کے الزام میں گرفتار کرائے گا اور زرداری کو یوم حساب ہوگا۔ راجہ انعام اللہ خان نے کہا کہ زرداری حواس باختہ ہوگئے ہیں کیونکہ سینٹ الیکشن میں ان کی توقع سے ہٹ کر ممبران اسمبلی نے آصف زرداری کو پنجاب، بلوچستان اور خیبر پختونخواہ میں اپنا اپنا ضمیر کا سودا نہیں کیا ہے جس سے آصف زرداری کو مزید صدمہ پہنچا ہے اس لئے وہ گھٹیا زبان استعمال کر رہے ہیں۔ راجہ انعام اللہ خان نے کہا کہ میاں نواز شریف کے کبھی کسی سیاسی مخالف نے دھرتی پاکستان سے بے وفائی کا الزام نہیں لگایا۔ آصف زرداری پہلے شخص ہیں جنہوں نے بغیر ثبوت سنگین الزام لگاکر تمام لوگوں کی دل آزاری کی ہے جس پر انہیں معافی مانگنی چاہئے۔ راجہ انعام اللہ خان نے کہا کہ میاں برادران کی بے پناہ مقبولیت اور ان کے عزم نے سیاسی مخالفوں کو بوکھلادیا ہے اور کسی ثبوت کے بغیر الزامات پر اتر آئے ہیں جو کہ پاکستانی سیاست اور جمہوریت کیلئے بالکل ٹھیک نہیں ہے جس سے پاکستان کے جمہوری نظام کو نقصان ہوسکتا ہے میاں برادران کا مقابلہ کرنے کے لئے صحیح معنوں میں عوام کی خدمت کرنی پڑتی ہے جس کے لئے سیاسی مخالفوں کے پاس وقت نہیں یہی وجہ ہے کہ آصف زرداری جیسے لوگ الزامات پر اتر آئے ہیں۔


اس خبر کے بارے میں اپنی رائے دیجئے
پسند آئی
 
ٹھیک ہے
 
کوئی رائے نہیں
 
پسند ںہیں آئی
 


 سب سے زیادہ پڑھی جانے والی مقبول خبریں





  اوصاف سپیشل

آج کا مکمل اخبار پڑھیں

آج کا مکمل اخبار پڑھیں

یورپ

کالم /بلاگ


     
     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ روزنامہ اوصاف محفوظ ہیں۔
Copyright © 2016 Daily Ausaf. All Rights Reserved