کشمیریوں کواپنی قسمت کافیصلہ کرنے کاحق دیاجائے، خادم حسین
  8  فروری‬‮  2018     |     یورپ

برمنگھم(نمائندہ خصوصیربنواز چغتائی) 5 فروری کو آزاد کشمیر اور پاکستان کے ساتھ برطانیہ کے شہر برمنگھم میں پاکستان تحریک انصاف برطانیہ اور تحریک انصاف آزاد کشمیر برطانیہ کے زیر اہتمام بڑے پیمانے پر کشمیری بھائیوں سے اظہار یکجہتی کے لئے تجدید عہد کیا گیا اور مسئلہ کشمیر کی تحریک کے لئے جدوجہد کرنے کا عزم کیا گیا، تقریب کی صدارت تحریک انصاف مڈ لینڈ کے چیف آرگنائزر چوہدری خادم حسین نے کی جبکہ نظامت کے فرائض تحریک انصاف آزاد کشمیر سینٹرل ایگزیکٹو کے رُکن ناظم گجر نے سرانجام دئے۔ صدارتی خطبہ سے تحریک انصاف مڈ لینڈ کے چیف آرگنائزر چوہدری خادم حسین نے کہا کہ یونائیٹیڈ نیشن نے بھارتی وزیراعظم جواہر لعل نہروکے ساتھ جو وعدہ کیا تھا کہ بھارت اقوام متحدہ کی قراردادوں کے مطابق کشمیریوں کو استصواب رائے فراہم کرے گا۔آج اس کے حل کیلئے یو این او اُن قراردادوں کی عمل درآمد کیلئے اپنا کردار ادا کرے اور کشمیریوں کو اپنی قسمت کا فیصلہ کرنے کا حق دیا جائے۔ انہوں نے کہا کہ 5فروری کشمیریوں کے ساتھ معاشرتی، اخلاقی اور سفارتی حمایت کے لئے پاکستان کا کردار قابل ستائش ہے۔ مقبوضہ کشمیر میںظلم و ستم کے سائے میں بسنے والے مظلوم کشمیریوں کی دادرسی اور مظلوم کشمیریوں کی آواز کو بلند کرتے رہیں گے۔اُنہوں نے کہا موجودہ صدی میں جس جذبہ حریت اور آزادی کے لئے قائد کشمیر بیرسٹر سلطان محمود چوہدری سابق وزیراعظم آزاد کشمیر نے مسئلہ کشمیر کو اجاگر کیا بے مثال ہے اور اُنکی تحریک آزادی کے لئے جدوجہد قابل ستائش ہے۔ اُنہوںنے کہا 5فروری یوم یکجہتی کشمیر اس لئے پوری دنیا میں منایا جاتا ہے تاکہ عالمی ایوان کو یہ بات باور کروائی جائے کہ مسئلہ کشمیر حل طلب ہے۔ اُنہوں نے کہا جس بے دردی سے بھارت کشمیریوں کی صفاکُشی کر رہا ہے اور عالمی اداروں کی خاموشی افسوسناک ہے جبکہ بھارت نے تمام حدیں توڑ دی ہیں اخلاقی اور انسانی اداروں کی قوانین کی خلاف ورزی ایک عالمی جُرم ہے اور یو این او کو بھارتی ریاستی دہشت گردی کی روک تھام کے لئے خاموشی تورنی ہوگی اور یو این کی قراردادوں کے مطابق مسئلہ کشمیر کو حل کرنے کے لئے اقدام اتھانے ہوں گے، انہوںنے اس بات پر زور دیا کہ جنوبی ایشیاء میں پائیدار امن کیلئے کشمیری عوام کی خواہشات کے مطابق مسئلے کا حل انتہائی ضروری ہے۔پاکستان تحریک انصاف مڈ لینڈ کے صدر عابد خان خٹک اور جنرل سیکرٹری رفعت مغل نے کہا کہ بھارت ریاستی جبر و تشدد کے ذریعے کشمیریوں کو زیادہ دیر تک ان کے بنیادی حقوق سے محروم نہیں رکھا جاسکے گا۔ قائداعظم ٹرسٹ کے چیئرمین راجہ محمد اشتیاق نے کہا کہ بھارت حد سے زیادہ برھنے کی کوشش کر رہا ہے اور ایل او سی پر ہر روز انٹرنیشنل قوانین کی خلاف ورزی کر رہا ہے لیکن بھارت پاکستان کا مقابلہ نہیں کرسکتا تھا ہمارے فوجی جوانوں نے ہمیشہ بھارت کی ہٹ دھرمی کا مُنہ توڑ جواب دیا ہے اور ہم اپنے پاکستانی فوجی جوانوں کی جرأت اور بہادری کو سلام پیش کرتے ہیں۔ راجہ حق نواز جانباز قادری پاکستان مسلم لیگ ن آزاد کشمیر برطانیہ یوتھ ونگ کے سابق صدر نے کہا کہ بھارت مقبوضہ کشمیر میں ریاستی دہشت گردی بند کرے اور8لاکھ فوج کو باہر نکالے وگرنہ خطہ میں کسی صورت امن قائم نہیں ہوسکتا۔ کشمیری حریت پسند پروفیسر نذیر احمد شال، نذیر احمد قریشی، بیرسٹر عبدالمجید ترمبو، راجہ امجد خان نے کہا کہ آزادی کشمیریوں کا بنیادی حق ہے اور بھارت آخر کب تک طاقت کے ذریعے کشمیریوں کو دلانے کے اس بنیادی حق سے محروم رکھے گا، پاکستانی قوم تحریک آزادی کے ساتھ کندھا ملاکر کھڑی ہے۔ دیگر مقررین سے زینب خان، غزالہ احمد، غضنفر محمود، چوہدری ظہور سرور، چوہدری کرامت حسین رٹوی، چوہدری محمد آمین رٹوی، حاجی محمد رزاق، چوہدری منظور حُسین، کونسلر عنصر علی خان، ساجد یوسف، رانی عارف، چوہدری محمد سعید، مرزا فیصل محمود، شہزاد اقبال، رباب اسلم، کونسلر محمد ادریس چوہدری، چوہدری محمد حنیف، حاجی محمد بشیر آرائیں، کونسلر وسیم ظفر، فردوس بیگ، محمد اخلاق خان، چوہدری الطاف رٹوی، چوہدری آفتاب، چوہدری محمد عظیم، نجیب افسر، خواجہ سلیمان، واجد علی برکی، چوہدری شاہ نواز، صاحبزادہ رفیق چشتی، سرفراز مدنی، اعجاز صدیقی، مفتی فضل احمد قادری، راجہ خالد، مشتاق مُغل اور دیگر نے بھی خطاب کیا۔


اس خبر کے بارے میں اپنی رائے دیجئے
پسند آئی
 
ٹھیک ہے
 
کوئی رائے نہیں
 
پسند ںہیں آئی
 


 سب سے زیادہ پڑھی جانے والی مقبول خبریں





  اوصاف سپیشل

آج کا مکمل اخبار پڑھیں

آج کا مکمل اخبار پڑھیں

یورپ

کالم /بلاگ


     
     
تمام اشاعت کے جملہ حقوق بحق ادارہ روزنامہ اوصاف محفوظ ہیں۔
Copyright © 2016 Daily Ausaf. All Rights Reserved