لاکھوں برٹش شہریوں کوغذائیت سے بھرپورکھانے ،ورزش کاوقت نہیں ملتا
  8  فروری‬‮  2018     |     یورپ

لند ن (ا وصا ف نیو ز )لاکھوں برطانوی شہریوں کو صحت مند رہنے کیلئے غذائیت سے بھرپور کھانا کھانے اور ورزش کیلئے وقت نہیں ملتا،انڈیپنڈنٹ نے اپنے گزشتہ شمارے میں اس کا انکشاف کرتے ہوئے دعوی کیاہے کہ نئی سروے رپورٹ سے ظاہرہوتاہے کہ لاکھوں برطانوی شہریوں کو صحت بہتر بنانے کیلئے وقت نہیں ملتا، سروے رپورٹ کے مطابق 2ہزار افراد سے کئے گئے سروے سے ظاہرہواہے کہ نصف یعنی 50 فیصد سے زیادہ شہری غذائیت سے بھرپور کھانا کھانا اورورزش کرنا چاہتے ہیں لیکن مصروفیت ان کی اس خواہش کے آڑے آجاتی ہے۔ دوتہائی افراد نے تسلیم کیا کہ عام طورپر غذائیت سے بھرپور کھانا پکانے کاوقت نہ ہونے کے سبب وہ خراب کھانا کھالیتے ہیں ۔ 75فیصد نے انکشاف کیا کہ وہ مصروفیت کی وجہ سرے سے کھانا ہی نہیں کھاتے، سروے سے یہ بھی ظاہر ہوا کہ 75فیصد افراد مصروفیت کی وجہ سے جم نہیں جاپاتے، 20فیصد سے بھی زیادہ نے بتایا کہ سیشن میں شرکت کاوقت نہ ہونے کی وجہ سے انھوں نے اپنی ممبر شپ ہی منسوخ کرادی ہے۔ ہیلدی ریسیپی بکس کمپنی کے مائنڈ فل شیف کی جانب سے کرائی گئی ریسرچ سے یہ ظاہرہوا کہ دوتہائی افراداس بات سے پریشان ہیں کہ ان کی انتہائی مصروف زندگی کے ان کی صحت پر منفی اثرات مرتب ہوں گے۔ادارے کے شریک بانی گلز ہمفریز نے کہا کہ سروے سے ظاہرہوا کہ صحت مند غذا کی ضرورت کو بڑے پیمانے پر تسلیم کیا جانے لگا ہے، اور یہ بات بھی واضح ہے کہ بڑی تعداد میں لوگوں کو ایک صحت مند طرز زندگی کیلئے مدد کی ضرورت ہے ۔ جب سپر مارکیٹ سے خوراک خریدنے والوں سے بات کی گئی تو 68فیصد افراد نے بتایا کہ وہ خوراک خریدتے وقت غیر صحت مند کھانا خرید لیتے ہیں کیونکہ وہ سمجھتے ہیں کہ اسے جلدی تیار کیاجاسکتاہے۔


اس خبر کے بارے میں اپنی رائے دیجئے
پسند آئی
 
ٹھیک ہے
 
کوئی رائے نہیں
 
پسند ںہیں آئی
 


 سب سے زیادہ پڑھی جانے والی مقبول خبریں






آج کا مکمل اخبار پڑھیں

یورپ

کالم /بلاگ


     
     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ روزنامہ اوصاف محفوظ ہیں۔
Copyright © 2016 Daily Ausaf. All Rights Reserved